بلین ٹری منصوبے کی کامیابی،پاکستان سعودی عرب میں شجرکاری کیلئے مدد کرے گا

7pakksatree.jpg

وزیراعظم عمران خان کے بلین ٹری منصوبے کی کامیابی کے بعد سعودی عرب میں اسی طرز کے ایک منصوبے کیلئے پاکستان نے معاونت فراہم کرنے کا معاہدہ طے کرلیا ہے۔

خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق دونوں ملکوں کے درمیان سعودی عرب میں وسیع پیمانے پر شجر کاری کیلئے پاکستان کی جانب سے تکنیکی معاونت کی فراہمی کا معاہدے کی یادداشت پر دستخط کردیئے گئے ہیں۔

رپورٹ کے مطابق اس منصوبے کے تحت سعودی عرب میں 10 ارب درخت لگائے جائیں گے اور اس کام کو سرانجام دینے کیلئے پاکستان سعودی حکومت کو تمام تر تکنیکی مہارت اور معاونت فراہم کرے گا۔


دونوں ملکوں کے درمیان اس معاہدے کو حتمی شکل دینے کیلئے سعودی عرب سے ایک خصوصی وفد پاکستان آیا جس میں سعودی وزارت ماحولیات کے افسران شامل تھے، وفد اپنے دورہ پاکستان کے دوران پلانٹیشن سائٹس کے مشاہدے، ماہرین سے مشاورت اور شجرکاری میں مہارت سے متعلق معلومات سے استفادہ کرسکیں گے۔

معاہدے کی مفاہمتی یادداشت پر دستخط کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم عمران خان کے معاون خصوصی ملک امین اسلم نے کہا کہ دونوں ملکوں کے درمیان گرین ڈپلومیسی کا باضابطہ طور پرآغاز ہوگیا ہے، پاکستان اور سعودی عرب کے درمیان شجر کاری میں معاونت کے حوالے سے معاہدہ طے پاچکا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ دنیا بھرمیں پاکستان کے گرین وژن کو پزیرائی مل رہی ہے اور دنیا اسے بطور رول ماڈل دیکھتی ہے جس کی ایک مثال سعودی عرب کے ساتھ ہمارا یہ معاہدہ ہے۔

ملک امین اسلم نے بتایا کہ سعودی عرب نے گرین اینی شیٹیو کے تحت مشرق وسطیٰ اور سعودی عرب کے اندر 40 ارب پودے لگانے کا ہدف مقرر کیا ہے جس کیلئے پاکستان سے مہارت و معانت حاصل کی گئی ہے۔
 
Advertisement

miafridi

Prime Minister (20k+ posts)
When a country has honest leadership then the world start to follow your steps.

Billion Tree, Ehsaas Program, Afghanistan withdrawal, and Steps taken during covid-19 were acknowledged worldwide.
 
Sponsored Link