اسٹیبلشمنٹ عمران خان کو وزیر اعظم بنانا چاہتی ہے مگر وہ مان نہیں رہے،اچکزئی

makmdh1i1hh2.jpg


تحریک تحفظ آئین پاکستان کے سربراہ محمود اچکزئی کہتے ہیں کہ اسٹیبلشمنٹ کے کچھ عناصر عمران خان کو وزیر اعظم بنانا چاہتے ہیں لیکن عمران خان مان نہیں رہے,ایک انٹرویو میں محمود اچکزئی نے کہا کہ میرے مشاہدے کے مطابق اسٹیبلشمنٹ کے 50 فیصد سے زائد لوگ موجودہ حالات سے خوش نہیں ۔

انہوں نے کہا میں کسی ادارے یا کسی ایک آدمی پر الزام نہیں لگاتا۔ ہمیں بڑے ظرف کے ساتھ اپنی غلطیاں تسلیم کرنی چاہیئے، ہر انسان میں کمزوریاں ہوتی ہیں، کوئی اسے اچھا سمجھے یا برا لیکن یہ بات ماننی ہو گی کہ عمران خان اس ملک کا سب سے مقبول لیڈر ہے,شہباز شریف اگر اسٹیٹسمین ہیں تو ان کو عمران خان کو رہا کر دینا چاہیئے۔

انہوں نے مزید کہا کہ عمران خان نے کہاں بھاگنا ہے؟ نواز شریف ، مونا فضل الرحمان اور بلاول ایک کمیٹی بنائیں ، مسئلے کا حل نکل آئے گا۔

دوسری جانب پی ٹی آئی کے بانی چیئرمین عمران خان کو عدالتوں سے ریلیف مل رہا ہے لیکن حکام کے پاس سابق وزیراعظم کو غیر معینہ مدت تک جیل کی سلاخوں کے پیچھے رکھنے کیلئے آپشنز موجود ہیں۔

ایک کے بعد ایک کرکے عمران خان کیخلاف مقدمات ختم ہو رہے ہیں جس سے پی ٹی آئی رہنماؤں اور کارکنوں میں امید پیدا ہوئی ہے کہ پارٹی کے سینئر ترین رہنما چند ہفتوں میں جیل سے باہر آ سکتے ہیں لیکن سرکاری ذرائع کی سوچ اس سے مختلف ہے۔

 

Nice2MU

President (40k+ posts)

🤣 🤣 محمود خان اچکزئی نے تو اچانک یہ ریورس سوئنگ کروا دی ہے

یہی خبر پچھلے دنوں حبیب اکرم نے بھی دی تھی کہ اسٹبلشمنٹ تو اسے حکومت دینا چاہتی ہے لیکن عمران اقتدار چاہتا ہے حکومت نہیں۔ 2018 میں عمران کے پاس حکومت تھی لیکن پورا اقتدار نہیں اسلیے تو اسٹبلشمنٹ کیساتھ اسکی لڑائی شروع ہوگئی۔۔۔ اور اسی میں ہی اسٹبلشمنٹ کی موت ہے۔
 

Jazbaati

Minister (2k+ posts)
Imran Khan does not need to make any deal with the napak fauj generals. He will be free soon with the help of Allah. As it stands, PDM will be destroyed by IMF conditions so no need for PTI to take over yet.