آرمی چیف کو ترکیہ کا اعلیٰ ملٹری ایوارڈ وصول کرنیکی منظوری

anwa1h11i1.jpg


نگران وزیراعظم انوارالحق کاکڑ کی صدارت میں آج وفاقی کابینہ کا اجلاس میں جس میں انہوں نے مختصر عرصے میں کابینہ و سرکاری ملازمین کی کاوشوں کو سراہتے ہوئے ان کا شکریہ ادا کیا۔ اجلاس میں چیف آف آرمی سٹاف جنرل سید عاصم منیر کو ترک حکومت کی طرف سے دیئے جانے والے اعلیٰ ملٹری ایوارڈ کو وصول کرنے کی منظوری دے دی گئی ہے۔ آرمی چیف جنرل سید عاصم منیر کو "ٹرکش آرمڈ فورسز لیجن آف میرٹ" ایوارڈ پاکستان اور ترکیہ کی مسلح افواج کے درمیان تعاون کیلئے خدمات کے اعزاز میں دیا جا رہا ہے۔

وزیراعظم آفس میڈیا ونگ سے جاری پریس ریلیس کے مطابق نگران وزیراعظم نے وفاقی کابینہ اجلاس میں نگران حکومت کے مختصر دوراقتدار میں اپنی کابینہ اور سرکاری ملازمین کی کاوشوں کو سراہا اور ان کا شکریہ ادا کیا۔ نگران وزیراعظم کا اس موقع پر کہنا تھا کہ ہم ملک کی معیشت کو پہلے سے بہتر حالت میں چھوڑ کر جا رہے ہیں جس کے لیے کابینہ نے بہترین کارکردگی کا مظاہرہ کیا۔

انہوں نے کہا کہ ہم آئندہ منتخب ہونے والی حکومت کیلئے ایسا لائحہ عمل دے کر جا رہے ہیں جو عوام اور قوم کے مفاد کیلئے یقینی طور پر مفید ثابت ہو گا، نگران حکومت نے اپنے تمام فیصلوں اور پالیسی سازی میں پاکستان کے مفاد کو ہمیشہ ترجیح دی۔ ہم سب کو مل جل کر پاکستان کی ترقی اور استحکام کے لیے مل جل کر کام کرنا ہو گا۔

وفاقی کابینہ کی طرف سے نگران حکومت کے مختلف اداروں کی تنظیم نو، غیرملکی سرمایہ کاری کے فروغ، کاروبار کیلئے سہولیات فراہم کرنے کے اقدامات پر اطمینان کا اظہار کیا۔ کابینہ سیکرٹری نے بیوروکریسی کی طرف سے وزیراعظم کی قیادت کو سراہتے ہوئے کہا ملک کو درپیش مسائل میں آپ نے ملکی مفاد میں مشکل فیصلے لیے جن کے نتائج دوررس ہوں گے۔

علاوہ ازیں وزارت خزانہ کی سفارش پر لبنیٰ فاروق ملک کی بطور ڈی جی، فنانشل مانیٹرنگ یونٹ (ایف ایم یو) کی مدت میں 9 جون 2023ء سے 8 جون 2024ء تک توسیع، وزارت قومی غذائی تحفظ وتحقیق کی سفارش پر پاکستان اور خلیفہ انٹرنیشنل ایوارڈ فار ڈیٹ پام اینڈ ایگریکلچر انوویشن یو اے ای کے مابین مفاہمتی یادداشت پر دستخط کی منظوری دیدی ہے جس کے تحت پہلا پاکستان انیٹرنیشنل ڈیٹ پام فیسٹیول رواں برس ستمبر میں منعقد ہو گا۔

اقتصادی رابطہ کمیٹی کے 13 اور 14 فروری 2024ء کو منعقد ہونے والے اجلاس میں کیے گئے فیصلوں کی وفاقی کابینہ نے توثیق کر دی ہے۔ وفاقی کابینہ نے کمیٹی برائے حکومتی ملکیتی ادارہ جات 16 فروری 2024ء کو ہونے والے اجلاس میں ہوئے فیصلوں اور کمیٹی برائے لیجسلیٹو کیسز کے 16 فروری کو منعقدہ اجلاس میں ہوئے فیصلوں کی بھی توثیق کر دی ہے۔
 

abdlsy

Prime Minister (20k+ posts)
anwa1h11i1.jpg


نگران وزیراعظم انوارالحق کاکڑ کی صدارت میں آج وفاقی کابینہ کا اجلاس میں جس میں انہوں نے مختصر عرصے میں کابینہ و سرکاری ملازمین کی کاوشوں کو سراہتے ہوئے ان کا شکریہ ادا کیا۔ اجلاس میں چیف آف آرمی سٹاف جنرل سید عاصم منیر کو ترک حکومت کی طرف سے دیئے جانے والے اعلیٰ ملٹری ایوارڈ کو وصول کرنے کی منظوری دے دی گئی ہے۔ آرمی چیف جنرل سید عاصم منیر کو "ٹرکش آرمڈ فورسز لیجن آف میرٹ" ایوارڈ پاکستان اور ترکیہ کی مسلح افواج کے درمیان تعاون کیلئے خدمات کے اعزاز میں دیا جا رہا ہے۔

وزیراعظم آفس میڈیا ونگ سے جاری پریس ریلیس کے مطابق نگران وزیراعظم نے وفاقی کابینہ اجلاس میں نگران حکومت کے مختصر دوراقتدار میں اپنی کابینہ اور سرکاری ملازمین کی کاوشوں کو سراہا اور ان کا شکریہ ادا کیا۔ نگران وزیراعظم کا اس موقع پر کہنا تھا کہ ہم ملک کی معیشت کو پہلے سے بہتر حالت میں چھوڑ کر جا رہے ہیں جس کے لیے کابینہ نے بہترین کارکردگی کا مظاہرہ کیا۔

انہوں نے کہا کہ ہم آئندہ منتخب ہونے والی حکومت کیلئے ایسا لائحہ عمل دے کر جا رہے ہیں جو عوام اور قوم کے مفاد کیلئے یقینی طور پر مفید ثابت ہو گا، نگران حکومت نے اپنے تمام فیصلوں اور پالیسی سازی میں پاکستان کے مفاد کو ہمیشہ ترجیح دی۔ ہم سب کو مل جل کر پاکستان کی ترقی اور استحکام کے لیے مل جل کر کام کرنا ہو گا۔

وفاقی کابینہ کی طرف سے نگران حکومت کے مختلف اداروں کی تنظیم نو، غیرملکی سرمایہ کاری کے فروغ، کاروبار کیلئے سہولیات فراہم کرنے کے اقدامات پر اطمینان کا اظہار کیا۔ کابینہ سیکرٹری نے بیوروکریسی کی طرف سے وزیراعظم کی قیادت کو سراہتے ہوئے کہا ملک کو درپیش مسائل میں آپ نے ملکی مفاد میں مشکل فیصلے لیے جن کے نتائج دوررس ہوں گے۔

علاوہ ازیں وزارت خزانہ کی سفارش پر لبنیٰ فاروق ملک کی بطور ڈی جی، فنانشل مانیٹرنگ یونٹ (ایف ایم یو) کی مدت میں 9 جون 2023ء سے 8 جون 2024ء تک توسیع، وزارت قومی غذائی تحفظ وتحقیق کی سفارش پر پاکستان اور خلیفہ انٹرنیشنل ایوارڈ فار ڈیٹ پام اینڈ ایگریکلچر انوویشن یو اے ای کے مابین مفاہمتی یادداشت پر دستخط کی منظوری دیدی ہے جس کے تحت پہلا پاکستان انیٹرنیشنل ڈیٹ پام فیسٹیول رواں برس ستمبر میں منعقد ہو گا۔

اقتصادی رابطہ کمیٹی کے 13 اور 14 فروری 2024ء کو منعقد ہونے والے اجلاس میں کیے گئے فیصلوں کی وفاقی کابینہ نے توثیق کر دی ہے۔ وفاقی کابینہ نے کمیٹی برائے حکومتی ملکیتی ادارہ جات 16 فروری 2024ء کو ہونے والے اجلاس میں ہوئے فیصلوں اور کمیٹی برائے لیجسلیٹو کیسز کے 16 فروری کو منعقدہ اجلاس میں ہوئے فیصلوں کی بھی توثیق کر دی ہے۔
TURKEEYA WILL GIVE MEDAL TO HAFIZ WHISKY BOSS WHY??????

hein for what for wearing army hat n wardi with jalee useless fraud medals for doing what?for shitting in toilet?

keeya kaarnama keeyaa

apnee qaum purr saqt tureen zulm firoun hitler type,

khanoon constitution kee dhujeeyaun urra dein human rights abuse,

destroyed election fraudulently stole citizens mandate

,certified 100% daku choreroun koe dubaarae humnarae surroun pae

turkeeya bhee paagul hogaya keeyoun why???????

medal lae kurr keeya kurrae gaa whole pakistan hates him n bajwaa,

kiss koe show maarae gaa?? yaa saarae medal khuburr akheerut rozae hushurr mein use kurrae ga
 
Last edited:

ranaji

President (40k+ posts)
سنا ہے وہ ایوارڈ ڈلڈو کی شکل کا ہے گشتی فرارئ اور اسکو لانے والے دونوں راضی ہوں گے اس وائبریٹر سے اور فالتو وقت پر حرام کے نطفے چور فراڈئے امرتسر رام گلی کے چکلے والے گشتی سپلائر دلے ہاراں والے کنجر کا چور فراڈیا پڑپوتا منی لانڈر نواز شریف بٹ بھئ اینل سٹڈ کئ جگہ استعمال کرے گا