سن بدنام زمانہ نانی دھرتی ماں کو بدنام کرنے کے لیے ہوا کیا

hello

Minister (2k+ posts)
افغان سفیر کی بیٹی اور نواز شریف کی بیٹی
پاکستان کو بدنام کرنے کیلیے جس کے خود ساختہ اغوا کا ڈرامہ رچایا گیا
جب ایجنسیوں نے تحقیقات شروع کیں تو بہت حیرت انگیز انکشافات کا سلسلہ شروع ھوگیا
تمام موبائل فونز ڈیٹا ڈیلیٹ کردیا شائد پاکستان کو بھی افغانستان سمجھ لیا تھا
جب ایجنسیوں نے راولپنڈی جانے اور وھاں سے دامن کوہ جانے کے متعلق سوالات کئے تو اپنی استانی مریم صفدر کی طرح مجھے نہیں پتہ میں وھاں کیسے پہنچ گئی
آپ نے جانے سے پہلے پولیس کو اطلاع کیوں نہ دی
میں بھول گئی تھی
آپ کا ٹیکسی میں فون پر کس کس سے رابطہ ھوا
مجھے یاد نہیں ھے
اپ نے موبائل ڈیٹا ڈیلیٹ کیوں کیا ھے
میری عادت ھے
آپ ایف سکس سے واپس گھر کی بجائے راولپنڈی کس مقصد کیلیے اور پھر وھاں سے دامن کوہ کس سے ملنے گئی تھیں
میں ھر بات بتانے کی پابند نہیں ھوں
یہ ھے اغوا کا سارا قصہ اور ڈرامہ بازی جس پر ن لیگ کی لیڈر شپ نوازشریف اورپانچ ملکی ایجنڈے کے تحت شور مچا کر حکومت اور فوج پر تنقید کر رھی ھے
پاکستان کی ایجنسیوں کی اس قدر مربوط اور اعلی کاروائی پر یہ ڈرامہ مکمل فلاپ ھوگیا ھے
جس کے صرف پاکستان سے سفارتی ایمیونٹی کے تحت واپسی کے علاوہ سوائے پول کھلنے کے کوئی اور راستہ موجود نہیں تھا
باعث شرم اور زلالت کی بات نوازشریف اور ن لیگ کا اس جعلسازی میں پاکستان مخالفت رویہ ھے
نوازشریف خاندان نے ھر ایسے موقع پر دشمن کی مدد اور پاکستان کی مخالفت میں بھرپور کردار ادا کیا ھے
عید سے پہلے ان شاءاللہ ھمارے تحقیقاتی ادارے اپنی تحقیقات مکمل کرکے اس سازش کو بےنقاب کردیں گے
ان شاءاللہ ان شاءاللہ ان شاءاللہ
نوازشریف
افغانستان
برطانیہ
امریکہ
اسرائیل
اور
انڈیا کا منہ کالا ھوگا اور انکو منہ کی کھانا پڑے گی
پاکستان کی حکومت بطور ایک ذمہ دار ریاست اپنے اداروں کے ساتھ سُرخرو ھوگی
یہ سب ایف اے ٹی ایف کے ایجنڈے کا حصہ ھے
اور
Absolutely Not
کے آفٹر شاک ھیں
پیارے پاکستانیو
حکومت اور فوج نے پاک وطن کو اس دلدل میں جانے سے بچا لیا ھے جو دلدل افغانستان میں ھمارے لئے تیار کی گئی تھی
الحمداللہ
زندہ اور پائندہ قوم کا مشن مکمل کیا جائے گا
منقول
 
Advertisement

hello

Minister (2k+ posts)
is ko asli jati umra deport karo.. inka dil hindustan ke liye darakta hai. inka pakistan se koyi lena dena nahi

جب پاکستانی کی فوج نے ٹیک اوور کیا تو ہاٹ لائن پر جس کے گنگلو کے منہ والے بیٹے نے ہندوستانی وزیر اعظم واجپائی کو کہا انکل ابو کو اتار دیا آپ پاکستان پر حملہ کر دیں کیا یہ غداری نہیں تھی
جو پاکستان سے بھاگ گیا اور سعودی عرب میں فیکٹریاں بنائیں اور ایک بھی پاکستانی وہاں بھرتی نہیں کیا سب لیبر یا بنگالی تھی یا ہندوستانی کیا یہ حب الوطنی تھی
جو مبئی حملوں میں پاکستان کو قصور وار ٹھرا رہا تھا اجمل قصاب پاکستانی ہے کہہ رہا تھااور ہندوستانیوں کی حمایت کر رہا تھا انہیں فائدہ دے کر یہ اپنی وفا داری کس سے ثابت کر رہا تھا
جس نے ہزاروں مسلمانوں کے قاتل قصائی مودی کو گھر بغیر ویزا شادی پر بلایا
اور اس کے ساتھ پگڑیاں تبدیل کیں دنیا نے دیکھا یہ محبت انسیت ہمیں کس چیز کا سبق دیتی ہیں
جس کے بارے میں بھارتی جنرل سر عام کہتے ہیں ہم نے اس پرانویسمنٹ کی ہے
اپنی فوج کو گالیاں لیکن لیکن گلبوشن کا نام لینے میں کسے شرم آتی تھی یہ سب تاریخ کا حصہ ہے جس کا نکار کرنا مشکل ہے
لعنت اسی سوچ پر تم اور ہم ایک ہی ہیں ہم ایک رب کو پوجتے ہیں بس بیچ میں ایک لکیر آگئی ہے کس لعنتی نے کہا اس شخص نے کیا قوم کا بھلا کیا
میتل سے جس کی کارباری رشتہ داری ہے جو آج بھی ہندوساتنی جاسوسوں سے مل رہا ہے اور وہ قوم کو اس کا جواب نہ دے سکا
جو کہتے تھےمودی کا خاص آدمی بھارتی جندل ہمارا فیملی فرینڈ دوست ہے یہ کس سوچ کی عکاسی تھی
جس کی فیکٹریوں سے ہندوستانی جاسوس پکڑے گئے
جس نے مسلمانوں کے قاتل قصائی مودی کی ماں کو ساڑھی بھیجی واہ واہ تیری محبتیں نواز شریف نے ہندوستان کیخلاف بیانات نہ دینے کی ہدایت کی، سابق ترجمان دفتر خارجہ جس کی یہ ہدایت تھی
جو چھپ چھپ کر مودی سے سری لنکا میں ملاقاتیں کرتا تھا جس انکشاف بھارتی صحافی برکادہت نے کیااس نے
پاکستانی فوج کے خلاف بات کرنے پر جس کی ہندو میڈیا تعریفیں کرتے نہیں تھکتا
آج کل جس کی بیٹی اور اس کے اتحادی وہ بلوچسان پر ہندو سوچ پاکستان سے علحیدگی کی حمایت کر رہیں ہیں
مودی کے حلف پر گیا جس نے ہندوستان جا کر کشمیری رہنماؤں سے ملنے سے انکار کیا
اور یہ کنجر کوئی اور نہیں پٹواریوں کا لیڈر نواز شریف ہے
 

Diesel

Chief Minister (5k+ posts)

جب پاکستانی کی فوج نے ٹیک اوور کیا تو ہاٹ لائن پر جس کے گنگلو کے منہ والے بیٹے نے ہندوستانی وزیر اعظم واجپائی کو کہا انکل ابو کو اتار دیا آپ پاکستان پر حملہ کر دیں کیا یہ غداری نہیں تھی
جو پاکستان سے بھاگ گیا اور سعودی عرب میں فیکٹریاں بنائیں اور ایک بھی پاکستانی وہاں بھرتی نہیں کیا سب لیبر یا بنگالی تھی یا ہندوستانی کیا یہ حب الوطنی تھی
جو مبئی حملوں میں پاکستان کو قصور وار ٹھرا رہا تھا اجمل قصاب پاکستانی ہے کہہ رہا تھااور ہندوستانیوں کی حمایت کر رہا تھا انہیں فائدہ دے کر یہ اپنی وفا داری کس سے ثابت کر رہا تھا
جس نے ہزاروں مسلمانوں کے قاتل قصائی مودی کو گھر بغیر ویزا شادی پر بلایا
اور اس کے ساتھ پگڑیاں تبدیل کیں دنیا نے دیکھا یہ محبت انسیت ہمیں کس چیز کا سبق دیتی ہیں
جس کے بارے میں بھارتی جنرل سر عام کہتے ہیں ہم نے اس پرانویسمنٹ کی ہے
اپنی فوج کو گالیاں لیکن لیکن گلبوشن کا نام لینے میں کسے شرم آتی تھی یہ سب تاریخ کا حصہ ہے جس کا نکار کرنا مشکل ہے
لعنت اسی سوچ پر تم اور ہم ایک ہی ہیں ہم ایک رب کو پوجتے ہیں بس بیچ میں ایک لکیر آگئی ہے کس لعنتی نے کہا اس شخص نے کیا قوم کا بھلا کیا
میتل سے جس کی کارباری رشتہ داری ہے جو آج بھی ہندوساتنی جاسوسوں سے مل رہا ہے اور وہ قوم کو اس کا جواب نہ دے سکا
جو کہتے تھےمودی کا خاص آدمی بھارتی جندل ہمارا فیملی فرینڈ دوست ہے یہ کس سوچ کی عکاسی تھی
جس کی فیکٹریوں سے ہندوستانی جاسوس پکڑے گئے
جس نے مسلمانوں کے قاتل قصائی مودی کی ماں کو ساڑھی بھیجی واہ واہ تیری محبتیں نواز شریف نے ہندوستان کیخلاف بیانات نہ دینے کی ہدایت کی، سابق ترجمان دفتر خارجہ جس کی یہ ہدایت تھی
جو چھپ چھپ کر مودی سے سری لنکا میں ملاقاتیں کرتا تھا جس انکشاف بھارتی صحافی برکادہت نے کیااس نے
پاکستانی فوج کے خلاف بات کرنے پر جس کی ہندو میڈیا تعریفیں کرتے نہیں تھکتا
آج کل جس کی بیٹی اور اس کے اتحادی وہ بلوچسان پر ہندو سوچ پاکستان سے علحیدگی کی حمایت کر رہیں ہیں
مودی کے حلف پر گیا جس نے ہندوستان جا کر کشمیری رہنماؤں سے ملنے سے انکار کیا
اور یہ کنجر کوئی اور نہیں پٹواریوں کا لیڈر نواز شریف ہے
mian sanp ko judiciary or military establishment ne dood pila pila kar Izdaa bana diya. ab Izdaha kisi ke control mei nahi.. Izdaha aisi bala hai ke wo apne bacho ko bi ka jati hai
 

brohiniaz

Minister (2k+ posts)
عمران خان نے آج برہان وانی کا نام لے کر مودی کے کلیجے پر نمک چھڑکا ایک وہ بے غیرت تھا جو کہتا تھا اجمل قصاب ساڈی پھپھی دا منڈا
Rolling on the floor laughing
🖐
 

ranaji

President (40k+ posts)
چوہدری منیر ٹھیکیدار عرف منیرا کنجر رحیم یار خان میں شاہی خاندان والوں کا بروتھل چلانے والا جو ایک معمولی مزدور تھا جب یہ منیرا
پانڈی ہوتا تھا اور رحیم یار خان کے ایک ٹھیکیدار کے پاس مزدوری کرتا تھا اور جب شیخ زید بن سلطان النہیان تلور اور پاکستانی تلوریوں کا شکار کرنے آتا

تھا اس وقت اس شکار گاہ میں ٹینٹ لگانے والوں مزدوروں میں یہ منیرا پانڈی بھی ہوتا تھا پھر ایک دن اس کی بہین پر شیخ زید کی نظر پڑ گئی اور شیخ زید چند اور لڑکیوں کے ساتھ اس منیرے پانڈی کی

بہین کو بھی دوبئی میں اپنے شاہی محل میں خاص خدمات کے لئے لونڈی کی حیثیت سے منیرے پانڈی سے خرید کر لے گیا تھا ان ہی دنوں بابرہ شریف کو

بھی شیخ زید اسی طرح لے کر گیا تھا
اس معمولی
مزدور منیرے پانڈی کی قسمت اپنی بہنُ کی کمائی کی وجہ سے کھل گئی اور بہنوں کی کمائی کی وجہ سے یہ خود ٹھیکیدار بن گیا


اور پھر منیر ٹھیکیدار بن گیا اور اور دوبئی کے شاہی محل کاقابل بھروسہ سپلائر بھی اور اپنی زاتی گھریلو پلی ہوئی تلوریوں کے ساتھ ساتھ پاکستان سے چن چن
کر خرید خرید کر تلوریاں دوبئی شاہی

خاندان کو سپلائی کرنا اسکا پیشہ تھا پھر یہ چوہدری منیر ٹھیکیدار بن گیا اس کا ایک پارٹنر بھی بنا جو ایک فوجی افسر تھا اس نے بھی دولت کی خاطر اس کا پیشہ اپنا لیا۔ اور اپنے بیٹے کو بھی

فوج میں بھرتی کرا دیا اور منیرے کنجر کے بروتھل میں پارٹنر اور تلوریاں سپلائی کے بدلے شاہوں کی ناجائیز سفارش پر اپنے بیٹے کو ناجائیزپروموشنز دلاتا رہا اسی منیرے کنجر کے شاہی تعلقات کو استعمال کرکے نواز شریف نے
اپنے زاتی تعلقات بھی دوبئی ،قطر اور سعودی شہزادوں سے بنائے
اور پھر اسی چوہدری منیر ٹھیکیدار سابقہ المعروف منیرے کنجر نے اسحاق ڈار اور بہت سے دوسروں سیاست دانوں کےتعلقات
دوبئی ، قطر اور عرب حکمرانوں سے بنوائے
اور تو اور ڈاکٹر مصدق ملک کا شاہی خاندان میں تعارف بھی منیرے کنجر نے ڈاکٹر مصدق ملک سے اپنی جنسی کمزوری کا علاج کرانے کے بعد شاہی خاندان میں کرایا اس کا تعارف کرایا یہ ڈاکٹر مصدق ملک ان کا علاج انکو صرف ہنزہ گلگت سے منگوائی ہوئی

پاکستانی سلاجیت کھلا کر کرتا تھا اور ان کو یہ کہہ کر بیوقوف بناتا تھا کہ یہ اس کے پردادے کا خاندانی اور خفیہ نسخہ ہے حالانکہ وہ صرف
گلگت سے سلاجیت منگوا کر انکا علاج بھی کرتا تھا اور اپنے گھر کی پلی ہوئی تلوریاں بھی ان کو سپلائی کرتا تھا

اور ان شاہی خاندان کی سفارش پر یہ سلاجیتیا ڈاکٹر مصدق ملک مشرف کے دور میں سیاست میں آیا اور اب یہ بہت سے سیاست دانوں جرنیلوں اور صحافیوں کو بھی سلاجیت کھلا کر انکا علاج کر کے ان کو بیوقوف بنا رہا ہے اپنے پردادے کے خاندانی نسخے کے نام پر
اسی طرح منیرے کنجر نے بھی ہر کرپٹ سیاست دان کو ہڈی ڈالی
اپنے ہمُ زلف کی پوزیشن کا ناجائز فائیدہ اٹھایا

اور اسلام آباد ائیر پورٹ کی طرح بہت
سے پراجیکٹ لئے اور صرف دس ارب روپے تو اس نے اسلام آباد ائیر پورٹ میں کھائے صرف ایک پراجیکٹ میں دس ارب روپے کھائے جبکہ
دس ارب روپے
میں دنیا کے بہترین پانچ ہارٹ کڈنی یا کینسر ہسپتال بن سکتے ہیں جن سے لاکھوں لوگ ہر سال مفت علاج کرا سکتے تھے مگر اس منیرے کنجر نے اپنی سمدھن
مریم نواز شریف کے باپ نواز شریف کی مدد کی شاہوں کی دلا گیری کی بدولت
جی بھر پاکستان میں ٹھیکے لے کر اربوں روپے اس غریب عوام کے اپنے مردود باپ کا مال سمجھ کر لوٹے

اور اپنے ُزلف اور شاہوں کی مدد سے نواز شریف کو
اتنی لوٹ مار کے باوجود اس کو بھگوا دیا پہلے۔ بھی سرور محل میں قیام کے دوران نواز شریف نے اپنی چھوٹی بیٹی کے تعلقات شاہی شہزادے


سے کروا دئے اور اس کی شادی بھی شہزادے سے کرادی جس کو شہزادے نے تھوڑے دن عیاشی کرکے چھوڑ دیا اور پھر اسی شہزادے کی سابقہ بیوی
اور
مریم نواز کی بہن کو
نواز شریف نے اسی بیٹی کو اسحاق ڈار کا مونہہ بند کرنے اور حدیبیہ میں دوبارہ گواہی نہ دینے اور سابقہ گواہی سے مکرنے کے لئے اسحاق ڈار کے بیٹے سے اسکی شادی کردی اور ستائیس ارب روپے کے اثاثے اور غیر ملکی جائیداد اسکو دے دی
اور دوبئی کے وہ ٹاورز بھی نواز شریف نے اسحاق ڈار اور اس کے بیٹوں کو فرنٹ مین بنا بنائے تھے وہ اور جو اور اربوں روپے اور اربوں ڈالر اسحاق ڈار اور اس کے بیٹوں کو فرنٹ مین بنا کر لگائے تھے اس سے بھی دست بردار ہوگیا
اب بھی یہ ملک دشمن عوام دشمن فوج دشمن خاندان اپنے ان نطفہ حرام افسروں سیاست
دانوں اور چند فوجی افسروں اور چند ججوں کی مدد سے ملک میں انتشار پھیلا کر فوائید حاصل کرکے دوبارہ اقتدار میں آنے کی ناکام کوشش کر رہا ہے اسکی بیٹی۔

خود اپنی پریس کانفرنس میں کہہ چکی ہے کہ میرے پاس ججز کی پورنو گرافی جیسے اور بھی کلپ ہیں جس میں شاید فوجی افسر کچھ سیاستدان اور ججز بھی ہیں
اور ان حرام زادوں ملک دشمنوں اور طوائف نسلوں کرپٹ اور ان۔
کے کانے لوگوں کے پورنو کلپس کی وجہ سے یہ سزا یافتہ عورت روازانہ بھونکتی ہے اور ہماری فوج ہمارے شہیدوں کی توہین کرتی ہے
حرام زدگیاں کریں یہ کرپٹ ۔۔۔زادے کچھ کرپٹ جج کچھ جرنیل اور سیاسی لیڈر اور افسر
اور بھگتے پوری قوم۔
مگر اب نہیں
اس ساری داستان کو اس ساری سچائی کو رحیم یار خان کا بچہ بچہ جانتا ہے۔پورے ملک میں اور بھی بہت سے لوگ جانتے ہیں مگر اندھے گونگے اور اور بہرے بن چکے ہیں ہمارے میڈیا والے اور اس ٹبر کے پالتو کتے صحافی اور ہمار ی ایجنسیاں
 
Sponsored Link