الحمد للہ کویت میں داعش کی مکمل ناکامی

Zoq_Elia

Senator (1k+ posts)
الحمد للہ کویت میں داعش کی مکمل ناکامی
کویت میں حملے کے بعد شیعہ سنّی مزید قریب ہو گئے

۔1 جولائی 2015
حملہ اسلام پر ہوا نہ کہ سنّی یا شیعہ پر



150630173826_gettykuwait640.jpg

خودکش دھماکے میں کم سے کم 27 افراد ہلاک اور 227 زخمی ہو گئے تھے

کویت کے دارالحکومت کویت سٹی میں واقع شیعہ مسلمانوں کی ایک مسجد میں نماز جمعہ کے دوران خود کش دھماکے کے بعد کویتی شہری کھلے عام فرقہ واریت کو مسترد کر رہے ہیں اور سماجی رابطوں کی ویب سائٹوں پر آپس میں متحد رہنے پر زور دیا جا رہا ہے۔




مسجد پر خودکش حملہ سعودی شہری نے کیا تھا اور شدت پسند تنظیم دولتِ اسلامیہ نے اس دھماکے کی ذمہ داری قبول کی تھی۔

بظاہر اس حملے کا مقصد کویت میں شیعہ سنّی تفریق پیدا کرنا تھا لیکن واقعے کا ملک میں الٹا اثر ہوا ہے اور دارالحکومت کی گلیوں میں دونوں فرقوں کے افراد مل کر اس واقعے کی مذمت کر رہے ہیں اور سماجی رابطوں کی ویب سائٹوں پر اتحاد و اتفاق قائم رکھنے کی باتیں ہو رہی ہیں۔

onerank#ٹوئٹر پر عربی میں ہیش ٹیگ
کو حملے کے بعد دس ہزار بار استعمال کیا گیا ہے اور اس ہیش ٹیگ کا مقصد تھا کہ کویتی شہریوں کو فوج کی طرح متحد ہو کر دہشت گردی کو شکست دینا چاہیے۔

hamedalbader@
نے اپنے جذبات کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ’ دہشت گردی کا کوئی مذہب اور نہ
ہی کوئی شہریت ہوتی ہے تو آئیں جرائم کی سرگرمیوں سے خود کو منسوب نہ کریں کیونکہ یہ معاشرے کے بعض حلقوں کے لیے ہے اور ہم اپنا غصہ ان پر نکالیں
۔‘۔

اسی طرح کا ایک ہیش ٹیگ کویت ایک ہے اور کویت مضبوط ہے بہت ٹرینڈ کر رہا ہے
'Kuwait is one" and "Kuwait is strong'

اور اس میں بہت سارے افراد کویت کے امیر شيخ صباح الاحمد الجابر الصباح کے دھماکے کے فوری بعد مسجد کے دورے کے موقعے پر دیے گئے بیان کا ذکر کر رہے ہیں جس میں انھوں نے کہا تھا کہ اس واقعے میں ہلاک ہونے والے ’میرے بچے‘ ہیں
۔

150630173406_alzaidiq624.jpg

کویت کے ایک نامور صحافی عبداللہ کی ویڈیو شیئر کی جا رہی ہے

اس کے علاوہ کویت کے ایک نامور صحافی کی ویڈیو شیئر کی جا رہی ہے۔ صحافی عبداللہ بفتان شیعہ مسلمان ہیں اور دھماکے کے بعد مسجد پہنچے تھے اور وہاں لوگوں کو ترغیب دی تھی کہ سنّی مسلمانوں پر الزام عائد نہ کیا جائے اور تمام طرح ذمہ داری دولتِ اسلامیہ کی ہے جس نے اس واقعے کی ذمہ داری قبول کی ہے۔

‘‘ملک کو ضرورت ہے کہ ہم متحد رہیں، آج حملہ اسلام پر ہوا ہے نہ کہ سنّی یا شیعہ پر۔’’

کویت کی آبادی کا 30 سے 40 فیصد شیعہ ہے اور اختتام ہفتہ پر ایسی ویڈیوز سامنے آئی ہیں جس میں شیعہ اور سنّی ایک ساتھ نماز ادا کرتے دکھائی دیتے ہیں اور ان ویڈیو کو سماجی رابطوں کی ویب سائٹوں پر بہت زیادہ شیئر کیا جا رہا ہے۔ اس کے علاوہ ان تصاویر اور ویڈیو کا تبادلہ بھی کیا جا رہا ہے جس میں دھماکے کے فوری بعد شیعہ اور سنّی دونوں ایک ساتھ زخمیوں کے لیے خون عطیہ کر رہے ہیں۔

11665712_932693296768781_2477601195399917103_n.jpg



صحافی گونام ال گونام کے قریبی دوست علی رابی ال نصیر اس دھماکے میں ہلاک ہو گئے۔ انھوں نے بی بی سی کو بتایا کہ وہ سنّی ہیں اور ان کے دوست شیعہ تھے لیکن یہ فرق ان دونوں کے ذہن میں کبھی نہیں آیا تھا۔

11659240_399731236876723_2485384120950069853_n.jpg

11692566_399731240210056_2573940038392110317_n.jpg

کویت میں داعش کی جانب سے مسجد امام الصادق پر نماز جمعہ کے دوران حملے کے بعد، جس میں 27 سے اوپر شیعہ روزہ دار نمازی شہید ہو گئے تھے، سنی اور شیعہ مسلمانوں کی جانب سے بے مثال اظہار یکجہتی۔ سنی بھائیوں نے بھی شیعہ امام کے پیچھے نماز ادا کر کے تکفیری دہشتگردوں کو پر زور جواب دے دیا کہ مسلمانوں کو تقسیم کرنے کی ان کی کوشش کامیاب نہیں ہو سکے گی۔

انھوں نے کہا کہ سعودی عرب میں شدت پسند تنظیم دولتِ اسلامیہ کے شیعہ مسلمانوں کی مساجد پر حملوں کے بعد وہ پریشان تھے اور اپنے دوست علی سے کہا تھا کہ ’میرے خیال میں اب تمھیں گھر میں ہی نماز ادا کرنی چاہیے تو اس پر علی نے جواب دیا، پریشان مت ہو، ہم مسجد میں کیمرے نصب کر لیں گے اور سب ٹھیک رہے گا۔‘۔

خیال رہے کہ خطے میں کویت ان ممالک میں شامل ہے جہاں شیعہ مسلمان تعداد میں خاصے زیادہ ہیں لیکن وہاں سعودی عرب اور بحرین کی طرح فرقہ وارانہ ٹکراؤ ابھر کر سامنے نہیں آیا۔ (شکر الحمد للہ رب العالمین
Source
 
Last edited by a moderator:

Zoq_Elia

Senator (1k+ posts)
کویت میں جمعے کو شیعہ سنّی مسلمانوں نے اکھٹے نماز ادا کی
ایک گھنٹہ پہلے

150703213618_kuwait_640x360_afp.jpg


کویت کے دارالحکومت کویت سٹی میں واقع شیعہ مسلمانوں کی ایک مسجد میں نماز جمعہ کے دوران خود کش دھماکے کے ایک ہفتے بعد شہر میں شیعہ اور سنّی مسلمانوں نے ایک ساتھ نمازِ جمعہ ادا کر کے آپس میں اتحاد و اتفاق کا اظہار کیا ہے۔


کویت میں حملے کے بعد شیعہ سنّی مزید قریب ہو گئے


مسجد پر خودکش حملہ سعودی شہری نے کیا تھا اور شدت پسند تنظیم دولتِ اسلامیہ نے اس دھماکے کی ذمہ داری قبول کی تھی۔


کویت کی گرینڈ مسجد میں سنّی مسلمانوں کے امام ولید العلی نے خطبے میں کہا کہ’ شدت پسندی اس قتل و غارت کی طرف لے جاتی ہے‘۔

اس موقعے پر شیعہ اور سنّی مسلمانوں نے ایک ہی صف میں کھڑے ہو کر نماز ادا کی اور ان میں کویت کے امیر شيخ صباح الاحمد الجابر الصباح بھی شامل تھے۔

شیعہ مسلمان اور رکن پارلیمان عدنان عبدالصمد کے مطابق:’ یہ نماز اتحاد کی نماز ہے‘۔

۔’اس قابل نفرت جرم کی وجہ سے ہم اور زیادہ مضبوط ہوئے ہیں اور برداشت پیدا ہوئی ہے۔ اللہ کا شکر کہ ہمارے دشمن بے وقوف بن گئے، وہ کسی وہم میں تھے کہ اس جرم کی وجہ سے وہ اختلاف پیدا کر سکیں گے‘۔

کویت میں مسجد پر خودکش حملے کے ایک ہفتے بعد جمعے کو سکیورٹی کے انتہائی سخت انتظامات کیے گئے تھے اور درجنوں افراد کو حراست میں لیا گیا۔

150630173826_gettykuwait640.jpg

p1.jpg
خودکش دھماکے میں کم سے کم 27 افراد ہلاک اور 227 زخمی ہو گئے تھے

خیال رہے کہ خطے میں کویت ان ممالک میں شامل ہے جہاں شیعہ مسلمان تعداد میں خاصے زیادہ ہیں لیکن وہاں سعودی عرب اور عراق کی طرح فرقہ وارانہ ٹکراؤ ابھر کر سامنے نہیں آیا۔


مسجد پر خودکش حملے کے بعد سماجی رابطوں کی ویب سائٹس پر بھی اتفاق قائم رکھنے پر زور دیا جا رہا ہے۔

onerank#
رواں ہفتے ٹوئٹر پر عربی میں ہیش ٹیگ ون رینک کو حملے کے بعد دس ہزار بار استعمال کیا گیا ہے اور اس ہیش ٹیگ کا مقصد تھا کہ کویتی شہریوں کو فوج کی طرح متحد ہو کر دہشت گردی کو شکست دینا چاہیے۔

hamedalbader@
نے اپنے جذبات کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ’ دہشت گردی کا کوئی مذہب اور نہ ہی کوئی شہریت ہوتی ہے تو آئیں جرائم کی سرگرمیوں سے خود کو منسوب نہ کریں کیونکہ یہ معاشرے کے بعض حلقوں کے لیے ہے اور ہم اپنا غصہ ان پر نکالیں‘۔

1381162_934828613221916_5974306185708562527_n.jpg


11403028_934828666555244_4832197166972902846_n.jpg


JamNewsImage16561501.jpg


18786_934828686555242_7311507086916656591_n.jpg


11659246_934828703221907_3611901769343811918_n.jpg




سچ ہے کہ اتحاد بین المسلمین سے جس قدر تکفیریوں اور داعش کی جان جاتی ہے وہ ناقابل بیان ہے۔ اور بالکل یہی کیفیت اسرائیل کی ہوتی ہے۔
آئیے آج ہم تمام مسلمان دجال کے ان سپاہیوں کا مقابلہ میں متحد ہو کر دجال کے منصوبوں کو خاک میں ملا دیں۔ اور ان تکفیریوں کو ناکوں چنے چبوا دیں۔ اللہ وہ وقت جلد لائے جب ان خوارج کا سردار دجال واصل جہنم ہو اور دنیا کو ان کے ظلم و ستم سے نجات مل جائے۔۔۔


Source:
http://www.bbc.com/urdu/world/2015/07/150703_kuwait_sunni_shia_unity_prayers_zz
http://ur.abna24.com/service/important/archive/2015/07/03/698765/story.html
 
Last edited:

OnlyPK

Chief Minister (5k+ posts)
in H A R A M zado ko dekhty hi goli mar deni chahiye, Islam or poori duniya k liye ye buht bra khtra hy
 

such bolo

Chief Minister (5k+ posts)
خوشی کی بات هے
شیعه حضرات کو ایران کی دهشتگردی کو اور سنی حضرات کو داعش کی دهشتگردی کو مسترد کر کے ایران اور داعش کے عزائم کو ناکام بنانا چاهئے

مسلم ممالک ایران اور داعش کے خاتمے کے لئے مشترکہ کوشش کریں
یہی انکے مفاد میں هے
 

karachiwala

Prime Minister (20k+ posts)
عجیب بات ہے کہ اسی فورم پر چند لوگ اس بات کو بہت اچھال رہےتھے کہ حملہ کرنے والا سعودی تھا گویا حکومت شائد اس میں شامل تھی اور اب اتحاد کے نعرے بھی۔ میں خبر کے خلاف نہیں منافقت کے خلاف ہوں۔
 

Zoq_Elia

Senator (1k+ posts)
عجیب بات ہے کہ اسی فورم پر چند لوگ اس بات کو بہت اچھال رہےتھے کہ حملہ کرنے والا سعودی تھا گویا حکومت شائد اس میں شامل تھی اور اب اتحاد کے نعرے بھی۔ میں خبر کے خلاف نہیں منافقت کے خلاف ہوں۔

وہم اور تعصب کا کوئی علاج نہیں۔

میں نے بی بی سی کی خبر کو ہو بہو پوسٹ کیا ہے صرف کچھ متعلقہ تصویروں کا اضافہ کیا ہے۔ لیکن بی بی سی کے الفاظ میں سے کُچھ کاٹا نہیں۔ اب اس کا جو مرضی مطلب آپ نکال لیں۔ آپ کی مرضی۔۔۔۔۔

 

karachiwala

Prime Minister (20k+ posts)

وہم اور تعصب کا کوئی علاج نہیں۔

میں نے بی بی سی کی خبر کو ہو بہو پوسٹ کیا ہے صرف کچھ متعلقہ تصویروں کا اضافہ کیا ہے۔ لیکن بی بی سی کے الفاظ میں سے کُچھ کاٹا نہیں۔ اب اس کا جو مرضی مطلب آپ نکال لیں۔ آپ کی مرضی۔۔۔۔۔



بہت اچھا کیا جو پوسٹ کیا۔ پریشانی کس بات کی۔ کیا تم نے ہی وہ خبراچھالی تھی کہ بمبار سعودی تھا جو اتنے ناراض ہو رہے ہو؟
 

drkjke

Chief Minister (5k+ posts)
shia,s worse nightmnare is daesh.lol.and a whole propoganda cell in iran daily invents a new lie against isis.lol..i could give all the fake news but no benefit as people here are pro iran and almost worship iran.even pakistanis sunnis who worship graves consider iran to be holier than kaaba.

anyway see below picture as example





  • Lies: IS sells girls in Raqqah truth: The pics are from Lebanon & they were re-enacting a non-Islamic Shiite ritual
    CI4ofreUMAEr_g5.jpg

    CI4otNJVEAApnmu.jpg





 

Zoq_Elia

Senator (1k+ posts)
کویت میں جمعے کو شیعہ سنّی مسلمانوں نے اکھٹے نماز ادا کی
ایک گھنٹہ پہلے

150703213618_kuwait_640x360_afp.jpg


کویت کے دارالحکومت کویت سٹی میں واقع شیعہ مسلمانوں کی ایک مسجد میں نماز جمعہ کے دوران خود کش دھماکے کے ایک ہفتے بعد شہر میں شیعہ اور سنّی مسلمانوں نے ایک ساتھ نمازِ جمعہ ادا کر کے آپس میں اتحاد و اتفاق کا اظہار کیا ہے۔


کویت میں حملے کے بعد شیعہ سنّی مزید قریب ہو گئے


مسجد پر خودکش حملہ سعودی شہری نے کیا تھا اور شدت پسند تنظیم دولتِ اسلامیہ نے اس دھماکے کی ذمہ داری قبول کی تھی۔


کویت کی گرینڈ مسجد میں سنّی مسلمانوں کے امام ولید العلی نے خطبے میں کہا کہ’ شدت پسندی اس قتل و غارت کی طرف لے جاتی ہے‘۔

اس موقعے پر شیعہ اور سنّی مسلمانوں نے ایک ہی صف میں کھڑے ہو کر نماز ادا کی اور ان میں کویت کے امیر شيخ صباح الاحمد الجابر الصباح بھی شامل تھے۔

شیعہ مسلمان اور رکن پارلیمان عدنان عبدالصمد کے مطابق:’ یہ نماز اتحاد کی نماز ہے‘۔

۔’اس قابل نفرت جرم کی وجہ سے ہم اور زیادہ مضبوط ہوئے ہیں اور برداشت پیدا ہوئی ہے۔ اللہ کا شکر کہ ہمارے دشمن بے وقوف بن گئے، وہ کسی وہم میں تھے کہ اس جرم کی وجہ سے وہ اختلاف پیدا کر سکیں گے‘۔

کویت میں مسجد پر خودکش حملے کے ایک ہفتے بعد جمعے کو سکیورٹی کے انتہائی سخت انتظامات کیے گئے تھے اور درجنوں افراد کو حراست میں لیا گیا۔

150630173826_gettykuwait640.jpg

p1.jpg
خودکش دھماکے میں کم سے کم 27 افراد ہلاک اور 227 زخمی ہو گئے تھے

خیال رہے کہ خطے میں کویت ان ممالک میں شامل ہے جہاں شیعہ مسلمان تعداد میں خاصے زیادہ ہیں لیکن وہاں سعودی عرب اور عراق کی طرح فرقہ وارانہ ٹکراؤ ابھر کر سامنے نہیں آیا۔

مسجد پر خودکش حملے کے بعد سماجی رابطوں کی ویب سائٹس پر بھی اتفاق قائم رکھنے پر زور دیا جا رہا ہے۔

onerank#
رواں ہفتے ٹوئٹر پر عربی میں ہیش ٹیگ ون رینک کو حملے کے بعد دس ہزار بار استعمال کیا گیا ہے اور اس ہیش ٹیگ کا مقصد تھا کہ کویتی شہریوں کو فوج کی طرح متحد ہو کر دہشت گردی کو شکست دینا چاہیے۔

hamedalbader@
نے اپنے جذبات کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ’ دہشت گردی کا کوئی مذہب اور نہ ہی کوئی شہریت ہوتی ہے تو آئیں جرائم کی سرگرمیوں سے خود کو منسوب نہ کریں کیونکہ یہ معاشرے کے بعض حلقوں کے لیے ہے اور ہم اپنا غصہ ان پر نکالیں‘۔

1381162_934828613221916_5974306185708562527_n.jpg


11403028_934828666555244_4832197166972902846_n.jpg


18786_934828686555242_7311507086916656591_n.jpg


11659246_934828703221907_3611901769343811918_n.jpg




سچ ہے کہ اتحاد بین المسلمین سے جس قدر تکفیریوں اور داعش کی جان جاتی ہے وہ ناقابل بیان ہے۔ اور بالکل یہی کیفیت اسرائیل کی ہوتی ہے۔
آئیے آج ہم تمام مسلمان دجال کے ان سپاہیوں کا مقابلہ میں متحد ہو کر دجال کے منصوبوں کو خاک میں ملا دیں۔ اور ان تکفیریوں کو ناکوں چنے چبوا دیں۔ اللہ وہ وقت جلد لائے جب ان خوارج کا سردار دجال واصل جہنم ہو اور دنیا کو ان کے ظلم و ستم سے نجات مل جائے۔۔۔


Source:
http://www.bbc.com/urdu/world/2015/07/150703_kuwait_sunni_shia_unity_prayers_zz
http://ur.abna24.com/service/important/archive/2015/07/03/698765/story.html
 
Last edited:

Zoq_Elia

Senator (1k+ posts)

11049536_401686073347906_7187416668967312446_n.jpg


"شیعوں سے اہلسنت کے اختلافات اور بہت ہیں مگر یہ کفر و اسلام کے اختلافات نہیں ہیں، شیعہ کے پیچھے سنی اور اور سنی کے پیچھے شیعہ نماز پڑھ سکتا ہے کیوں کہ دونوں مسلمان ہیں اور ایک مسلمان کی نماز دوسرے مسلمان کے پیچھے ہو جاتی ہے۔ دونوں ایک دوسرے کے جنازے میں بھی شریک ہو سکتے ہیں۔"
۔


مولانا مودودی نے خود بھی اپنی اس بات پر عمل کیا۔ چنانچہ جب مشہور عراقی شیعہ عالم آیت اللہ عبدالحسین آل کاشف الغطاء (رح) لیاقت علی خاں کے زمانے میں پاکستان تشریف لائے تو مولانا نے نماز کے وقت امامت کے لئے انہیں آگے کر دیا اور ان کی اقتداء میں نماز ادا کی۔
(اظہار حقیقت، مولانا محمد اسحاق صدیقی، صفحہ 9، طبع کراچی)

ہماری شیعہ اور اہلسنت بھائیوں سے گزارش ہے کہ تخریب کاروں، دہشت گردوں اور فتنہ پردازوں کی باتوں میں نہ آئیں اور اپنے حقیقی علماء کی بات سنیں۔

اسلام کو تفرقے سے بچائیں کیونکہ اس کا فائدہ صرف اسلام دشمن طاقتوں کو ہو گا۔ دونوں فرقے مل کر دشمن کی سازشوں کو ناکام بنائیں اور دونوں مل کر اپنے حقیقی دشمن کو پہچانیں۔

 

karachiwala

Prime Minister (20k+ posts)

11049536_401686073347906_7187416668967312446_n.jpg


"شیعوں سے اہلسنت کے اختلافات اور بہت ہیں مگر یہ کفر و اسلام کے اختلافات نہیں ہیں، شیعہ کے پیچھے سنی اور اور سنی کے پیچھے شیعہ نماز پڑھ سکتا ہے کیوں کہ دونوں مسلمان ہیں اور ایک مسلمان کی نماز دوسرے مسلمان کے پیچھے ہو جاتی ہے۔ دونوں ایک دوسرے کے جنازے میں بھی شریک ہو سکتے ہیں۔"
۔


مولانا مودودی نے خود بھی اپنی اس بات پر عمل کیا۔ چنانچہ جب مشہور عراقی شیعہ عالم آیت اللہ عبدالحسین آل کاشف الغطاء (رح) لیاقت علی خاں کے زمانے میں پاکستان تشریف لائے تو مولانا نے نماز کے وقت امامت کے لئے انہیں آگے کر دیا اور ان کی اقتداء میں نماز ادا کی۔
(اظہار حقیقت، مولانا محمد اسحاق صدیقی، صفحہ 9، طبع کراچی)

ہماری شیعہ اور اہلسنت بھائیوں سے گزارش ہے کہ تخریب کاروں، دہشت گردوں اور فتنہ پردازوں کی باتوں میں نہ آئیں اور اپنے حقیقی علماء کی بات سنیں۔

اسلام کو تفرقے سے بچائیں کیونکہ اس کا فائدہ صرف اسلام دشمن طاقتوں کو ہو گا۔ دونوں فرقے مل کر دشمن کی سازشوں کو ناکام بنائیں اور دونوں مل کر اپنے حقیقی دشمن کو پہچانیں۔




​اوہ بھائی یہ ہم نے تو نہیں کہا نا کہ سنّی کو تکلیف دینا ثواب ہے اور اسے قتل کرنا جنت کے اعلیٰ درجوں تک پہنچا دیتا ہے؟ پھر کیوں ہم کو بھاشن دیتے ہو۔ اس کو دو جس نے یہ قول کہا ہے۔
 

Zoq_Elia

Senator (1k+ posts)
​اوہ بھائی یہ ہم نے تو نہیں کہا نا کہ سنّی کو تکلیف دینا ثواب ہے اور اسے قتل کرنا جنت کے اعلیٰ درجوں تک پہنچا دیتا ہے؟ پھر کیوں ہم کو بھاشن دیتے ہو۔ اس کو دو جس نے یہ قول کہا ہے۔

یہ بھاشن (نصیحت) اُن کیلیے نہیں جو یہ کہتے ہیں کہ سُنی یا شیعہ کو (صرف مسلکی اختلافات اور فرقہ وارانہ بنیادوں پر) تکلیف دینا ثواب ہے وغیرہ وغیرہ۔۔ یہ نصیحت تو اُن کیلیے ہے جن کے دل حق بات کو قبول کرتے ہیں اور وہ صحیح بات کا علم آ جانے کے بعد اپنی اصلاح کر لیتے ہیں۔ اللہ تعالٰی ہمیں تعصب اور تکبر کی بیماری سے بچائے اور حسد کی آگ، لالچ کے پھندوں اور جہالت کے اندھیروں سے محفوظ رکھے جو کہ شیطان کے بڑے ہتھیاروں میں سے ہیں۔ آمین یا رب العالمین۔
اللھم صلی علی محمد و آل محمد
 
Last edited:

Zoq_Elia

Senator (1k+ posts)
????? ??? ??? ???? ??? ???? ???????? ?? ????? ???? ????
??????? ??? ??? ?? ????? ?????? ?? ??? ?? ??????

????? ?? ??? ??? ??? ??? ???? ?? ???? ?? ?? ????? ?? ????? ???? ????? ???? ????? ???? ??? ???? ??? ???? ??? ?? ?? ???? ???? ??? ??- ?? ?? ??? ????? ?? ????? ????? ???? ?? ??? ??? ?? ???? ??? ??? ?????? ???? ???? ?? ?? ????? ??- ????? ??? ???? ??? ??? ???????? ?? ????? ??? ??? ???? ??? ???? ???????? ?? ????? ?? ??? ???? ???? ???? ?????? ????? ?? ????? ??? ???????? ?? ???? ????? ?? ???? ??????? ?? ???? ??? ?? ?? ???? ???? ????- ???? ??? ?? ???? ??? ???? ???? ?? ????? ??? ??? ???? ??? ???? ????? ?? ???? ?????? ????? ?? ??? ???? ???? ?? ?? ??? ?? ?? ????? ??? ?? ?? ?? ????? ???? ?????? ???? ????? ??? ????? ?? ???

1520649_935154036522707_2360341148935459948_n.png


Sunnis, Shias hold joint Friday prayers in Bahrain in show of unity


(AFP) / 3 July 2015

Residents said tight security was in place for the special session of weekly prayers in a mosque at Diraz.


prayer_315.jpg

prayers4_315.jpg

x.png
Dozens of Shias and Sunnis prayed side by side Friday in a mosque near the capital of Bahrain. - Photo: Reuters


restore.png

Dubai Dozens of Shias and Sunnis prayed side by side Friday in a mosque near the capital of Bahrain.

Residents said tight security was in place for the special session of weekly prayers in a mosque at Diraz.

The interior ministry ordered a strong police presence following deadly bombings at Shia mosques in Saudi Arabia and Kuwait carried out by extremists over the past two months.

The joint prayers were a show of Bahraini unity in the face of those plotting against the Arab and Islamic world, said Justice and Islamic Affairs Minister Sheikh Khaled bin Ali Al Khalifa.

Bahraini authorities, backed by volunteers, have stepped up checks on those entering mosques for Friday prayers in the wake of the attacks elsewhere in the Gulf.

The country has been hit by protests for political reforms since 2011.
For more news from Khaleej Times, follow us on Facebook at facebook.com/khaleejtimes, and on Twitter at @khaleejtimes

Source


?????? ??? ??????? ?? ???? ???? ?????? ?? ??????


 

Pukaar

Senator (1k+ posts)
کویت میں جمعے کو شیعہ سنّی مسلمانوں نے اکھٹے نماز ادا کی
ایک گھنٹہ پہلے

150703213618_kuwait_640x360_afp.jpg


کویت کے دارالحکومت کویت سٹی میں واقع شیعہ مسلمانوں کی ایک مسجد میں نماز جمعہ کے دوران خود کش دھماکے کے ایک ہفتے بعد شہر میں شیعہ اور سنّی مسلمانوں نے ایک ساتھ نمازِ جمعہ ادا کر کے آپس میں اتحاد و اتفاق کا اظہار کیا ہے۔


کویت میں حملے کے بعد شیعہ سنّی مزید قریب ہو گئے


مسجد پر خودکش حملہ سعودی شہری نے کیا تھا اور شدت پسند تنظیم دولتِ اسلامیہ نے اس دھماکے کی ذمہ داری قبول کی تھی۔


کویت کی گرینڈ مسجد میں سنّی مسلمانوں کے امام ولید العلی نے خطبے میں کہا کہ’ شدت پسندی اس قتل و غارت کی طرف لے جاتی ہے‘۔

اس موقعے پر شیعہ اور سنّی مسلمانوں نے ایک ہی صف میں کھڑے ہو کر نماز ادا کی اور ان میں کویت کے امیر شيخ صباح الاحمد الجابر الصباح بھی شامل تھے۔

شیعہ مسلمان اور رکن پارلیمان عدنان عبدالصمد کے مطابق:’ یہ نماز اتحاد کی نماز ہے‘۔

۔’اس قابل نفرت جرم کی وجہ سے ہم اور زیادہ مضبوط ہوئے ہیں اور برداشت پیدا ہوئی ہے۔ اللہ کا شکر کہ ہمارے دشمن بے وقوف بن گئے، وہ کسی وہم میں تھے کہ اس جرم کی وجہ سے وہ اختلاف پیدا کر سکیں گے‘۔

کویت میں مسجد پر خودکش حملے کے ایک ہفتے بعد جمعے کو سکیورٹی کے انتہائی سخت انتظامات کیے گئے تھے اور درجنوں افراد کو حراست میں لیا گیا۔

150630173826_gettykuwait640.jpg

p1.jpg
خودکش دھماکے میں کم سے کم 27 افراد ہلاک اور 227 زخمی ہو گئے تھے

خیال رہے کہ خطے میں کویت ان ممالک میں شامل ہے جہاں شیعہ مسلمان تعداد میں خاصے زیادہ ہیں لیکن وہاں سعودی عرب اور عراق کی طرح فرقہ وارانہ ٹکراؤ ابھر کر سامنے نہیں آیا۔


مسجد پر خودکش حملے کے بعد سماجی رابطوں کی ویب سائٹس پر بھی اتفاق قائم رکھنے پر زور دیا جا رہا ہے۔

onerank#
رواں ہفتے ٹوئٹر پر عربی میں ہیش ٹیگ ون رینک کو حملے کے بعد دس ہزار بار استعمال کیا گیا ہے اور اس ہیش ٹیگ کا مقصد تھا کہ کویتی شہریوں کو فوج کی طرح متحد ہو کر دہشت گردی کو شکست دینا چاہیے۔

hamedalbader@
نے اپنے جذبات کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ’ دہشت گردی کا کوئی مذہب اور نہ ہی کوئی شہریت ہوتی ہے تو آئیں جرائم کی سرگرمیوں سے خود کو منسوب نہ کریں کیونکہ یہ معاشرے کے بعض حلقوں کے لیے ہے اور ہم اپنا غصہ ان پر نکالیں‘۔

1381162_934828613221916_5974306185708562527_n.jpg


11403028_934828666555244_4832197166972902846_n.jpg


JamNewsImage16561501.jpg


18786_934828686555242_7311507086916656591_n.jpg


11659246_934828703221907_3611901769343811918_n.jpg




سچ ہے کہ اتحاد بین المسلمین سے جس قدر تکفیریوں اور داعش کی جان جاتی ہے وہ ناقابل بیان ہے۔ اور بالکل یہی کیفیت اسرائیل کی ہوتی ہے۔
آئیے آج ہم تمام مسلمان دجال کے ان سپاہیوں کا مقابلہ میں متحد ہو کر دجال کے منصوبوں کو خاک میں ملا دیں۔ اور ان تکفیریوں کو ناکوں چنے چبوا دیں۔ اللہ وہ وقت جلد لائے جب ان خوارج کا سردار دجال واصل جہنم ہو اور دنیا کو ان کے ظلم و ستم سے نجات مل جائے۔۔۔


Source:
http://www.bbc.com/urdu/world/2015/07/150703_kuwait_sunni_shia_unity_prayers_zz
http://ur.abna24.com/service/important/archive/2015/07/03/698765/story.html

Shia and Sunni pray together all across Arab world. The whole fasad is in Pakistan/India because Shia openly curse Sahaba and Sunni resort to violence over it.