پولیس اہلکاروں کی شہادت پر اعجاز چودھری کی انوکھی منطق

3ejazchau.jpg

رہنما پاکستان تحریک انصاف اعجاز چوہدری نے لاہور میں تحریک لبیک پاکستان کے ساتھ تصادم میں پولیس اہلکاروں کی شہادت کی انوکھی توجیہہ پیش کردی ہے۔

نجی ٹی وی چینل اے آر وائی نیوز سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے تحریک انصاف کے سینیٹر چوہدری اعجاز نے کہا کہ پولیس والوں سے 24 گھنٹے کی ڈیوٹی لی گئی جس کی وجہ سے پولیس اہلکاروں کی شہادت ہوئی، مجھے شہید ہونے والے پولیس اہلکاروں کے اہلخانہ سے ہمدردی ہے۔

میزبان نے سوال کیا کہ اگر آپ کو ہمدردی ہے تو کیا آپ ان پولیس اہلکاروں کے گھر گئے جس پر چوہدری اعجاز نے کہا کہ جی نہیں میں ان کےگھر نہیں گیا، میں نے پولیس افسران سے بات کی ہے اس سے زیادہ اس معاملے پر مزید بات نہیں کروں گا اور نہ ہی میں فواد چوہدری کے بیانات سے متعلق کوئی جواب دوں گا۔


انہوں نے مزید کہا کہ ٹی ایل پی کے دھرنے کے دوران میں مسلسل کہتا رہا کہ طاقت کے استعمال سے کوئی حل نہیں نکلے گا، فواد چوہدری نے غیر مہذب زبان استعمال کی ہے انہیں سوچ سمجھ کر بولنا چاہیے کیونکہ ایسی زبان سے انتہا پسندی بڑھتی ہے برائی کو ایسے دور نہیں کیا جاسکتا۔

اعجاز چوہدری نے کہا کہ سعد رضوی کی رہائی کے بعد اپنی ذاتی حیثیت سے پھول پیش کرنے ان کے گھر سے گیا تھا میں نے ٹی ایل پی سے کسی سیاسی اتحاد کی بات نہیں کی۔
 
Advertisement

Saboo

Prime Minister (20k+ posts)
أه …..کیسے کیسے لوگ ! میرا مطلب ہے اعجاز چودھری جیسے لوگ
میری جھانٹیں جلانے آ جاتے ہیں …... 😁
 

samkhan

Chief Minister (5k+ posts)
حکومت، فوج، اپوزیشن خادم لنگڑے کہ لونڈے کہ نیچے سب اوندھے لیٹےہوۓ ہیں
 

Curious_Mind

MPA (400+ posts)
3ejazchau.jpg

رہنما پاکستان تحریک انصاف اعجاز چوہدری نے لاہور میں تحریک لبیک پاکستان کے ساتھ تصادم میں پولیس اہلکاروں کی شہادت کی انوکھی توجیہہ پیش کردی ہے۔

نجی ٹی وی چینل اے آر وائی نیوز سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے تحریک انصاف کے سینیٹر چوہدری اعجاز نے کہا کہ پولیس والوں سے 24 گھنٹے کی ڈیوٹی لی گئی جس کی وجہ سے پولیس اہلکاروں کی شہادت ہوئی، مجھے شہید ہونے والے پولیس اہلکاروں کے اہلخانہ سے ہمدردی ہے۔

میزبان نے سوال کیا کہ اگر آپ کو ہمدردی ہے تو کیا آپ ان پولیس اہلکاروں کے گھر گئے جس پر چوہدری اعجاز نے کہا کہ جی نہیں میں ان کےگھر نہیں گیا، میں نے پولیس افسران سے بات کی ہے اس سے زیادہ اس معاملے پر مزید بات نہیں کروں گا اور نہ ہی میں فواد چوہدری کے بیانات سے متعلق کوئی جواب دوں گا۔


انہوں نے مزید کہا کہ ٹی ایل پی کے دھرنے کے دوران میں مسلسل کہتا رہا کہ طاقت کے استعمال سے کوئی حل نہیں نکلے گا، فواد چوہدری نے غیر مہذب زبان استعمال کی ہے انہیں سوچ سمجھ کر بولنا چاہیے کیونکہ ایسی زبان سے انتہا پسندی بڑھتی ہے برائی کو ایسے دور نہیں کیا جاسکتا۔

اعجاز چوہدری نے کہا کہ سعد رضوی کی رہائی کے بعد اپنی ذاتی حیثیت سے پھول پیش کرنے ان کے گھر سے گیا تھا میں نے ٹی ایل پی سے کسی سیاسی اتحاد کی بات نہیں کی۔
جب اس جیسے لوگ پی ٹی آئی پنجاب کے صدر ہونگے تو پھر بُزدار جیسے ہی وزیر اعلی بنیں گے۔
 

pakistankamaltabkia_

Councller (250+ posts)
Bilkul sahee bola:

1. he condemn killing of police
2. He is mourns the loss of police and called ppl
3. He has been to the houses of shu Hadi of police and army faujis who died fighting terrorists (on record) !!!!!
4. He refused to go against party member
5. He categorically said that fawad ch used disrespectful language but did not reply
6. The fucking MOST important thing he said violence is not answer to the solution but things must be handled peacefully!!!!!

there are qadianis, raw and cia/mossad agents who want violence in Pakistan who wants muslims killing Muslims !!!!!!!
Wow !!!!!!

how u abuse one person …… by going against him u just prove he is right
 

pakistankamaltabkia_

Councller (250+ posts)
Is kodu ko TLP may hona chahiay…
Tum dare rahay ho wo PTI mein kyun hay !!!!
Sarro sarro !!!!
Burn baby burn !!!!!

Kabhi ghurbat mein zindagi guzari hay?

taliban sey kisi ney poocha …. He was guarding a road on Kabul and didn’t have breakfast or lunch ….. he said doesn’t get tired working all day with little food n no salary …… he said no !!!! This life is better than living in mountains for past 20 years !!!!!!
 

Typhoon

Senator (1k+ posts)
3ejazchau.jpg

رہنما پاکستان تحریک انصاف اعجاز چوہدری نے لاہور میں تحریک لبیک پاکستان کے ساتھ تصادم میں پولیس اہلکاروں کی شہادت کی انوکھی توجیہہ پیش کردی ہے۔

نجی ٹی وی چینل اے آر وائی نیوز سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے تحریک انصاف کے سینیٹر چوہدری اعجاز نے کہا کہ پولیس والوں سے 24 گھنٹے کی ڈیوٹی لی گئی جس کی وجہ سے پولیس اہلکاروں کی شہادت ہوئی، مجھے شہید ہونے والے پولیس اہلکاروں کے اہلخانہ سے ہمدردی ہے۔

میزبان نے سوال کیا کہ اگر آپ کو ہمدردی ہے تو کیا آپ ان پولیس اہلکاروں کے گھر گئے جس پر چوہدری اعجاز نے کہا کہ جی نہیں میں ان کےگھر نہیں گیا، میں نے پولیس افسران سے بات کی ہے اس سے زیادہ اس معاملے پر مزید بات نہیں کروں گا اور نہ ہی میں فواد چوہدری کے بیانات سے متعلق کوئی جواب دوں گا۔


انہوں نے مزید کہا کہ ٹی ایل پی کے دھرنے کے دوران میں مسلسل کہتا رہا کہ طاقت کے استعمال سے کوئی حل نہیں نکلے گا، فواد چوہدری نے غیر مہذب زبان استعمال کی ہے انہیں سوچ سمجھ کر بولنا چاہیے کیونکہ ایسی زبان سے انتہا پسندی بڑھتی ہے برائی کو ایسے دور نہیں کیا جاسکتا۔

اعجاز چوہدری نے کہا کہ سعد رضوی کی رہائی کے بعد اپنی ذاتی حیثیت سے پھول پیش کرنے ان کے گھر سے گیا تھا میں نے ٹی ایل پی سے کسی سیاسی اتحاد کی بات نہیں کی۔
Iss khote sikke ko farigh karein.
 
Sponsored Link