علی بھائی سے سیاسی اختلاف

xshadow

Minister (2k+ posts)
مجھے خوشی اس بات کی ہے کہ علی بھائی کے پلیٹ فارم سے سیاست پر بات ہورہی ہے۔ اس سے پہلے انکے کامنٹس میں نے دیکھے کسی دوسرے چینل کی سیاسی ویڈیوز پر جہاں پر سیاسی تھیوریاں پکائی جارہی تھیں اور علی بھائی کے آفیشل چینل سے تعریفوں کے پل باندھے جارہے تھے۔ مجھے اپنی آنکھوں پر یقین نہ آیا کہ کسی کے کندھے پر بندوق رکھ کر چلانا علی بھائی کا شیوا تو نہیں اور میں نے وہاں بھی کامنٹ کا جواب دیا کہ اگر حقیقت آپ پر عیاں ہے تو اپنے پلیٹ فارم سے اسے لوگوں تک پہنچائیں تاکہ اپکو براہراست اسکا جواب دیا جاسکے یا اپ سے اس کے بارے میں سوال کیا جاسکے۔

حالیہ ویدیو میں محمد علی بھائی نے کچھ باتیں کیں ہیں جنکا جواب میں سمجھتا ہوں کہ دینا انتہائی ضروری ہے۔ اس سے پہلے انکی طرح میں بھی یہ بات واضع کردینا چاہتا ہوں کہ عمران خان سے اختلاف کیا جاسکتا ہے کیونکہ وہ کوئی فرشتہ نہیں ہے اور اسکے کئی بیانات متنازعہ ہیں اور اس نے کئی سیاسی غلطیاں کی ہیں۔ مگر ایسا اختلاف جس سے اسکے مخالفین کو فائدہ ہو مثلا سرفہرست نون لیگ پھر پیپلزپارٹی' فضل الرحمن وغیر اسکی کوئی منطق سمجھ نہیں آتی۔ ہاں علی بھائی خود میدان عمل میں آئیں اور کہیں کہ سارے غلط ہیں اور انکو ووٹ دیا جائے تو میں سب سے پہلے انکو ووٹ دوں گا۔ ورنہ تاثر یہ جائیگا کہ وہ نون لیگ کو سپورٹ کررہے ہیں کیونکہ پنجاب میں اگر کوئی پارٹی پی ٹی آئی کا مقابلہ کرسکتی ہے تو وہ ہے نون لیگ۔ اسلیے ڈھکے چپھے الفاظ میں انکے پلیٹ فارم سے نون لیگ کا بیانیہ نکل کر آرہا ہے اور اس پر میرا حق ہے کہ میں سوال پوچھ سکوں۔

سب سے پہلے تو علی بھائی نے کہا کہ حالیہ خط جو ملک کے وزیراعظم نے لہرایا وہ جعلی ہے اور دلیل پیش کی کہ ندیم ملک نے فوج کو خط لکھ کر پوچھا کہ اس خط کی سچائی کیا ہے تو جواب آیا کہ کوئی مس کمیونیکیشن یا اردو میں کہہ لیں کہ غلط فہمی کی وجہ سے یہ خط باہر آیا اور ایسی کوئی بات نہیں ہے کہ امریکہ نے دھکی دی ہے وغیر وغیرہ۔
علی بھائی سے گزارش ہے ادب کے ساتھ کہ نیشنل سکیورٹی کونسل کے اجلاس میں اپوزیشن نے شرکت نہیں کی پہلا جرم ہے کیونکہ اس اجلاس کا اعلامیہ صاف صاف بتا رہا ہے کہ ایسا خط موجود ہے اور اسکی حقیقی تحریر اس سے بھی سخت ہے جو وزیراعظم نے بتائی۔ اور ملک کا وزیراعظم ملکی راز بتانے کا ویسے ہی پابند نہیں ہے۔ اسی لیے اسے نیشنل سکیورٹی کانسل میں دکھایا گیا۔ البتہ ندیم ملک کسی قومی راز کے چپھانے کا پابند نہیں ہے اسلیے اسے چاہیے کہ اپنا خط بمع اسکے جواب کے قوم کے سامنے رکھے ورنہ ابھی تک نیشنل سکیورٹی کونسل کا اعلامیہ ہی مصدقہ سمجھا جائیگا۔ اسکے علاوہ شاہ محمود کریشی کا بیان ہے کہ ڈونلد رو کی کال بھی آئی تھی جس میں سنگین نتائیج کی دھمکی دی گئی تھی روس کے دورہ سے پہلے۔ اب یاد رہے کہ ہر سفارتی کال ریکارڈ ہوتی ہے اور یقینا پیش بھی کی جائیگی اگر معاملہ زیادہ آگے بڑھا۔ ایسے ہی اپوزیشن نے قومی سلامتی کونسل کا بائکاٹ نہیں کیا۔ اور کیا امریکہ کی تاریخ نہیں رہی تختے الٹنا۔ عجیب اتفاق ہے کہ سری لنکا اور نیپال میں بھی امریکی مداخلت کے الزامات لگ رہے ہیں۔ چلین روس اور چین تو امریکہ کی دشمنی میں الزام لگا رہے ہیں مگر سری لنکا اور نیپال سے کیوں آوازیں آرہی ہیں امریکی مداخلت کی۔ ترقی میں عمران خان کے حق میں ایک فضا بن گئی ہے کیا وہاں بھی فوج نے بیانیہ بنایا ہے۔ مجھے تو لگتا ہے کہ مہنگائی نے اپکی آنکھوں پر پٹی باندھ دی ہے جسکا جواب میں آگے جاکر دوں گا کہ مہنگائی کیوں ہوئی۔

دوسرا اعتراض انہوں نے کیا عمران خان کے عدم اعتماد کا سامنا نہ کرنے پر اور سینٹ چیئر مین سنجرانی کو بچانے کے اپوزیشن کے بندوں کو توڑنے کا موازنہ کیا گیا آج کے منحرف آراکین کے ساتھ۔
اول تو اس بات کا کوئی ثبوت موجود نہیں ہے کہ ایجنسیوں نے یا پی ٹی آئی نے اپوزیشن کے بندوں کو خریدا بلکہ انکے غائب ہونے کے بعد کسی ایک نے آکر یہ نہیں کہا کہ ہم نے پیسے پکڑ کر ایسا کیا ہے۔ مگر پھر بھی مان لیتے ہیں کہ کسی نے سینٹ الیکشن میں بندے توڑے۔ بلکل غلط ہے دونوں جگہ پر مگر حضور یہاں پر الزام صرف اپوزیشن پر نہیں بلکہ امریکہ پر لگایا گیا ہے اور خط پیش کیا گیا ہے نیشنل سکیورٹی کونسل میں جسکے بارے میں میں پہلے اعتراض کے جواب میں لکھ چکا ہوں۔ لہزا ندیم ملک کے خط کے مقابلے میں نیشنل سکیورٹی کونسل نے جو کہا ہے وہ زیادہ اہمیت رکھتا ہے۔ پھر بھی اگر ندیم ملک خط سامنے لائے اور اسکا جواب تو پھر دیکھ لیں گے کون سچ ہے اور کون نہیں۔

تیسرا اعتراض یہ کہ عمران خان کہتے تھے کہ لیڈر اچھا آجائے تو باقی سارے نیچے ٹھیک ہوجاتے ہیں حالانکہ ایسا نہیں ہوسکتا اور علی بھائی کے مطابق اس وقت بھی انہوں نے کہا تھا کہ یہ غلط نظریہ ہے۔
کیا عمران خان قوم سے یہ کہتا کہ جب تک اسکی ٹیم میں یا پارٹی میں سارے کے سارے اچھے لوگ نہیں آئیں گے وہ حکومت نہیں بنائے گا؟ چلیں مان لیا۔ متبادل ان پارٹیوں کو حکومت بنانے دیتا جو یقین بھی نہیں رکھتے کہ اقتدار خاندان کے باہر چلا جائے اور جو لوگ اقتدار میں آکر اپنی چوری اور اپنا اقتدار مزید پکا کرلیتے ہیں۔ گویا کہ آپ کہہ رہے ہیں کہ عمران خان کبھی حکومت نہ بنا سکے۔چلیں یہ بھی مان لیا۔ تو جو بات اپکے مطابق عمران خان کو نہیں سمجھ آئی وہ حکومت بنا کر سمجھ آگئی اور کیا عمران خان نے یہ سچ سب کے سامنے نہیں رکھ دیا کہ اب وہ مزید بلیک میل نہیں ہوگا اپنے ہی اتحادیوں یا علیم خان اور جہانگیر ترین سے۔ یعنی اگر اسے اقتدار ہی چاہیے ہوتا تو سیدھا نون لیگ سے مک مکا کر لیتا اور پاچھ سال پورے کر لیتا۔ اور رہی کارکردگی کہ ان تین سالوں میں کیا کیا ہے تو اسکے جواب میں اپکے اگلے کسی اعتراض میں دے سکتا ہوں۔

چوتھا اعتراض علی بھائی نے کیا کہ جب 2014 کا دھرنا ہوا تو اسی وقت انکے مطابق انہیں سمجھ آگئی تھی کہ عمران خان اعلہ کار بن گیا ہے ان قوتوں کا جو حکومتیں گراتے ہیں۔
میں سوال کرنا چاہتا ہوں کہ یہ قوتیں کون ہیں۔ کیوں آپ ایسی بات کرتے ہیں جسکے کئی مطلب نکل سکتے ہوں۔ آپ سے تو اسکی توقع نہیں کی جاسکتی۔ آپ تو دعوہ کرتے ہیں اسی ویڈیو میں کہ آپ شیر علی کے سپاہی ہیں بلکہ میں تو اپکو اللہ کا سپاہی مانتا ہوں اور یقینا آپ بھی فخر سے یہ اعزاز لے لیں گے مگر بات تو وہ کریں نہ جس سے ہمیں نام پتا چلیں ان قوتوں کے۔ ورنہ تو اپ بیانیہ چلا رہے ہیں نون لیگ کا۔ کبھی اسٹیبلشمنٹ' کبھی خلائی مخلوق' کبھی جن اور کبھ پتا نہیں کیا۔ بھئی کون ہے جو ہمارے اندر ہے اور اسے حکومت گرا کر فائدہ ہوتا ہے اور کیا فائدہ ہوتا ہے۔ اسطرح تو عیسائیوں سے بحث کریں وہ بھی تھیوریاں بنا بنا کر سامنے رکھ دیں گے کہ فلاں بات کا فلاں مطلب مگر جو واضع باتیں لکھی ہوں اسکا بھی مطلب پتا نہیں کیا بنا دیں گے۔ دھاندلی ہوئی تھی کہ نہیں؟ اگر ہوئی تھی تو ایک لیڈر کو کیا کرنا چاہیے تھا؟ بڑے افسوس کی بات ہے کہ اپ اتنی معلومات رکھنے کا دعوہ کرتے ہیں مگر نام لینے کی بجائے دو مطلبی باتیں کرتے ہیں اور نام کو آپ بڑی حق گوئی کا دعوہ بھی کرتے ہیں۔ تو بتادیں کہ کون ہیں وہ دوبڑے اسٹیبلشمنٹ میں یا کہیں اور جو حکومتیں گراتے ہیں اور اس سے کیا فائدہ حاصل کرتے ہیں۔

پانچھواں اعتراض پچھلے سے ملحقہ ہے کہ علی بھائی نے 2018 میں عمران خان کو ووٹ نہیں ڈالا۔
اس میں اعراض والی بات نہیں ہے کیونکہ علی بھائی نے یہ نہیں بتایا کہ انہوں نے ووٹ ڈالا کسے تھا۔ غالب امکان یہ ہے کہ ووٹ ڈالا ضرور تھا کیونکہ علی بھائی یہ بھی کہہ سکتے تھے کہ ووٹ ڈالا ہی نہیں مگر ان کے الفاظ ہیں میں نے عمران خان کو ووٹ نہیں ڈالا۔ تو یہاں علی بھائی سے اعتراض کم سوال زیادہ ہے۔ ایک بار پھر حق گوئی کریں اور بتائیں کہ ووٹ ڈالا تھا یا نہیں اور اگر ہاں تو کسے۔ کیونکہ اگر اپ نے نون لیگ کو ڈالا تھا تو پھر آپ یہ بتائیں کہ کیا پانامہ نہیں آچکا تھا۔ کیا نون لیگ ملک کے اساسے 7 بلین ڈالر تک نہیں لے آئی تھی جو کہ 2016 تک کوئی 14 بلین ڈالر تھے۔ صرف سٹیٹ بنک کے ریزروز کی بات کررہا ہوں کیونکہ لوگ پرائیوٹ یا کمرشل بنکوں کے اساسے ملا کر ملکی اساسے گنتے ہیں جبکہ میں صرف سٹیٹ بنک کی بات کررہا ہوں جو ریاست پاکستان کا بند ہے جس کے اساسے اگر 5 بلین ڈالر تک آجاتے تو ملک آفیشلی طور پر دیوالیہ ہوجاتا۔ اور کیا اسی وجہ سے آئی ایم ایف کے پاس جانے کے مشورے نہیں آرہے تھے جبکہ ابھی عمران خان کی حکومت بنی بھی نہیں تھی۔ کیا عبوری حکومت کو چین سے بیل آوٹ پیکچ نہیں لینا پڑا تھا۔ آج کیا معاشی صورت حال ہے' اگے چل کر وہ بھی اپکے گوش گزار کروں گا۔

چھٹا اعتراض یہ کہ عمران خان حکومت میں اتنی مہنگائی ہوئی اور جس طرح کی کارکردگی مختلف وزارتوں میں دکھائی گئی اسکے باوجود علی بھائی نے عمران خان کو سپورٹ کیا اور کہا کہ پانچھ سال پورے کرنے چاہیے تھے۔
آخر کیوں۔ جب آپ مانتے ہیں کہ ایک سربراہ اپ کے مطابق معیشت صحیع نہیں چلا سکا تو اسے پانچھ سال پورے کرنے چاہیے تھے۔ یہی بات آپ زرداری کے لیے کہیں گے جب اس سے بھی زیادہ مہنگائی ہوئی تھی جبکہ نہ کوئی کرونا تھا اور نہ ہی تیل کی قیمتیں بڑھ رہی تھیں' نہ یوکرین کی جنگ ہورہی تھی اور نہ ہی عالمی مہنگائی تھی۔ یہ کیوں ضروری ہے کہ پانچھ سال پورے کیے جائیں۔ صرف اسلیے کہ آپ کے خیال میں کوئی دو بڑے حکومتیں گرانا چاہتے ہیں اور ان بڑوں کا نام لیتے ہوئے اپکے پر جلتے ہیں؟ اور پتا نہیں گلانی اور نواز شریف نے اپنے آخری سال کے آخری مہینے کے آخری دن کونسا بٹن دبانا تھا جسکے بعد پاکستان نے مریخ پر کالونی بنا لینی تھی۔ شکر ہے ابھی انسان مریخ تک نہیں پہنچا کیونکہ ان سیاسی مگرمچھوں نے وہاں بھی جائیدادیں بنا لینی تھیں۔
ریکارڈ مہنگائی ہوئی پاکستان میں مگر لوگ یہ ساتھ زکر نہیں کرتے کے تاریخ انسان کا نہیں تو گزشتہ 500 سال کا سب سے بڑا معاشی بحران آیا ہے اس کرونا کی وجہ سے۔ پھر بھی اپکو ورزتوں کی کارکردگی چاہیے تو ان تین سالوں میں یہ کیا ہے اس حکومت نے۔
اپکے اساسے آج بلند ترین سطح پر ہیں اور صرف سٹیٹ بنک کے اساسے 18 بلین ڈالرز تھے 9 اپریل 2021 تک اور آج ایک سال بعد یقینا 18 بلین سے زیادہ ہی ہوں گے۔
آپکی آئی ٹی کی ایکسپورٹس آج بلند ترین سطح پر ہیں۔
اپکی ٹیکسٹائل ایکسپورٹس بلند ترین سطح پر ہیں۔
کیا 5 ارب یا چلیں 5 کروڑ درخت بھی نہیں لگے ہوں گے؟
اپکا پی ٹی وی آج منافع میں۔
آپکا این ایچ اے منافع میں۔
آپکا پوسٹ آفس منافع میں۔
10 ڈیمز بن رہے ہیں۔
اپکی زیتون' چنا' گنا اور گندم کی فصل کی پیداوار بلند ترین سطح پر۔
نیب کی ریکوریاں بلند ترین سطح پر حالانکہ ابھی 10 فیصد بھی احتساب نہیں ہوا۔
اور ایمازون یا سیمسنگ جیسی کمپنیاں کسی ڈوبتے ہوئے ملک میں نہیں جاتیں اسے بچانے کےلیے۔
نون لیگ صرف 3 گاڑیوں کی کمپنیاں چھوڑ کر گئی تھی، آج کتنی ہیں 12۔
نون لیگ 5۔5 فیصد کی گروتھ پر ڈینگے مارتی ہے جبکہ اس حکومت نے اتنی ہی گروتھ کرونا کے باوجود کردی ہے۔
اور نون لیگ کا تجارتی خسارہ تھا 20 بلین ڈالرز اور اس حکومت کا ہے مشکل سے 2 بلین جبکہ اتنی تو ویکسین ہی منگوائی ہوگی یعنی یہ خسارا بھی نہ ہوتا اگر کرونا نہ ہوتا اور جی ڈی پی تقریبا 7 فیصد تک ہوتا۔
ورلڈ بنک کی رپورٹ ہے کہ خطے کے ممالک کے لحاظ سے پاکستان میں سب سے کم بیروزگاری ہے۔ تو اب؟
آج پاکستان میں سیل فون اسمبلی ہورہی ہے اور جلد ہی میوفیکچرنگ بھی شروع ہوجاتی اگر اپوزیشن تھوڑا غیرت کھاتی۔


ساتواں اعتراض ہے کہ عمران خان نے اپنے سپورٹرز کو گالم گلوج سکھایا ہے۔
انتہائی غلط الزام ہے۔ اور علی بھائی نے خود ہی اسکا جواب دیا ہے کہ باقی پارٹیوں کے لوگ بھی کرتے ہیں مگر کیوںکہ سوشل میڈیا پر پی ٹی آئی کا قبضہ ہے تو اسلیے عمران خان پر اسکا الزام آتا ہے۔ اول تو یہ کہ قوم کو یہ غلط بیماری ہے اور آج سے نہیں۔ عمران خان بھی اسی قوم کا حصہ ہے البتہ عمران خان نے گالی تو کسی کو نہیں دی۔ سخت جملے یعنی اوئے کرکے بلانا یا بیغیرت کہنا یہ یقینا شائستہ زبان نہیں مگر باقی لیڈروں کے مقابلے میں یہ پھر بھی کم ہے۔ بلاول ہوجائے، خود نواز اور زرداری جبکہ مولانا کے بھی ایسے ایسے وحیات قسم کے بیانات ہیں کہ اللہ کی پناہ۔ اسلیے قوم کی بیماری کو پی ٹی آئی کی بیماری کہنا غلط ہے۔


آٹھواں اعتراض کہ عمران خان نے کئی غلط الزام لگائے مثلا غداری جو جو عدم اعتماد کے پیچھے تھے اور ماضی میں جیسے پینتیس پنکچر کا بیان اور پھر معافی مانگی۔
پنتیس پنکچر کی جہاں تک بات ہے تو قائم مقام وزیراعلی یعنی نجم سیٹھی کا اعترافی بیان ہے کہ آخری دنوں میں فیصلے رائنونڈ سے آرہے تھے تو کیوں آرہے تھے جی۔ اور اسکے بعد کیا دھاندلی کے شواہد سامنے نہیں آئے؟ کوئی شک ہے کہ نجم سیٹھی نے دھاندلی کی اور یہ بھی پہلی صف میں شامل تھا ساری دھاندلی میں۔ اور آج کہتا ہے کہ حکومت پیٹرول سستا کیوں نہیں کرتی اور جب سستا کیا تو کہتا ہے کہ کیوں کیا۔ یعنی ایسا بند جسکی بیوی خود نون لیگ میں شامل ہوگئی جو دراصل ہے ہی نون لیگی اور اسکی حمایت اپ کررہے ہیں کہ اس پر دھاندلی کا غلط الزام لگا۔ ٹھیک ہے تحقیقات نہیں ہوئی اور حلقے نہیں کھولے گئے ورنہ پتا چل جاتا اور بغیر ثبوت کے الزام پر عمران خان نے معزرت بھی کی لیکن حضور دھادنلی تو ہوئی ہے نہ؟ اس طرح تو ابھی تک زرداری پر کوئی کرپشن براہراست ثابت نہیں ہوئی مگر کون ہے جو اسے ایماندار مانتا ہے؟
جہاں تک غداری کی بات ہے تو کئی لوگ صرف پیسہ دیکھ کر بک گئے انہیں نہیں پتا تھا کہ وہ بیرونی مداخلت کا اعلہ کار بن رہے ہیں مگر نواز شریف جسکی پاکستان دشمن لوگوں سے ملاقاتیں کیا ڈھکی چپھی ہیں۔ تین دفع کا وزیراعظم کس طرح کوئی ایسا بیان دے سکتا ہے جو ہندوستا استعمال کرلے؟ ایک بیان ہوگیا دو ہوگئے چلیں غلطی سے مگر کیا اسکی مرضی کے بغیر آزاد کشمیر میں اسکے امیدوار نے ہندوستان سے مدد مانگ لی۔ کیا ہم بیوقوف ہیں جو ہمیں نہیں پتا کہ غداری کیا ہوتی ہے؟ چلیں مان لیا کہ نون لیگ میں سارے غدار نہیں مگر اعلی قیادت کمپرومائزڈ تو ہو ہی چکی ہے کیونکہ انکا پیسا پاکستان میں نہیں ہے۔ اور اپنے کیسس یہ پاکستان میں لڑ نہیں سکتے تو اسی لیے جمہوری پراسس نہ چلنے کا اصل فائدہ تو نواز اور زرداری کو ہوتا ہے۔ پھر اپ کیسے اسٹیبلشمنٹ کے دو بڑوں کی بات کرتے ہیں اور نام لیتے نہیں اور دعوہ کرتے ہیں علی کے جانشین ہونے کا۔


نواں اعتراض کہ پی ٹی ائی میں سارے ممی ڈیڈی ہیں اور انکا مقابلہ نہیں کرسکتے اگر لبیک پارٹی کی طرح کے لوگ انکے سامنے آجائیں۔
پہلی بات تو یہ ہے کہ یہ غلط تاثر ہے کہ پی ٹی آئی میں صرف ممی ڈیڈی لوگ ہیں۔ ہاں انکی تعداد زیاد ہے کیونکہ بیرون ملک رہ کر پاکستانی زیادہ تر عمران خان کو سپورٹ کرتے ہیں۔ مگر اسکے باوجود پی ٹی آئی میں جان توڑ لوگ موجود ہیں جو نان لیگ میں نہیں ہیں۔ نان لیگ کی سیاست نظریاتی نہیں ہے۔ میں مانتا ہوں کہ پی ٹی ائی کا ووٹر کافی بد دل ہوا ہے جبکہ عمران خان نے اپنے ساتھ کچھ مگرمچھوں کو ملایا مگر پھر بھی عمران خان کو سپورٹ کرنے کی وجہ یہی ہے کہ یہ کچھ نہ کچھ تبدیلی تو لاہی سکتا ہے جس سے سیاسی مافیا کو کمزور کیا جائے۔ ایسے ہی اتنے بڑے جلسے نہیں ہوتے۔ ممی ڈیڈی اتنی تعداد میں باہر آتے ہیں نہیں۔ بلکہ ان میں سے بیشتر کو پتا بھی نہیں ہوگا کہ مہنگائی بھی کوئی چیز ہے اور جلسوں میں آنا تو بھول جائیں۔ عمران خان کا ووٹر مڈل کلا اور پڑھا لکھا ہے جو نان پر ٹکی لگا کر ووٹ نہیں بیچتا۔


دسواں اعتراض ہے کہ احسن اقبال جو کہ پانچھ وقتی نمازی ہیں مگر ان پر گولی چلائی گئی۔
اول تو یہ خبر اور اسکے بعد آنے والی خبروں کے مطابق گولی پی ٹی آئی نے نہیں چلائی۔ اسکا فائدہ پی ٹی آئی کو نہیں ہوا تو مجھے مقصد سمجھ نہیں آیا کہ کوئی کیوں ایسا کرے گا۔ مطیع اللہ جان بھی اسی طرح غائب ہوا تھا پھر بعد میں پتا چلا کہ ڈرامہ تھا۔ حامد میر پر گولی کس نے چلائی تھی؟ آرمی چیف نے خود حامد میر سے کہا کہ سچ بتائے تو بغلیں جھانکنے لگا صحافیوں کی نجی ملاقات میں جو آرمی چیف کے ساتھ ہوئی تھی اور اس پر کئی صحافیوں کا بیان موجود ہے۔
ویسے پانچھ وقتی نمازی احسن اقبال کو زرا شرم نہیں آئی کہ سیالکوٹ سپورٹ سٹی میں اتنا کھانچا لگا کر ملک کا نقصان کیا؟ اور اس وقت یہ نمازی صاحب کہا تھے جب نون لیگ نے ختم نبوت کا قانون بدلا اور بڑی صفائی سے۔ اور پھر بعد میں واپس بھی لیا اور صفائیاں پیش فرماتے رہے۔ علی بھائی اپ کی حمدردیاں جسطرح نون لیگیوں کے ساتھ ہیں مجھے افسوس سے کہنا پڑتا ہے کہ آپ اندر سے نون لیگی ہیں۔ مجھے نہیں پتا کہ اسے واقعی گولی لگی بھی یا نہیں اور کس نے ماری کیونکہ خلاف قانون کوئی بھی کام کرنا جرم ہے اور انسانی جان پر بغیر کسی وجہ کے حملہ کرنا تو بھول ہی جائیں مگر یہ نون لیگیوں میں اگر کوئی معصوم ہے نہ تو آٹے میں نمک کے برابر اور وہ بھی برائے نام کیونکہ جب نواز شریف جیسے سیاسی مافیا کی حمایت کردی تو کاہے کا معصوم؟ لیکن معصوم آپ اس مطلب میں لے لیں کہ جس پر کوئی کرپشن کا الزام نہ ہو۔ ورنہ تو یہاں قبضہ مافیا کی آماجگاہ ہی نون لیگ ہے۔


گیارواں اعتراض ہے کہ ایل این جی پر پی ٹی آئی کا الزام غلط تھا اور حماد اظہر نے بھی مان لیا اور وغیر وغیر۔
حضور الزام یہ تھا کہ ایل این جی اگر بھارت' اور بنگلہ دیش آدھی قیمت پر لے رہے تھَے تو انکے تو مراسم اتنے برادرانہ نہیں تھے جتنے کہ نون لیگ دعوہ کرتی ہے قطر کے حوالے سے۔ وہیں سے خط بھی آیا تھا نہ۔ ویسے وہ اصلی تھا۔ اور اپکو کیا علم ہے کہ اپنے دور حکومت میں ایک بھی علاقہ گیس کی تلاش کے لیے مختص نہیں کیا نون لیگ نے؟ اوپر سے مشرف کے دور سے گیس کے کنکشن دینا بند کردیے گئے تھے کیونکہ گیس ختم ہورہی تھی مگر نون لیگ نے دھڑا دھڑ گیس کے کنکشن بانٹ دیے اور جو گیس 5 سال بعد ختم ہونی تھی وہ 3 سال پہلے ہی ختم ہوگئی۔ یہی نہیں بلکہ سٹیل ملز جس نے بل ادا نہیں کیا تھا اسکا کنکشن کاٹ دیا گیا انہی کے دور میں۔ یعنی اپنی گیس ہم پیدا نہ کریں، ووٹ کے چکر میں جھوٹے کنکشن بھی دیں اور پھر مہنگے معادہے بھی فرمائیں اور کہیں کہ جی بڑا اچھا معاہدہ تھا۔ جی اچھا اسوقت ہوا جب عمران خان نے قطر سے کیا ہوا معاہد 13 ڈالر سے سستا کروا کر 8 ڈالر فی یونٹ کروایا اور لوگ کہتے ہیں کہ عمران خان نے کیا کیا ہے۔ بس اللہ کی کرنی کہ جسطرح تیل مہنگا ہوا اسی طرح گیس کی ڈیمانڈ بڑھی اور قطر نے گیس دینا ہی بند کردی۔ اب جلائیں لکڑیاں یا نئے چولہے آئے ہیں پیلٹس والے۔

بارواں اعتراض کے جیو نیوز کی امن کی آشا پر الزام لگائے گئے۔
بہت اچھی بات ہے کہ آپ نے سچ کا ساتھ دیا اور میں اعتراف کرتا ہوں کہ مجھے آپ سے علم ہوا کہ امن کی آشا کا آئیڈیا پاشا صاحب نے دیا تھا۔ مگر حضور کیا یہ اتفاق ہے کہ ہندوستان کا بیانیہ جیو نیوز سے آرہا ہوتا ہے؟ یہ اجمل کساب جو بھگوان سے مافی مانگتا ہوا پایا گیا وہ بھی مرنے سے پہلے۔ جسکی نہ بولی پاکستانی ہے نہ اسکا تعلق ثابت ہوسکا مگر جیو نیوز نے اسے پاکستان بنا کر پیش کیا؟ اور کیا میر شکیل کی تاریخ اپکو بتانے کی ضرورت ہے کہ کس طرح شریفین سے فائدے لیے؟ مجھے یہ گڈھ جوڑ بتا دیں کہ عمران خان نے کیا ہو یعنی فائدے دے کر اپنے حق میں خبریں دلوانا۔ لندن سے خبر آتی ہے کہ ایک اکانٹ انفریز ہوا جو ہنا ہی تھا مگر یہاں پر کلین چٹیں مل رہی ہیں شریف خاندان کو۔


تیرواں اعتراض کہ پانامہ پر کئی لوگوں کے تھے مگر کیس ایک پر چلا اور اسکی بھی دولت پاکستان نہیں آسکی۔
علی بھائی جب آپ کی حمدردیاں نون لیگ کے ساتھ ہیں نہ تو یہ احتساب کبھی نہیں ہوسکتا۔ آپ آج کہہ دیں کہ یااللہ نواز شریف یا شریف خاندان کبھی سیاست میں نہ آسکے۔ میں مان لوں گا کہ آپ واقعی شریف خاندان کا احتساب چاہتے ہیں۔ کیونکہ ابھی تک نظر یہ آرہا ہے کہ آپ نے شریف خاندان کو اسٹیبلشمنٹ کے خللاف آخری امید سمجھ لیا ہے جس استیبلشمنٹ میں آپ نام نہیں لیتے کے کون حکومتیں گراتا ہے اور کیوں؟
جہاں تک بات ہے کہ اکامے پر کیوں نکالا تو کیا اکامہ جرم نہیں تھا ایک ملک کے وزیراعظم کے لیے؟ جہاں تک پیسے واپس لانے کی بات ہے تو حضور برطانیہ کو جس دن یہ پتا چل گیا نہ کہ پاکستان حکومت نے واقعی اپنی لوٹی ہوئی دولت واپس مانگ لی ہے تو اس دن وہ نواز شریف کی دولت خود ضبط فرما لے گی۔ ورنہ الطاف حسین کے خلاف کیا ایک ثبوت ہے سکاٹ لینڈ یارڈ کے پاس؟ اتنی معصومیت سے کہہ دیا جاتا ہے کہ لوٹی ہوئی دولت واپس نہیں لاسکے۔ یہی ان سیاسی مافیاز کا جرم ہے کہ یہ پیسہ پاکستان سے باہر لے گئے ہیں اور انکا صرف ایک ہی حل ہے کہ انہیں زلت کا نشان بنایا جائے تاکہ انکی نسلیں بھی طوبہ کرلیں سیاست سے۔ مگر ایسا ہونا اسوقت تک ممکن نہیں جب تک اپ ڈھکے چپھے الفاظ میں شریف خاندان کو سپورٹ کرتے رہے ہیں گے۔ اور کس نے کہا ہے کہ نواز شریف کے خلاف ثبوت نہیں ہیں۔ اپکی عدالت تک شریف مافیا سے حدایت لیتی ہے۔ کیا قاضی فائز عیسی نون لیگی نہیں ہے؟ کیا رانا شمیم نے جھوٹا بیان حلفی نہیں دیا عدلیہ کے خلاف؟ کیا نون لیگ نے ثاقب نثار کی جھوٹی اوڈیو نہیں بنائی؟ کیا جسٹس قیوم شہاباز شریف سے پوچھ کر فیصلے نہیں دیتا تھا؟ کیا لاہور ہائی کورٹ نے فیصلہ نہیں دیا کہ مریم کو گرفتار کرنے سے دس دن پہلے بتایا جائے؟ کیا نیب نے جب مریم نواز کو طلب کیا تو اس نے پھتروں کی بارش نہیں فرمائی؟ کیا نون لیگ نے تین باریوں میں عدالتوں کو ٹھیک نہیں کرنا تھا بجائے خراب کرنے کے؟ اور آپ بات کررہے ہیں کہ ہماری عدالتیں انصاف نہیں کرتیں؟ کیا ججز اپکے خیال میں اسٹیبلشمنٹ نے خرید رکھے ہیں تاکہ کسی طاقتور کو سزا نہ ہو؟ تو یہ 250 ارب کے جرمانے جو مختلف ملوں اور کمپنیوں کوکیے گئے ہیں ان پر سٹے آرڈر بھی
اسٹیبلشمنٹ کے کہنے پر دیے ہوئے ہیں جو کہ مہنگائی کی ایک بڑی وجہ ہے؟

 
Advertisement
Last edited by a moderator:

Intruder

Citizen
14th. Ali Bhai used the name of Imran's Wife as Aunty Pinky. I am so much disappointed that a cleric like him who always say that I am the believer of truth yet he is mocking the name of a lady while he still knows her real name Bushra Bibi. Where his all knowledge gone now when there is hadees for prohibiting mocking the names
 

arafay

Chief Minister (5k+ posts)
wait, is this guy still preaching? I thought his career was ended after he ran away from manazara with tariq masood!
 

Citizen X

President (40k+ posts)
مجھے خوشی اس بات کی ہے کہ علی بھائی کے پلیٹ فارم سے سیاست پر بات ہورہی ہے۔ اس سے پہلے انکے کامنٹس میں نے دیکھے کسی دوسرے چینل کی سیاسی ویڈیوز پر جہاں پر سیاسی تھیوریاں پکائی جارہی تھیں اور علی بھائی کے آفیشل چینل سے تعریفوں کے پل باندھے جارہے تھے۔ مجھے اپنی آنکھوں پر یقین نہ آیا کہ کسی کے کندھے پر بندوق رکھ کر چلانا علی بھائی کا شیوا تو نہیں اور میں نے وہاں بھی کامنٹ کا جواب دیا کہ اگر حقیقت آپ پر عیاں ہے تو اپنے پلیٹ فارم سے اسے لوگوں تک پہنچائیں تاکہ اپکو براہراست اسکا جواب دیا جاسکے یا اپ سے اس کے بارے میں سوال کیا جاسکے۔

حالیہ ویدیو میں محمد علی بھائی نے کچھ باتیں کیں ہیں جنکا جواب میں سمجھتا ہوں کہ دینا انتہائی ضروری ہے۔ اس سے پہلے انکی طرح میں بھی یہ بات واضع کردینا چاہتا ہوں کہ عمران خان سے اختلاف کیا جاسکتا ہے کیونکہ وہ کوئی فرشتہ نہیں ہے اور اسکے کئی بیانات متنازعہ ہیں اور اس نے کئی سیاسی غلطیاں کی ہیں۔ مگر ایسا اختلاف جس سے اسکے مخالفین کو فائدہ ہو مثلا سرفہرست نون لیگ پھر پیپلزپارٹی' فضل الرحمن وغیر اسکی کوئی منطق سمجھ نہیں آتی۔ ہاں علی بھائی خود میدان عمل میں آئیں اور کہیں کہ سارے غلط ہیں اور انکو ووٹ دیا جائے تو میں سب سے پہلے انکو ووٹ دوں گا۔ ورنہ تاثر یہ جائیگا کہ وہ نون لیگ کو سپورٹ کررہے ہیں کیونکہ پنجاب میں اگر کوئی پارٹی پی ٹی آئی کا مقابلہ کرسکتی ہے تو وہ ہے نون لیگ۔ اسلیے ڈھکے چپھے الفاظ میں انکے پلیٹ فارم سے نون لیگ کا بیانیہ نکل کر آرہا ہے اور اس پر میرا حق ہے کہ میں سوال پوچھ سکوں۔

سب سے پہلے تو علی بھائی نے کہا کہ حالیہ خط جو ملک کے وزیراعظم نے لہرایا وہ جعلی ہے اور دلیل پیش کی کہ ندیم ملک نے فوج کو خط لکھ کر پوچھا کہ اس خط کی سچائی کیا ہے تو جواب آیا کہ کوئی مس کمیونیکیشن یا اردو میں کہہ لیں کہ غلط فہمی کی وجہ سے یہ خط باہر آیا اور ایسی کوئی بات نہیں ہے کہ امریکہ نے دھکی دی ہے وغیر وغیرہ۔
علی بھائی سے گزارش ہے ادب کے ساتھ کہ نیشنل سکیورٹی کونسل کے اجلاس میں اپوزیشن نے شرکت نہیں کی پہلا جرم ہے کیونکہ اس اجلاس کا اعلامیہ صاف صاف بتا رہا ہے کہ ایسا خط موجود ہے اور اسکی حقیقی تحریر اس سے بھی سخت ہے جو وزیراعظم نے بتائی۔ اور ملک کا وزیراعظم ملکی راز بتانے کا ویسے ہی پابند نہیں ہے۔ اسی لیے اسے نیشنل سکیورٹی کانسل میں دکھایا گیا۔ البتہ ندیم ملک کسی قومی راز کے چپھانے کا پابند نہیں ہے اسلیے اسے چاہیے کہ اپنا خط بمع اسکے جواب کے قوم کے سامنے رکھے ورنہ ابھی تک نیشنل سکیورٹی کونسل کا اعلامیہ ہی مصدقہ سمجھا جائیگا۔ اسکے علاوہ شاہ محمود کریشی کا بیان ہے کہ ڈونلد رو کی کال بھی آئی تھی جس میں سنگین نتائیج کی دھمکی دی گئی تھی روس کے دورہ سے پہلے۔ اب یاد رہے کہ ہر سفارتی کال ریکارڈ ہوتی ہے اور یقینا پیش بھی کی جائیگی اگر معاملہ زیادہ آگے بڑھا۔ ایسے ہی اپوزیشن نے قومی سلامتی کونسل کا بائکاٹ نہیں کیا۔ اور کیا امریکہ کی تاریخ نہیں رہی تختے الٹنا۔ عجیب اتفاق ہے کہ سری لنکا اور نیپال میں بھی امریکی مداخلت کے الزامات لگ رہے ہیں۔ چلین روس اور چین تو امریکہ کی دشمنی میں الزام لگا رہے ہیں مگر سری لنکا اور نیپال سے کیوں آوازیں آرہی ہیں امریکی مداخلت کی۔ ترقی میں عمران خان کے حق میں ایک فضا بن گئی ہے کیا وہاں بھی فوج نے بیانیہ بنایا ہے۔ مجھے تو لگتا ہے کہ مہنگائی نے اپکی آنکھوں پر پٹی باندھ دی ہے جسکا جواب میں آگے جاکر دوں گا کہ مہنگائی کیوں ہوئی۔

دوسرا اعتراض انہوں نے کیا عمران خان کے عدم اعتماد کا سامنا نہ کرنے پر اور سینٹ چیئر مین سنجرانی کو بچانے کے اپوزیشن کے بندوں کو توڑنے کا موازنہ کیا گیا آج کے منحرف آراکین کے ساتھ۔
اول تو اس بات کا کوئی ثبوت موجود نہیں ہے کہ ایجنسیوں نے یا پی ٹی آئی نے اپوزیشن کے بندوں کو خریدا بلکہ انکے غائب ہونے کے بعد کسی ایک نے آکر یہ نہیں کہا کہ ہم نے پیسے پکڑ کر ایسا کیا ہے۔ مگر پھر بھی مان لیتے ہیں کہ کسی نے سینٹ الیکشن میں بندے توڑے۔ بلکل غلط ہے دونوں جگہ پر مگر حضور یہاں پر الزام صرف اپوزیشن پر نہیں بلکہ امریکہ پر لگایا گیا ہے اور خط پیش کیا گیا ہے نیشنل سکیورٹی کونسل میں جسکے بارے میں میں پہلے اعتراض کے جواب میں لکھ چکا ہوں۔ لہزا ندیم ملک کے خط کے مقابلے میں نیشنل سکیورٹی کونسل نے جو کہا ہے وہ زیادہ اہمیت رکھتا ہے۔ پھر بھی اگر ندیم ملک خط سامنے لائے اور اسکا جواب تو پھر دیکھ لیں گے کون سچ ہے اور کون نہیں۔

تیسرا اعتراض یہ کہ عمران خان کہتے تھے کہ لیڈر اچھا آجائے تو باقی سارے نیچے ٹھیک ہوجاتے ہیں حالانکہ ایسا نہیں ہوسکتا اور علی بھائی کے مطابق اس وقت بھی انہوں نے کہا تھا کہ یہ غلط نظریہ ہے۔
کیا عمران خان قوم سے یہ کہتا کہ جب تک اسکی ٹیم میں یا پارٹی میں سارے کے سارے اچھے لوگ نہیں آئیں گے وہ حکومت نہیں بنائے گا؟ چلیں مان لیا۔ متبادل ان پارٹیوں کو حکومت بنانے دیتا جو یقین بھی نہیں رکھتے کہ اقتدار خاندان کے باہر چلا جائے اور جو لوگ اقتدار میں آکر اپنی چوری اور اپنا اقتدار مزید پکا کرلیتے ہیں۔ گویا کہ آپ کہہ رہے ہیں کہ عمران خان کبھی حکومت نہ بنا سکے۔چلیں یہ بھی مان لیا۔ تو جو بات اپکے مطابق عمران خان کو نہیں سمجھ آئی وہ حکومت بنا کر سمجھ آگئی اور کیا عمران خان نے یہ سچ سب کے سامنے نہیں رکھ دیا کہ اب وہ مزید بلیک میل نہیں ہوگا اپنے ہی اتحادیوں یا علیم خان اور جہانگیر ترین سے۔ یعنی اگر اسے اقتدار ہی چاہیے ہوتا تو سیدھا نون لیگ سے مک مکا کر لیتا اور پاچھ سال پورے کر لیتا۔ اور رہی کارکردگی کہ ان تین سالوں میں کیا کیا ہے تو اسکے جواب میں اپکے اگلے کسی اعتراض میں دے سکتا ہوں۔

چوتھا اعتراض علی بھائی نے کیا کہ جب 2014 کا دھرنا ہوا تو اسی وقت انکے مطابق انہیں سمجھ آگئی تھی کہ عمران خان اعلہ کار بن گیا ہے ان قوتوں کا جو حکومتیں گراتے ہیں۔
میں سوال کرنا چاہتا ہوں کہ یہ قوتیں کون ہیں۔ کیوں آپ ایسی بات کرتے ہیں جسکے کئی مطلب نکل سکتے ہوں۔ آپ سے تو اسکی توقع نہیں کی جاسکتی۔ آپ تو دعوہ کرتے ہیں اسی ویڈیو میں کہ آپ شیر علی کے سپاہی ہیں بلکہ میں تو اپکو اللہ کا سپاہی مانتا ہوں اور یقینا آپ بھی فخر سے یہ اعزاز لے لیں گے مگر بات تو وہ کریں نہ جس سے ہمیں نام پتا چلیں ان قوتوں کے۔ ورنہ تو اپ بیانیہ چلا رہے ہیں نون لیگ کا۔ کبھی اسٹیبلشمنٹ' کبھی خلائی مخلوق' کبھی جن اور کبھ پتا نہیں کیا۔ بھئی کون ہے جو ہمارے اندر ہے اور اسے حکومت گرا کر فائدہ ہوتا ہے اور کیا فائدہ ہوتا ہے۔ اسطرح تو عیسائیوں سے بحث کریں وہ بھی تھیوریاں بنا بنا کر سامنے رکھ دیں گے کہ فلاں بات کا فلاں مطلب مگر جو واضع باتیں لکھی ہوں اسکا بھی مطلب پتا نہیں کیا بنا دیں گے۔ دھاندلی ہوئی تھی کہ نہیں؟ اگر ہوئی تھی تو ایک لیڈر کو کیا کرنا چاہیے تھا؟ بڑے افسوس کی بات ہے کہ اپ اتنی معلومات رکھنے کا دعوہ کرتے ہیں مگر نام لینے کی بجائے دو مطلبی باتیں کرتے ہیں اور نام کو آپ بڑی حق گوئی کا دعوہ بھی کرتے ہیں۔ تو بتادیں کہ کون ہیں وہ دوبڑے اسٹیبلشمنٹ میں یا کہیں اور جو حکومتیں گراتے ہیں اور اس سے کیا فائدہ حاصل کرتے ہیں۔

پانچھواں اعتراض پچھلے سے ملحقہ ہے کہ علی بھائی نے 2018 میں عمران خان کو ووٹ نہیں ڈالا۔
اس میں اعراض والی بات نہیں ہے کیونکہ علی بھائی نے یہ نہیں بتایا کہ انہوں نے ووٹ ڈالا کسے تھا۔ غالب امکان یہ ہے کہ ووٹ ڈالا ضرور تھا کیونکہ علی بھائی یہ بھی کہہ سکتے تھے کہ ووٹ ڈالا ہی نہیں مگر ان کے الفاظ ہیں میں نے عمران خان کو ووٹ نہیں ڈالا۔ تو یہاں علی بھائی سے اعتراض کم سوال زیادہ ہے۔ ایک بار پھر حق گوئی کریں اور بتائیں کہ ووٹ ڈالا تھا یا نہیں اور اگر ہاں تو کسے۔ کیونکہ اگر اپ نے نون لیگ کو ڈالا تھا تو پھر آپ یہ بتائیں کہ کیا پانامہ نہیں آچکا تھا۔ کیا نون لیگ ملک کے اساسے 7 بلین ڈالر تک نہیں لے آئی تھی جو کہ 2016 تک کوئی 14 بلین ڈالر تھے۔ صرف سٹیٹ بنک کے ریزروز کی بات کررہا ہوں کیونکہ لوگ پرائیوٹ یا کمرشل بنکوں کے اساسے ملا کر ملکی اساسے گنتے ہیں جبکہ میں صرف سٹیٹ بنک کی بات کررہا ہوں جو ریاست پاکستان کا بند ہے جس کے اساسے اگر 5 بلین ڈالر تک آجاتے تو ملک آفیشلی طور پر دیوالیہ ہوجاتا۔ اور کیا اسی وجہ سے آئی ایم ایف کے پاس جانے کے مشورے نہیں آرہے تھے جبکہ ابھی عمران خان کی حکومت بنی بھی نہیں تھی۔ کیا عبوری حکومت کو چین سے بیل آوٹ پیکچ نہیں لینا پڑا تھا۔ آج کیا معاشی صورت حال ہے' اگے چل کر وہ بھی اپکے گوش گزار کروں گا۔

چھٹا اعتراض یہ کہ عمران خان حکومت میں اتنی مہنگائی ہوئی اور جس طرح کی کارکردگی مختلف وزارتوں میں دکھائی گئی اسکے باوجود علی بھائی نے عمران خان کو سپورٹ کیا اور کہا کہ پانچھ سال پورے کرنے چاہیے تھے۔
آخر کیوں۔ جب آپ مانتے ہیں کہ ایک سربراہ اپ کے مطابق معیشت صحیع نہیں چلا سکا تو اسے پانچھ سال پورے کرنے چاہیے تھے۔ یہی بات آپ زرداری کے لیے کہیں گے جب اس سے بھی زیادہ مہنگائی ہوئی تھی جبکہ نہ کوئی کرونا تھا اور نہ ہی تیل کی قیمتیں بڑھ رہی تھیں' نہ یوکرین کی جنگ ہورہی تھی اور نہ ہی عالمی مہنگائی تھی۔ یہ کیوں ضروری ہے کہ پانچھ سال پورے کیے جائیں۔ صرف اسلیے کہ آپ کے خیال میں کوئی دو بڑے حکومتیں گرانا چاہتے ہیں اور ان بڑوں کا نام لیتے ہوئے اپکے پر جلتے ہیں؟ اور پتا نہیں گلانی اور نواز شریف نے اپنے آخری سال کے آخری مہینے کے آخری دن کونسا بٹن دبانا تھا جسکے بعد پاکستان نے مریخ پر کالونی بنا لینی تھی۔ شکر ہے ابھی انسان مریخ تک نہیں پہنچا کیونکہ ان سیاسی مگرمچھوں نے وہاں بھی جائیدادیں بنا لینی تھیں۔
ریکارڈ مہنگائی ہوئی پاکستان میں مگر لوگ یہ ساتھ زکر نہیں کرتے کے تاریخ انسان کا نہیں تو گزشتہ 500 سال کا سب سے بڑا معاشی بحران آیا ہے اس کرونا کی وجہ سے۔ پھر بھی اپکو ورزتوں کی کارکردگی چاہیے تو ان تین سالوں میں یہ کیا ہے اس حکومت نے۔
اپکے اساسے آج بلند ترین سطح پر ہیں اور صرف سٹیٹ بنک کے اساسے 18 بلین ڈالرز تھے 9 اپریل 2021 تک اور آج ایک سال بعد یقینا 18 بلین سے زیادہ ہی ہوں گے۔
آپکی آئی ٹی کی ایکسپورٹس آج بلند ترین سطح پر ہیں۔
اپکی ٹیکسٹائل ایکسپورٹس بلند ترین سطح پر ہیں۔
کیا 5 ارب یا چلیں 5 کروڑ درخت بھی نہیں لگے ہوں گے؟
اپکا پی ٹی وی آج منافع میں۔
آپکا این ایچ اے منافع میں۔
آپکا پوسٹ آفس منافع میں۔
10 ڈیمز بن رہے ہیں۔
اپکی زیتون' چنا' گنا اور گندم کی فصل کی پیداوار بلند ترین سطح پر۔
نیب کی ریکوریاں بلند ترین سطح پر حالانکہ ابھی 10 فیصد بھی احتساب نہیں ہوا۔
اور ایمازون یا سیمسنگ جیسی کمپنیاں کسی ڈوبتے ہوئے ملک میں نہیں جاتیں اسے بچانے کےلیے۔
نون لیگ صرف 3 گاڑیوں کی کمپنیاں چھوڑ کر گئی تھی، آج کتنی ہیں 12۔
نون لیگ 5۔5 فیصد کی گروتھ پر ڈینگے مارتی ہے جبکہ اس حکومت نے اتنی ہی گروتھ کرونا کے باوجود کردی ہے۔
اور نون لیگ کا تجارتی خسارہ تھا 20 بلین ڈالرز اور اس حکومت کا ہے مشکل سے 2 بلین جبکہ اتنی تو ویکسین ہی منگوائی ہوگی یعنی یہ خسارا بھی نہ ہوتا اگر کرونا نہ ہوتا اور جی ڈی پی تقریبا 7 فیصد تک ہوتا۔
ورلڈ بنک کی رپورٹ ہے کہ خطے کے ممالک کے لحاظ سے پاکستان میں سب سے کم بیروزگاری ہے۔ تو اب؟
آج پاکستان میں سیل فون اسمبلی ہورہی ہے اور جلد ہی میوفیکچرنگ بھی شروع ہوجاتی اگر اپوزیشن تھوڑا غیرت کھاتی۔


ساتواں اعتراض ہے کہ عمران خان نے اپنے سپورٹرز کو گالم گلوج سکھایا ہے۔
انتہائی غلط الزام ہے۔ اور علی بھائی نے خود ہی اسکا جواب دیا ہے کہ باقی پارٹیوں کے لوگ بھی کرتے ہیں مگر کیوںکہ سوشل میڈیا پر پی ٹی آئی کا قبضہ ہے تو اسلیے عمران خان پر اسکا الزام آتا ہے۔ اول تو یہ کہ قوم کو یہ غلط بیماری ہے اور آج سے نہیں۔ عمران خان بھی اسی قوم کا حصہ ہے البتہ عمران خان نے گالی تو کسی کو نہیں دی۔ سخت جملے یعنی اوئے کرکے بلانا یا بیغیرت کہنا یہ یقینا شائستہ زبان نہیں مگر باقی لیڈروں کے مقابلے میں یہ پھر بھی کم ہے۔ بلاول ہوجائے، خود نواز اور زرداری جبکہ مولانا کے بھی ایسے ایسے وحیات قسم کے بیانات ہیں کہ اللہ کی پناہ۔ اسلیے قوم کی بیماری کو پی ٹی آئی کی بیماری کہنا غلط ہے۔


آٹھواں اعتراض کہ عمران خان نے کئی غلط الزام لگائے مثلا غداری جو جو عدم اعتماد کے پیچھے تھے اور ماضی میں جیسے پینتیس پنکچر کا بیان اور پھر معافی مانگی۔
پنتیس پنکچر کی جہاں تک بات ہے تو قائم مقام وزیراعلی یعنی نجم سیٹھی کا اعترافی بیان ہے کہ آخری دنوں میں فیصلے رائنونڈ سے آرہے تھے تو کیوں آرہے تھے جی۔ اور اسکے بعد کیا دھاندلی کے شواہد سامنے نہیں آئے؟ کوئی شک ہے کہ نجم سیٹھی نے دھاندلی کی اور یہ بھی پہلی صف میں شامل تھا ساری دھاندلی میں۔ اور آج کہتا ہے کہ حکومت پیٹرول سستا کیوں نہیں کرتی اور جب سستا کیا تو کہتا ہے کہ کیوں کیا۔ یعنی ایسا بند جسکی بیوی خود نون لیگ میں شامل ہوگئی جو دراصل ہے ہی نون لیگی اور اسکی حمایت اپ کررہے ہیں کہ اس پر دھاندلی کا غلط الزام لگا۔ ٹھیک ہے تحقیقات نہیں ہوئی اور حلقے نہیں کھولے گئے ورنہ پتا چل جاتا اور بغیر ثبوت کے الزام پر عمران خان نے معزرت بھی کی لیکن حضور دھادنلی تو ہوئی ہے نہ؟ اس طرح تو ابھی تک زرداری پر کوئی کرپشن براہراست ثابت نہیں ہوئی مگر کون ہے جو اسے ایماندار مانتا ہے؟
جہاں تک غداری کی بات ہے تو کئی لوگ صرف پیسہ دیکھ کر بک گئے انہیں نہیں پتا تھا کہ وہ بیرونی مداخلت کا اعلہ کار بن رہے ہیں مگر نواز شریف جسکی پاکستان دشمن لوگوں سے ملاقاتیں کیا ڈھکی چپھی ہیں۔ تین دفع کا وزیراعظم کس طرح کوئی ایسا بیان دے سکتا ہے جو ہندوستا استعمال کرلے؟ ایک بیان ہوگیا دو ہوگئے چلیں غلطی سے مگر کیا اسکی مرضی کے بغیر آزاد کشمیر میں اسکے امیدوار نے ہندوستان سے مدد مانگ لی۔ کیا ہم بیوقوف ہیں جو ہمیں نہیں پتا کہ غداری کیا ہوتی ہے؟ چلیں مان لیا کہ نون لیگ میں سارے غدار نہیں مگر اعلی قیادت کمپرومائزڈ تو ہو ہی چکی ہے کیونکہ انکا پیسا پاکستان میں نہیں ہے۔ اور اپنے کیسس یہ پاکستان میں لڑ نہیں سکتے تو اسی لیے جمہوری پراسس نہ چلنے کا اصل فائدہ تو نواز اور زرداری کو ہوتا ہے۔ پھر اپ کیسے اسٹیبلشمنٹ کے دو بڑوں کی بات کرتے ہیں اور نام لیتے نہیں اور دعوہ کرتے ہیں علی کے جانشین ہونے کا۔


نواں اعتراض کہ پی ٹی ائی میں سارے ممی ڈیڈی ہیں اور انکا مقابلہ نہیں کرسکتے اگر لبیک پارٹی کی طرح کے لوگ انکے سامنے آجائیں۔
پہلی بات تو یہ ہے کہ یہ غلط تاثر ہے کہ پی ٹی آئی میں صرف ممی ڈیڈی لوگ ہیں۔ ہاں انکی تعداد زیاد ہے کیونکہ بیرون ملک رہ کر پاکستانی زیادہ تر عمران خان کو سپورٹ کرتے ہیں۔ مگر اسکے باوجود پی ٹی آئی میں جان توڑ لوگ موجود ہیں جو نان لیگ میں نہیں ہیں۔ نان لیگ کی سیاست نظریاتی نہیں ہے۔ میں مانتا ہوں کہ پی ٹی ائی کا ووٹر کافی بد دل ہوا ہے جبکہ عمران خان نے اپنے ساتھ کچھ مگرمچھوں کو ملایا مگر پھر بھی عمران خان کو سپورٹ کرنے کی وجہ یہی ہے کہ یہ کچھ نہ کچھ تبدیلی تو لاہی سکتا ہے جس سے سیاسی مافیا کو کمزور کیا جائے۔ ایسے ہی اتنے بڑے جلسے نہیں ہوتے۔ ممی ڈیڈی اتنی تعداد میں باہر آتے ہیں نہیں۔ بلکہ ان میں سے بیشتر کو پتا بھی نہیں ہوگا کہ مہنگائی بھی کوئی چیز ہے اور جلسوں میں آنا تو بھول جائیں۔ عمران خان کا ووٹر مڈل کلا اور پڑھا لکھا ہے جو نان پر ٹکی لگا کر ووٹ نہیں بیچتا۔


دسواں اعتراض ہے کہ احسن اقبال جو کہ پانچھ وقتی نمازی ہیں مگر ان پر گولی چلائی گئی۔
اول تو یہ خبر اور اسکے بعد آنے والی خبروں کے مطابق گولی پی ٹی آئی نے نہیں چلائی۔ اسکا فائدہ پی ٹی آئی کو نہیں ہوا تو مجھے مقصد سمجھ نہیں آیا کہ کوئی کیوں ایسا کرے گا۔ مطیع اللہ جان بھی اسی طرح غائب ہوا تھا پھر بعد میں پتا چلا کہ ڈرامہ تھا۔ حامد میر پر گولی کس نے چلائی تھی؟ آرمی چیف نے خود حامد میر سے کہا کہ سچ بتائے تو بغلیں جھانکنے لگا صحافیوں کی نجی ملاقات میں جو آرمی چیف کے ساتھ ہوئی تھی اور اس پر کئی صحافیوں کا بیان موجود ہے۔
ویسے پانچھ وقتی نمازی احسن اقبال کو زرا شرم نہیں آئی کہ سیالکوٹ سپورٹ سٹی میں اتنا کھانچا لگا کر ملک کا نقصان کیا؟ اور اس وقت یہ نمازی صاحب کہا تھے جب نون لیگ نے ختم نبوت کا قانون بدلا اور بڑی صفائی سے۔ اور پھر بعد میں واپس بھی لیا اور صفائیاں پیش فرماتے رہے۔ علی بھائی اپ کی حمدردیاں جسطرح نون لیگیوں کے ساتھ ہیں مجھے افسوس سے کہنا پڑتا ہے کہ آپ اندر سے نون لیگی ہیں۔ مجھے نہیں پتا کہ اسے واقعی گولی لگی بھی یا نہیں اور کس نے ماری کیونکہ خلاف قانون کوئی بھی کام کرنا جرم ہے اور انسانی جان پر بغیر کسی وجہ کے حملہ کرنا تو بھول ہی جائیں مگر یہ نون لیگیوں میں اگر کوئی معصوم ہے نہ تو آٹے میں نمک کے برابر اور وہ بھی برائے نام کیونکہ جب نواز شریف جیسے سیاسی مافیا کی حمایت کردی تو کاہے کا معصوم؟ لیکن معصوم آپ اس مطلب میں لے لیں کہ جس پر کوئی کرپشن کا الزام نہ ہو۔ ورنہ تو یہاں قبضہ مافیا کی آماجگاہ ہی نون لیگ ہے۔


گیارواں اعتراض ہے کہ ایل این جی پر پی ٹی آئی کا الزام غلط تھا اور حماد اظہر نے بھی مان لیا اور وغیر وغیر۔
حضور الزام یہ تھا کہ ایل این جی اگر بھارت' اور بنگلہ دیش آدھی قیمت پر لے رہے تھَے تو انکے تو مراسم اتنے برادرانہ نہیں تھے جتنے کہ نون لیگ دعوہ کرتی ہے قطر کے حوالے سے۔ وہیں سے خط بھی آیا تھا نہ۔ ویسے وہ اصلی تھا۔ اور اپکو کیا علم ہے کہ اپنے دور حکومت میں ایک بھی علاقہ گیس کی تلاش کے لیے مختص نہیں کیا نون لیگ نے؟ اوپر سے مشرف کے دور سے گیس کے کنکشن دینا بند کردیے گئے تھے کیونکہ گیس ختم ہورہی تھی مگر نون لیگ نے دھڑا دھڑ گیس کے کنکشن بانٹ دیے اور جو گیس 5 سال بعد ختم ہونی تھی وہ 3 سال پہلے ہی ختم ہوگئی۔ یہی نہیں بلکہ سٹیل ملز جس نے بل ادا نہیں کیا تھا اسکا کنکشن کاٹ دیا گیا انہی کے دور میں۔ یعنی اپنی گیس ہم پیدا نہ کریں، ووٹ کے چکر میں جھوٹے کنکشن بھی دیں اور پھر مہنگے معادہے بھی فرمائیں اور کہیں کہ جی بڑا اچھا معاہدہ تھا۔ جی اچھا اسوقت ہوا جب عمران خان نے قطر سے کیا ہوا معاہد 13 ڈالر سے سستا کروا کر 8 ڈالر فی یونٹ کروایا اور لوگ کہتے ہیں کہ عمران خان نے کیا کیا ہے۔ بس اللہ کی کرنی کہ جسطرح تیل مہنگا ہوا اسی طرح گیس کی ڈیمانڈ بڑھی اور قطر نے گیس دینا ہی بند کردی۔ اب جلائیں لکڑیاں یا نئے چولہے آئے ہیں پیلٹس والے۔

بارواں اعتراض کے جیو نیوز کی امن کی آشا پر الزام لگائے گئے۔
بہت اچھی بات ہے کہ آپ نے سچ کا ساتھ دیا اور میں اعتراف کرتا ہوں کہ مجھے آپ سے علم ہوا کہ امن کی آشا کا آئیڈیا پاشا صاحب نے دیا تھا۔ مگر حضور کیا یہ اتفاق ہے کہ ہندوستان کا بیانیہ جیو نیوز سے آرہا ہوتا ہے؟ یہ اجمل کساب جو بھگوان سے مافی مانگتا ہوا پایا گیا وہ بھی مرنے سے پہلے۔ جسکی نہ بولی پاکستانی ہے نہ اسکا تعلق ثابت ہوسکا مگر جیو نیوز نے اسے پاکستان بنا کر پیش کیا؟ اور کیا میر شکیل کی تاریخ اپکو بتانے کی ضرورت ہے کہ کس طرح شریفین سے فائدے لیے؟ مجھے یہ گڈھ جوڑ بتا دیں کہ عمران خان نے کیا ہو یعنی فائدے دے کر اپنے حق میں خبریں دلوانا۔ لندن سے خبر آتی ہے کہ ایک اکانٹ انفریز ہوا جو ہنا ہی تھا مگر یہاں پر کلین چٹیں مل رہی ہیں شریف خاندان کو۔


تیرواں اعتراض کہ پانامہ پر کئی لوگوں کے تھے مگر کیس ایک پر چلا اور اسکی بھی دولت پاکستان نہیں آسکی۔
علی بھائی جب آپ کی حمدردیاں نون لیگ کے ساتھ ہیں نہ تو یہ احتساب کبھی نہیں ہوسکتا۔ آپ آج کہہ دیں کہ یااللہ نواز شریف یا شریف خاندان کبھی سیاست میں نہ آسکے۔ میں مان لوں گا کہ آپ واقعی شریف خاندان کا احتساب چاہتے ہیں۔ کیونکہ ابھی تک نظر یہ آرہا ہے کہ آپ نے شریف خاندان کو اسٹیبلشمنٹ کے خللاف آخری امید سمجھ لیا ہے جس استیبلشمنٹ میں آپ نام نہیں لیتے کے کون حکومتیں گراتا ہے اور کیوں؟
جہاں تک بات ہے کہ اکامے پر کیوں نکالا تو کیا اکامہ جرم نہیں تھا ایک ملک کے وزیراعظم کے لیے؟ جہاں تک پیسے واپس لانے کی بات ہے تو حضور برطانیہ کو جس دن یہ پتا چل گیا نہ کہ پاکستان حکومت نے واقعی اپنی لوٹی ہوئی دولت واپس مانگ لی ہے تو اس دن وہ نواز شریف کی دولت خود ضبط فرما لے گی۔ ورنہ الطاف حسین کے خلاف کیا ایک ثبوت ہے سکاٹ لینڈ یارڈ کے پاس؟ اتنی معصومیت سے کہہ دیا جاتا ہے کہ لوٹی ہوئی دولت واپس نہیں لاسکے۔ یہی ان سیاسی مافیاز کا جرم ہے کہ یہ پیسہ پاکستان سے باہر لے گئے ہیں اور انکا صرف ایک ہی حل ہے کہ انہیں زلت کا نشان بنایا جائے تاکہ انکی نسلیں بھی طوبہ کرلیں سیاست سے۔ مگر ایسا ہونا اسوقت تک ممکن نہیں جب تک اپ ڈھکے چپھے الفاظ میں شریف خاندان کو سپورٹ کرتے رہے ہیں گے۔ اور کس نے کہا ہے کہ نواز شریف کے خلاف ثبوت نہیں ہیں۔ اپکی عدالت تک شریف مافیا سے حدایت لیتی ہے۔ کیا قاضی فائز عیسی نون لیگی نہیں ہے؟ کیا رانا شمیم نے جھوٹا بیان حلفی نہیں دیا عدلیہ کے خلاف؟ کیا نون لیگ نے ثاقب نثار کی جھوٹی اوڈیو نہیں بنائی؟ کیا جسٹس قیوم شہاباز شریف سے پوچھ کر فیصلے نہیں دیتا تھا؟ کیا لاہور ہائی کورٹ نے فیصلہ نہیں دیا کہ مریم کو گرفتار کرنے سے دس دن پہلے بتایا جائے؟ کیا نیب نے جب مریم نواز کو طلب کیا تو اس نے پھتروں کی بارش نہیں فرمائی؟ کیا نون لیگ نے تین باریوں میں عدالتوں کو ٹھیک نہیں کرنا تھا بجائے خراب کرنے کے؟ اور آپ بات کررہے ہیں کہ ہماری عدالتیں انصاف نہیں کرتیں؟ کیا ججز اپکے خیال میں اسٹیبلشمنٹ نے خرید رکھے ہیں تاکہ کسی طاقتور کو سزا نہ ہو؟ تو یہ 250 ارب کے جرمانے جو مختلف ملوں اور کمپنیوں کوکیے گئے ہیں ان پر سٹے آرڈر بھی اسٹیبلشمنٹ کے کہنے پر دیے ہوئے ہیں جو کہ مہنگائی کی ایک بڑی وجہ ہے؟
TL;DR but message is simple stick to what is your field that is exposing sects. Politics is not your thing so stay out of it.
 

abidbutt

Senator (1k+ posts)
مجھے خوشی اس بات کی ہے کہ علی بھائی کے پلیٹ فارم سے سیاست پر بات ہورہی ہے۔ اس سے پہلے انکے کامنٹس میں نے دیکھے کسی دوسرے چینل کی سیاسی ویڈیوز پر جہاں پر سیاسی تھیوریاں پکائی جارہی تھیں اور علی بھائی کے آفیشل چینل سے تعریفوں کے پل باندھے جارہے تھے۔ مجھے اپنی آنکھوں پر یقین نہ آیا کہ کسی کے کندھے پر بندوق رکھ کر چلانا علی بھائی کا شیوا تو نہیں اور میں نے وہاں بھی کامنٹ کا جواب دیا کہ اگر حقیقت آپ پر عیاں ہے تو اپنے پلیٹ فارم سے اسے لوگوں تک پہنچائیں تاکہ اپکو براہراست اسکا جواب دیا جاسکے یا اپ سے اس کے بارے میں سوال کیا جاسکے۔

حالیہ ویدیو میں محمد علی بھائی نے کچھ باتیں کیں ہیں جنکا جواب میں سمجھتا ہوں کہ دینا انتہائی ضروری ہے۔ اس سے پہلے انکی طرح میں بھی یہ بات واضع کردینا چاہتا ہوں کہ عمران خان سے اختلاف کیا جاسکتا ہے کیونکہ وہ کوئی فرشتہ نہیں ہے اور اسکے کئی بیانات متنازعہ ہیں اور اس نے کئی سیاسی غلطیاں کی ہیں۔ مگر ایسا اختلاف جس سے اسکے مخالفین کو فائدہ ہو مثلا سرفہرست نون لیگ پھر پیپلزپارٹی' فضل الرحمن وغیر اسکی کوئی منطق سمجھ نہیں آتی۔ ہاں علی بھائی خود میدان عمل میں آئیں اور کہیں کہ سارے غلط ہیں اور انکو ووٹ دیا جائے تو میں سب سے پہلے انکو ووٹ دوں گا۔ ورنہ تاثر یہ جائیگا کہ وہ نون لیگ کو سپورٹ کررہے ہیں کیونکہ پنجاب میں اگر کوئی پارٹی پی ٹی آئی کا مقابلہ کرسکتی ہے تو وہ ہے نون لیگ۔ اسلیے ڈھکے چپھے الفاظ میں انکے پلیٹ فارم سے نون لیگ کا بیانیہ نکل کر آرہا ہے اور اس پر میرا حق ہے کہ میں سوال پوچھ سکوں۔

سب سے پہلے تو علی بھائی نے کہا کہ حالیہ خط جو ملک کے وزیراعظم نے لہرایا وہ جعلی ہے اور دلیل پیش کی کہ ندیم ملک نے فوج کو خط لکھ کر پوچھا کہ اس خط کی سچائی کیا ہے تو جواب آیا کہ کوئی مس کمیونیکیشن یا اردو میں کہہ لیں کہ غلط فہمی کی وجہ سے یہ خط باہر آیا اور ایسی کوئی بات نہیں ہے کہ امریکہ نے دھکی دی ہے وغیر وغیرہ۔
علی بھائی سے گزارش ہے ادب کے ساتھ کہ نیشنل سکیورٹی کونسل کے اجلاس میں اپوزیشن نے شرکت نہیں کی پہلا جرم ہے کیونکہ اس اجلاس کا اعلامیہ صاف صاف بتا رہا ہے کہ ایسا خط موجود ہے اور اسکی حقیقی تحریر اس سے بھی سخت ہے جو وزیراعظم نے بتائی۔ اور ملک کا وزیراعظم ملکی راز بتانے کا ویسے ہی پابند نہیں ہے۔ اسی لیے اسے نیشنل سکیورٹی کانسل میں دکھایا گیا۔ البتہ ندیم ملک کسی قومی راز کے چپھانے کا پابند نہیں ہے اسلیے اسے چاہیے کہ اپنا خط بمع اسکے جواب کے قوم کے سامنے رکھے ورنہ ابھی تک نیشنل سکیورٹی کونسل کا اعلامیہ ہی مصدقہ سمجھا جائیگا۔ اسکے علاوہ شاہ محمود کریشی کا بیان ہے کہ ڈونلد رو کی کال بھی آئی تھی جس میں سنگین نتائیج کی دھمکی دی گئی تھی روس کے دورہ سے پہلے۔ اب یاد رہے کہ ہر سفارتی کال ریکارڈ ہوتی ہے اور یقینا پیش بھی کی جائیگی اگر معاملہ زیادہ آگے بڑھا۔ ایسے ہی اپوزیشن نے قومی سلامتی کونسل کا بائکاٹ نہیں کیا۔ اور کیا امریکہ کی تاریخ نہیں رہی تختے الٹنا۔ عجیب اتفاق ہے کہ سری لنکا اور نیپال میں بھی امریکی مداخلت کے الزامات لگ رہے ہیں۔ چلین روس اور چین تو امریکہ کی دشمنی میں الزام لگا رہے ہیں مگر سری لنکا اور نیپال سے کیوں آوازیں آرہی ہیں امریکی مداخلت کی۔ ترقی میں عمران خان کے حق میں ایک فضا بن گئی ہے کیا وہاں بھی فوج نے بیانیہ بنایا ہے۔ مجھے تو لگتا ہے کہ مہنگائی نے اپکی آنکھوں پر پٹی باندھ دی ہے جسکا جواب میں آگے جاکر دوں گا کہ مہنگائی کیوں ہوئی۔

دوسرا اعتراض انہوں نے کیا عمران خان کے عدم اعتماد کا سامنا نہ کرنے پر اور سینٹ چیئر مین سنجرانی کو بچانے کے اپوزیشن کے بندوں کو توڑنے کا موازنہ کیا گیا آج کے منحرف آراکین کے ساتھ۔
اول تو اس بات کا کوئی ثبوت موجود نہیں ہے کہ ایجنسیوں نے یا پی ٹی آئی نے اپوزیشن کے بندوں کو خریدا بلکہ انکے غائب ہونے کے بعد کسی ایک نے آکر یہ نہیں کہا کہ ہم نے پیسے پکڑ کر ایسا کیا ہے۔ مگر پھر بھی مان لیتے ہیں کہ کسی نے سینٹ الیکشن میں بندے توڑے۔ بلکل غلط ہے دونوں جگہ پر مگر حضور یہاں پر الزام صرف اپوزیشن پر نہیں بلکہ امریکہ پر لگایا گیا ہے اور خط پیش کیا گیا ہے نیشنل سکیورٹی کونسل میں جسکے بارے میں میں پہلے اعتراض کے جواب میں لکھ چکا ہوں۔ لہزا ندیم ملک کے خط کے مقابلے میں نیشنل سکیورٹی کونسل نے جو کہا ہے وہ زیادہ اہمیت رکھتا ہے۔ پھر بھی اگر ندیم ملک خط سامنے لائے اور اسکا جواب تو پھر دیکھ لیں گے کون سچ ہے اور کون نہیں۔

تیسرا اعتراض یہ کہ عمران خان کہتے تھے کہ لیڈر اچھا آجائے تو باقی سارے نیچے ٹھیک ہوجاتے ہیں حالانکہ ایسا نہیں ہوسکتا اور علی بھائی کے مطابق اس وقت بھی انہوں نے کہا تھا کہ یہ غلط نظریہ ہے۔
کیا عمران خان قوم سے یہ کہتا کہ جب تک اسکی ٹیم میں یا پارٹی میں سارے کے سارے اچھے لوگ نہیں آئیں گے وہ حکومت نہیں بنائے گا؟ چلیں مان لیا۔ متبادل ان پارٹیوں کو حکومت بنانے دیتا جو یقین بھی نہیں رکھتے کہ اقتدار خاندان کے باہر چلا جائے اور جو لوگ اقتدار میں آکر اپنی چوری اور اپنا اقتدار مزید پکا کرلیتے ہیں۔ گویا کہ آپ کہہ رہے ہیں کہ عمران خان کبھی حکومت نہ بنا سکے۔چلیں یہ بھی مان لیا۔ تو جو بات اپکے مطابق عمران خان کو نہیں سمجھ آئی وہ حکومت بنا کر سمجھ آگئی اور کیا عمران خان نے یہ سچ سب کے سامنے نہیں رکھ دیا کہ اب وہ مزید بلیک میل نہیں ہوگا اپنے ہی اتحادیوں یا علیم خان اور جہانگیر ترین سے۔ یعنی اگر اسے اقتدار ہی چاہیے ہوتا تو سیدھا نون لیگ سے مک مکا کر لیتا اور پاچھ سال پورے کر لیتا۔ اور رہی کارکردگی کہ ان تین سالوں میں کیا کیا ہے تو اسکے جواب میں اپکے اگلے کسی اعتراض میں دے سکتا ہوں۔

چوتھا اعتراض علی بھائی نے کیا کہ جب 2014 کا دھرنا ہوا تو اسی وقت انکے مطابق انہیں سمجھ آگئی تھی کہ عمران خان اعلہ کار بن گیا ہے ان قوتوں کا جو حکومتیں گراتے ہیں۔
میں سوال کرنا چاہتا ہوں کہ یہ قوتیں کون ہیں۔ کیوں آپ ایسی بات کرتے ہیں جسکے کئی مطلب نکل سکتے ہوں۔ آپ سے تو اسکی توقع نہیں کی جاسکتی۔ آپ تو دعوہ کرتے ہیں اسی ویڈیو میں کہ آپ شیر علی کے سپاہی ہیں بلکہ میں تو اپکو اللہ کا سپاہی مانتا ہوں اور یقینا آپ بھی فخر سے یہ اعزاز لے لیں گے مگر بات تو وہ کریں نہ جس سے ہمیں نام پتا چلیں ان قوتوں کے۔ ورنہ تو اپ بیانیہ چلا رہے ہیں نون لیگ کا۔ کبھی اسٹیبلشمنٹ' کبھی خلائی مخلوق' کبھی جن اور کبھ پتا نہیں کیا۔ بھئی کون ہے جو ہمارے اندر ہے اور اسے حکومت گرا کر فائدہ ہوتا ہے اور کیا فائدہ ہوتا ہے۔ اسطرح تو عیسائیوں سے بحث کریں وہ بھی تھیوریاں بنا بنا کر سامنے رکھ دیں گے کہ فلاں بات کا فلاں مطلب مگر جو واضع باتیں لکھی ہوں اسکا بھی مطلب پتا نہیں کیا بنا دیں گے۔ دھاندلی ہوئی تھی کہ نہیں؟ اگر ہوئی تھی تو ایک لیڈر کو کیا کرنا چاہیے تھا؟ بڑے افسوس کی بات ہے کہ اپ اتنی معلومات رکھنے کا دعوہ کرتے ہیں مگر نام لینے کی بجائے دو مطلبی باتیں کرتے ہیں اور نام کو آپ بڑی حق گوئی کا دعوہ بھی کرتے ہیں۔ تو بتادیں کہ کون ہیں وہ دوبڑے اسٹیبلشمنٹ میں یا کہیں اور جو حکومتیں گراتے ہیں اور اس سے کیا فائدہ حاصل کرتے ہیں۔

پانچھواں اعتراض پچھلے سے ملحقہ ہے کہ علی بھائی نے 2018 میں عمران خان کو ووٹ نہیں ڈالا۔
اس میں اعراض والی بات نہیں ہے کیونکہ علی بھائی نے یہ نہیں بتایا کہ انہوں نے ووٹ ڈالا کسے تھا۔ غالب امکان یہ ہے کہ ووٹ ڈالا ضرور تھا کیونکہ علی بھائی یہ بھی کہہ سکتے تھے کہ ووٹ ڈالا ہی نہیں مگر ان کے الفاظ ہیں میں نے عمران خان کو ووٹ نہیں ڈالا۔ تو یہاں علی بھائی سے اعتراض کم سوال زیادہ ہے۔ ایک بار پھر حق گوئی کریں اور بتائیں کہ ووٹ ڈالا تھا یا نہیں اور اگر ہاں تو کسے۔ کیونکہ اگر اپ نے نون لیگ کو ڈالا تھا تو پھر آپ یہ بتائیں کہ کیا پانامہ نہیں آچکا تھا۔ کیا نون لیگ ملک کے اساسے 7 بلین ڈالر تک نہیں لے آئی تھی جو کہ 2016 تک کوئی 14 بلین ڈالر تھے۔ صرف سٹیٹ بنک کے ریزروز کی بات کررہا ہوں کیونکہ لوگ پرائیوٹ یا کمرشل بنکوں کے اساسے ملا کر ملکی اساسے گنتے ہیں جبکہ میں صرف سٹیٹ بنک کی بات کررہا ہوں جو ریاست پاکستان کا بند ہے جس کے اساسے اگر 5 بلین ڈالر تک آجاتے تو ملک آفیشلی طور پر دیوالیہ ہوجاتا۔ اور کیا اسی وجہ سے آئی ایم ایف کے پاس جانے کے مشورے نہیں آرہے تھے جبکہ ابھی عمران خان کی حکومت بنی بھی نہیں تھی۔ کیا عبوری حکومت کو چین سے بیل آوٹ پیکچ نہیں لینا پڑا تھا۔ آج کیا معاشی صورت حال ہے' اگے چل کر وہ بھی اپکے گوش گزار کروں گا۔

چھٹا اعتراض یہ کہ عمران خان حکومت میں اتنی مہنگائی ہوئی اور جس طرح کی کارکردگی مختلف وزارتوں میں دکھائی گئی اسکے باوجود علی بھائی نے عمران خان کو سپورٹ کیا اور کہا کہ پانچھ سال پورے کرنے چاہیے تھے۔
آخر کیوں۔ جب آپ مانتے ہیں کہ ایک سربراہ اپ کے مطابق معیشت صحیع نہیں چلا سکا تو اسے پانچھ سال پورے کرنے چاہیے تھے۔ یہی بات آپ زرداری کے لیے کہیں گے جب اس سے بھی زیادہ مہنگائی ہوئی تھی جبکہ نہ کوئی کرونا تھا اور نہ ہی تیل کی قیمتیں بڑھ رہی تھیں' نہ یوکرین کی جنگ ہورہی تھی اور نہ ہی عالمی مہنگائی تھی۔ یہ کیوں ضروری ہے کہ پانچھ سال پورے کیے جائیں۔ صرف اسلیے کہ آپ کے خیال میں کوئی دو بڑے حکومتیں گرانا چاہتے ہیں اور ان بڑوں کا نام لیتے ہوئے اپکے پر جلتے ہیں؟ اور پتا نہیں گلانی اور نواز شریف نے اپنے آخری سال کے آخری مہینے کے آخری دن کونسا بٹن دبانا تھا جسکے بعد پاکستان نے مریخ پر کالونی بنا لینی تھی۔ شکر ہے ابھی انسان مریخ تک نہیں پہنچا کیونکہ ان سیاسی مگرمچھوں نے وہاں بھی جائیدادیں بنا لینی تھیں۔
ریکارڈ مہنگائی ہوئی پاکستان میں مگر لوگ یہ ساتھ زکر نہیں کرتے کے تاریخ انسان کا نہیں تو گزشتہ 500 سال کا سب سے بڑا معاشی بحران آیا ہے اس کرونا کی وجہ سے۔ پھر بھی اپکو ورزتوں کی کارکردگی چاہیے تو ان تین سالوں میں یہ کیا ہے اس حکومت نے۔
اپکے اساسے آج بلند ترین سطح پر ہیں اور صرف سٹیٹ بنک کے اساسے 18 بلین ڈالرز تھے 9 اپریل 2021 تک اور آج ایک سال بعد یقینا 18 بلین سے زیادہ ہی ہوں گے۔
آپکی آئی ٹی کی ایکسپورٹس آج بلند ترین سطح پر ہیں۔
اپکی ٹیکسٹائل ایکسپورٹس بلند ترین سطح پر ہیں۔
کیا 5 ارب یا چلیں 5 کروڑ درخت بھی نہیں لگے ہوں گے؟
اپکا پی ٹی وی آج منافع میں۔
آپکا این ایچ اے منافع میں۔
آپکا پوسٹ آفس منافع میں۔
10 ڈیمز بن رہے ہیں۔
اپکی زیتون' چنا' گنا اور گندم کی فصل کی پیداوار بلند ترین سطح پر۔
نیب کی ریکوریاں بلند ترین سطح پر حالانکہ ابھی 10 فیصد بھی احتساب نہیں ہوا۔
اور ایمازون یا سیمسنگ جیسی کمپنیاں کسی ڈوبتے ہوئے ملک میں نہیں جاتیں اسے بچانے کےلیے۔
نون لیگ صرف 3 گاڑیوں کی کمپنیاں چھوڑ کر گئی تھی، آج کتنی ہیں 12۔
نون لیگ 5۔5 فیصد کی گروتھ پر ڈینگے مارتی ہے جبکہ اس حکومت نے اتنی ہی گروتھ کرونا کے باوجود کردی ہے۔
اور نون لیگ کا تجارتی خسارہ تھا 20 بلین ڈالرز اور اس حکومت کا ہے مشکل سے 2 بلین جبکہ اتنی تو ویکسین ہی منگوائی ہوگی یعنی یہ خسارا بھی نہ ہوتا اگر کرونا نہ ہوتا اور جی ڈی پی تقریبا 7 فیصد تک ہوتا۔
ورلڈ بنک کی رپورٹ ہے کہ خطے کے ممالک کے لحاظ سے پاکستان میں سب سے کم بیروزگاری ہے۔ تو اب؟
آج پاکستان میں سیل فون اسمبلی ہورہی ہے اور جلد ہی میوفیکچرنگ بھی شروع ہوجاتی اگر اپوزیشن تھوڑا غیرت کھاتی۔


ساتواں اعتراض ہے کہ عمران خان نے اپنے سپورٹرز کو گالم گلوج سکھایا ہے۔
انتہائی غلط الزام ہے۔ اور علی بھائی نے خود ہی اسکا جواب دیا ہے کہ باقی پارٹیوں کے لوگ بھی کرتے ہیں مگر کیوںکہ سوشل میڈیا پر پی ٹی آئی کا قبضہ ہے تو اسلیے عمران خان پر اسکا الزام آتا ہے۔ اول تو یہ کہ قوم کو یہ غلط بیماری ہے اور آج سے نہیں۔ عمران خان بھی اسی قوم کا حصہ ہے البتہ عمران خان نے گالی تو کسی کو نہیں دی۔ سخت جملے یعنی اوئے کرکے بلانا یا بیغیرت کہنا یہ یقینا شائستہ زبان نہیں مگر باقی لیڈروں کے مقابلے میں یہ پھر بھی کم ہے۔ بلاول ہوجائے، خود نواز اور زرداری جبکہ مولانا کے بھی ایسے ایسے وحیات قسم کے بیانات ہیں کہ اللہ کی پناہ۔ اسلیے قوم کی بیماری کو پی ٹی آئی کی بیماری کہنا غلط ہے۔


آٹھواں اعتراض کہ عمران خان نے کئی غلط الزام لگائے مثلا غداری جو جو عدم اعتماد کے پیچھے تھے اور ماضی میں جیسے پینتیس پنکچر کا بیان اور پھر معافی مانگی۔
پنتیس پنکچر کی جہاں تک بات ہے تو قائم مقام وزیراعلی یعنی نجم سیٹھی کا اعترافی بیان ہے کہ آخری دنوں میں فیصلے رائنونڈ سے آرہے تھے تو کیوں آرہے تھے جی۔ اور اسکے بعد کیا دھاندلی کے شواہد سامنے نہیں آئے؟ کوئی شک ہے کہ نجم سیٹھی نے دھاندلی کی اور یہ بھی پہلی صف میں شامل تھا ساری دھاندلی میں۔ اور آج کہتا ہے کہ حکومت پیٹرول سستا کیوں نہیں کرتی اور جب سستا کیا تو کہتا ہے کہ کیوں کیا۔ یعنی ایسا بند جسکی بیوی خود نون لیگ میں شامل ہوگئی جو دراصل ہے ہی نون لیگی اور اسکی حمایت اپ کررہے ہیں کہ اس پر دھاندلی کا غلط الزام لگا۔ ٹھیک ہے تحقیقات نہیں ہوئی اور حلقے نہیں کھولے گئے ورنہ پتا چل جاتا اور بغیر ثبوت کے الزام پر عمران خان نے معزرت بھی کی لیکن حضور دھادنلی تو ہوئی ہے نہ؟ اس طرح تو ابھی تک زرداری پر کوئی کرپشن براہراست ثابت نہیں ہوئی مگر کون ہے جو اسے ایماندار مانتا ہے؟
جہاں تک غداری کی بات ہے تو کئی لوگ صرف پیسہ دیکھ کر بک گئے انہیں نہیں پتا تھا کہ وہ بیرونی مداخلت کا اعلہ کار بن رہے ہیں مگر نواز شریف جسکی پاکستان دشمن لوگوں سے ملاقاتیں کیا ڈھکی چپھی ہیں۔ تین دفع کا وزیراعظم کس طرح کوئی ایسا بیان دے سکتا ہے جو ہندوستا استعمال کرلے؟ ایک بیان ہوگیا دو ہوگئے چلیں غلطی سے مگر کیا اسکی مرضی کے بغیر آزاد کشمیر میں اسکے امیدوار نے ہندوستان سے مدد مانگ لی۔ کیا ہم بیوقوف ہیں جو ہمیں نہیں پتا کہ غداری کیا ہوتی ہے؟ چلیں مان لیا کہ نون لیگ میں سارے غدار نہیں مگر اعلی قیادت کمپرومائزڈ تو ہو ہی چکی ہے کیونکہ انکا پیسا پاکستان میں نہیں ہے۔ اور اپنے کیسس یہ پاکستان میں لڑ نہیں سکتے تو اسی لیے جمہوری پراسس نہ چلنے کا اصل فائدہ تو نواز اور زرداری کو ہوتا ہے۔ پھر اپ کیسے اسٹیبلشمنٹ کے دو بڑوں کی بات کرتے ہیں اور نام لیتے نہیں اور دعوہ کرتے ہیں علی کے جانشین ہونے کا۔


نواں اعتراض کہ پی ٹی ائی میں سارے ممی ڈیڈی ہیں اور انکا مقابلہ نہیں کرسکتے اگر لبیک پارٹی کی طرح کے لوگ انکے سامنے آجائیں۔
پہلی بات تو یہ ہے کہ یہ غلط تاثر ہے کہ پی ٹی آئی میں صرف ممی ڈیڈی لوگ ہیں۔ ہاں انکی تعداد زیاد ہے کیونکہ بیرون ملک رہ کر پاکستانی زیادہ تر عمران خان کو سپورٹ کرتے ہیں۔ مگر اسکے باوجود پی ٹی آئی میں جان توڑ لوگ موجود ہیں جو نان لیگ میں نہیں ہیں۔ نان لیگ کی سیاست نظریاتی نہیں ہے۔ میں مانتا ہوں کہ پی ٹی ائی کا ووٹر کافی بد دل ہوا ہے جبکہ عمران خان نے اپنے ساتھ کچھ مگرمچھوں کو ملایا مگر پھر بھی عمران خان کو سپورٹ کرنے کی وجہ یہی ہے کہ یہ کچھ نہ کچھ تبدیلی تو لاہی سکتا ہے جس سے سیاسی مافیا کو کمزور کیا جائے۔ ایسے ہی اتنے بڑے جلسے نہیں ہوتے۔ ممی ڈیڈی اتنی تعداد میں باہر آتے ہیں نہیں۔ بلکہ ان میں سے بیشتر کو پتا بھی نہیں ہوگا کہ مہنگائی بھی کوئی چیز ہے اور جلسوں میں آنا تو بھول جائیں۔ عمران خان کا ووٹر مڈل کلا اور پڑھا لکھا ہے جو نان پر ٹکی لگا کر ووٹ نہیں بیچتا۔


دسواں اعتراض ہے کہ احسن اقبال جو کہ پانچھ وقتی نمازی ہیں مگر ان پر گولی چلائی گئی۔
اول تو یہ خبر اور اسکے بعد آنے والی خبروں کے مطابق گولی پی ٹی آئی نے نہیں چلائی۔ اسکا فائدہ پی ٹی آئی کو نہیں ہوا تو مجھے مقصد سمجھ نہیں آیا کہ کوئی کیوں ایسا کرے گا۔ مطیع اللہ جان بھی اسی طرح غائب ہوا تھا پھر بعد میں پتا چلا کہ ڈرامہ تھا۔ حامد میر پر گولی کس نے چلائی تھی؟ آرمی چیف نے خود حامد میر سے کہا کہ سچ بتائے تو بغلیں جھانکنے لگا صحافیوں کی نجی ملاقات میں جو آرمی چیف کے ساتھ ہوئی تھی اور اس پر کئی صحافیوں کا بیان موجود ہے۔
ویسے پانچھ وقتی نمازی احسن اقبال کو زرا شرم نہیں آئی کہ سیالکوٹ سپورٹ سٹی میں اتنا کھانچا لگا کر ملک کا نقصان کیا؟ اور اس وقت یہ نمازی صاحب کہا تھے جب نون لیگ نے ختم نبوت کا قانون بدلا اور بڑی صفائی سے۔ اور پھر بعد میں واپس بھی لیا اور صفائیاں پیش فرماتے رہے۔ علی بھائی اپ کی حمدردیاں جسطرح نون لیگیوں کے ساتھ ہیں مجھے افسوس سے کہنا پڑتا ہے کہ آپ اندر سے نون لیگی ہیں۔ مجھے نہیں پتا کہ اسے واقعی گولی لگی بھی یا نہیں اور کس نے ماری کیونکہ خلاف قانون کوئی بھی کام کرنا جرم ہے اور انسانی جان پر بغیر کسی وجہ کے حملہ کرنا تو بھول ہی جائیں مگر یہ نون لیگیوں میں اگر کوئی معصوم ہے نہ تو آٹے میں نمک کے برابر اور وہ بھی برائے نام کیونکہ جب نواز شریف جیسے سیاسی مافیا کی حمایت کردی تو کاہے کا معصوم؟ لیکن معصوم آپ اس مطلب میں لے لیں کہ جس پر کوئی کرپشن کا الزام نہ ہو۔ ورنہ تو یہاں قبضہ مافیا کی آماجگاہ ہی نون لیگ ہے۔


گیارواں اعتراض ہے کہ ایل این جی پر پی ٹی آئی کا الزام غلط تھا اور حماد اظہر نے بھی مان لیا اور وغیر وغیر۔
حضور الزام یہ تھا کہ ایل این جی اگر بھارت' اور بنگلہ دیش آدھی قیمت پر لے رہے تھَے تو انکے تو مراسم اتنے برادرانہ نہیں تھے جتنے کہ نون لیگ دعوہ کرتی ہے قطر کے حوالے سے۔ وہیں سے خط بھی آیا تھا نہ۔ ویسے وہ اصلی تھا۔ اور اپکو کیا علم ہے کہ اپنے دور حکومت میں ایک بھی علاقہ گیس کی تلاش کے لیے مختص نہیں کیا نون لیگ نے؟ اوپر سے مشرف کے دور سے گیس کے کنکشن دینا بند کردیے گئے تھے کیونکہ گیس ختم ہورہی تھی مگر نون لیگ نے دھڑا دھڑ گیس کے کنکشن بانٹ دیے اور جو گیس 5 سال بعد ختم ہونی تھی وہ 3 سال پہلے ہی ختم ہوگئی۔ یہی نہیں بلکہ سٹیل ملز جس نے بل ادا نہیں کیا تھا اسکا کنکشن کاٹ دیا گیا انہی کے دور میں۔ یعنی اپنی گیس ہم پیدا نہ کریں، ووٹ کے چکر میں جھوٹے کنکشن بھی دیں اور پھر مہنگے معادہے بھی فرمائیں اور کہیں کہ جی بڑا اچھا معاہدہ تھا۔ جی اچھا اسوقت ہوا جب عمران خان نے قطر سے کیا ہوا معاہد 13 ڈالر سے سستا کروا کر 8 ڈالر فی یونٹ کروایا اور لوگ کہتے ہیں کہ عمران خان نے کیا کیا ہے۔ بس اللہ کی کرنی کہ جسطرح تیل مہنگا ہوا اسی طرح گیس کی ڈیمانڈ بڑھی اور قطر نے گیس دینا ہی بند کردی۔ اب جلائیں لکڑیاں یا نئے چولہے آئے ہیں پیلٹس والے۔

بارواں اعتراض کے جیو نیوز کی امن کی آشا پر الزام لگائے گئے۔
بہت اچھی بات ہے کہ آپ نے سچ کا ساتھ دیا اور میں اعتراف کرتا ہوں کہ مجھے آپ سے علم ہوا کہ امن کی آشا کا آئیڈیا پاشا صاحب نے دیا تھا۔ مگر حضور کیا یہ اتفاق ہے کہ ہندوستان کا بیانیہ جیو نیوز سے آرہا ہوتا ہے؟ یہ اجمل کساب جو بھگوان سے مافی مانگتا ہوا پایا گیا وہ بھی مرنے سے پہلے۔ جسکی نہ بولی پاکستانی ہے نہ اسکا تعلق ثابت ہوسکا مگر جیو نیوز نے اسے پاکستان بنا کر پیش کیا؟ اور کیا میر شکیل کی تاریخ اپکو بتانے کی ضرورت ہے کہ کس طرح شریفین سے فائدے لیے؟ مجھے یہ گڈھ جوڑ بتا دیں کہ عمران خان نے کیا ہو یعنی فائدے دے کر اپنے حق میں خبریں دلوانا۔ لندن سے خبر آتی ہے کہ ایک اکانٹ انفریز ہوا جو ہنا ہی تھا مگر یہاں پر کلین چٹیں مل رہی ہیں شریف خاندان کو۔


تیرواں اعتراض کہ پانامہ پر کئی لوگوں کے تھے مگر کیس ایک پر چلا اور اسکی بھی دولت پاکستان نہیں آسکی۔
علی بھائی جب آپ کی حمدردیاں نون لیگ کے ساتھ ہیں نہ تو یہ احتساب کبھی نہیں ہوسکتا۔ آپ آج کہہ دیں کہ یااللہ نواز شریف یا شریف خاندان کبھی سیاست میں نہ آسکے۔ میں مان لوں گا کہ آپ واقعی شریف خاندان کا احتساب چاہتے ہیں۔ کیونکہ ابھی تک نظر یہ آرہا ہے کہ آپ نے شریف خاندان کو اسٹیبلشمنٹ کے خللاف آخری امید سمجھ لیا ہے جس استیبلشمنٹ میں آپ نام نہیں لیتے کے کون حکومتیں گراتا ہے اور کیوں؟
جہاں تک بات ہے کہ اکامے پر کیوں نکالا تو کیا اکامہ جرم نہیں تھا ایک ملک کے وزیراعظم کے لیے؟ جہاں تک پیسے واپس لانے کی بات ہے تو حضور برطانیہ کو جس دن یہ پتا چل گیا نہ کہ پاکستان حکومت نے واقعی اپنی لوٹی ہوئی دولت واپس مانگ لی ہے تو اس دن وہ نواز شریف کی دولت خود ضبط فرما لے گی۔ ورنہ الطاف حسین کے خلاف کیا ایک ثبوت ہے سکاٹ لینڈ یارڈ کے پاس؟ اتنی معصومیت سے کہہ دیا جاتا ہے کہ لوٹی ہوئی دولت واپس نہیں لاسکے۔ یہی ان سیاسی مافیاز کا جرم ہے کہ یہ پیسہ پاکستان سے باہر لے گئے ہیں اور انکا صرف ایک ہی حل ہے کہ انہیں زلت کا نشان بنایا جائے تاکہ انکی نسلیں بھی طوبہ کرلیں سیاست سے۔ مگر ایسا ہونا اسوقت تک ممکن نہیں جب تک اپ ڈھکے چپھے الفاظ میں شریف خاندان کو سپورٹ کرتے رہے ہیں گے۔ اور کس نے کہا ہے کہ نواز شریف کے خلاف ثبوت نہیں ہیں۔ اپکی عدالت تک شریف مافیا سے حدایت لیتی ہے۔ کیا قاضی فائز عیسی نون لیگی نہیں ہے؟ کیا رانا شمیم نے جھوٹا بیان حلفی نہیں دیا عدلیہ کے خلاف؟ کیا نون لیگ نے ثاقب نثار کی جھوٹی اوڈیو نہیں بنائی؟ کیا جسٹس قیوم شہاباز شریف سے پوچھ کر فیصلے نہیں دیتا تھا؟ کیا لاہور ہائی کورٹ نے فیصلہ نہیں دیا کہ مریم کو گرفتار کرنے سے دس دن پہلے بتایا جائے؟ کیا نیب نے جب مریم نواز کو طلب کیا تو اس نے پھتروں کی بارش نہیں فرمائی؟ کیا نون لیگ نے تین باریوں میں عدالتوں کو ٹھیک نہیں کرنا تھا بجائے خراب کرنے کے؟ اور آپ بات کررہے ہیں کہ ہماری عدالتیں انصاف نہیں کرتیں؟ کیا ججز اپکے خیال میں اسٹیبلشمنٹ نے خرید رکھے ہیں تاکہ کسی طاقتور کو سزا نہ ہو؟ تو یہ 250 ارب کے جرمانے جو مختلف ملوں اور کمپنیوں کوکیے گئے ہیں ان پر سٹے آرڈر بھی اسٹیبلشمنٹ کے کہنے پر دیے ہوئے ہیں جو کہ مہنگائی کی ایک بڑی وجہ ہے؟
I like your patience in replying to him. I used to like him too but when I heard speaking him about politicians and taking sides, I started parting ways. It is also fact that I could not hear him when he started speaking BS against khan and I just read in red text from your write up what his sayings were.
 

HimSar

Minister (2k+ posts)
Freaking wrong numbers, didn't need to know political views, their basic handling of general matters is enough to throw shade on the rest of their work.
Someone mentioned today that during Karbala, yazid's army was 'winding up' early so that they don't miss the prayer time.. even if untrue, at least one of them must have prayed on the field that day..
Namazi, darhi ki lambayi, payenchay ki oonchai, alhaaj, etc koi gawahi naheen hoti. Yeh banday aur Allah kay beech kay muamlay hain. Haan bandon kay aapas kay muamlay ki sakht pakar hai.
 

younus

Senator (1k+ posts)
His political thought process is shameful. This guy either does not shy of lying or he lacks IQ. I have stopped watching his religious lectures due to this reason
 

Zainsha

Chief Minister (5k+ posts)
Premium Member
inn se bas Imam Hussain AS ka naam le le kar bhashan karwa lo..

waisay bani umayya kay dushman banay phirtay hain..

yeh bhi wrong number ho ga main soch bhi naheen sakta tha..

na tu wahabi na tu kitaabi
tu hai munafiq nooni juraabi..
 

Nice2MU

Prime Minister (20k+ posts)
اس بندے کی تقریباً ساری سیاسی باتیں غلط ثابت ہوتی ہیں۔

جس بندے کا پسندیدہ چینل جیو ہو اور پسندیدہ اینکرز کذابوں کے کذاب حامد میر، شاہزیب خانزادہ اور سلیم صافی ہو تو پھر انکی سیاسی سمجھ بوجھ پہ اناللہ و انا الیہ راجعون ہی بولا جا سکتا ہے ۔۔
اس بندے کا ہر وہ صحافی اور سیاستدان ہیرو ہے جو آرمی کے خلاف بولتا ہو سمپل۔
 

Meme

Minister (2k+ posts)
گو میں انجینئر کا فین نہیں ہوں۔ انجینئیر کا سیاسی تجزیہ ان کے مذہبی تجزئے سے بہت بڑھ کر ہے۔ سرکار کے ملازم ہیں اندرونی ذرائع کا بھی ان کے تجزئیے پہ اثر ہوتا ہے۔ سارے عمرانی فولوورز ہونے کے باوجود ڈنکے کی چوٹ پہ جو بہتر سمجھا تجزیہ کیا اور بطور مجموعی خوب کیا۔ سپریم کورٹ کے فیصلے کے بعد بڑی حد تک ان کی رائے کی توثیق ہو گئی۔
 

Kavalier

Chief Minister (5k+ posts)
اس بندے کی تقریباً ساری سیاسی باتیں غلط ثابت ہوتی ہیں۔

جس بندے کا پسندیدہ چینل جیو ہو اور پسندیدہ اینکرز کذابوں کے کذاب حامد میر، شاہزیب خانزادہ اور سلیم صافی ہو تو پھر انکی سیاسی سمجھ بوجھ پہ اناللہ و انا الیہ راجعون ہی بولا جا سکتا ہے ۔۔
اس بندے کا ہر وہ صحافی اور سیاستدان ہیرو ہے جو آرمی کے خلاف بولتا ہو سمپل۔

Sir apki bhi ankhayn khulayn gi aur ap bhi army k khilaaf bolayn gay, kafi saray tou abhi bol rehay hayn, jo thoray say reh gaye hayn, wo bhi bolayn gay, bus aik dafa Khan k mounh say wohi nikalnay ki der hay jo baqi politicians ya journalists kehtay aaye hayn
 

Nice2MU

Prime Minister (20k+ posts)
Sir apki bhi ankhayn khulayn gi aur ap bhi army k khilaaf bolayn gay, kafi saray tou abhi bol rehay hayn, jo thoray say reh gaye hayn, wo bhi bolayn gay, bus aik dafa Khan k mounh say wohi nikalnay ki der hay jo baqi politicians ya journalists kehtay aaye hayn


آرمی کے خلاف تو میں 2008 سے بول رہا ہوں لیکن اس طرح نہیں جیسے لبرلذ چاہتے ہیں کہ اپنی پیدائش کا کریڈٹ بھی آرمی کو دے دیتے ہیں

اب آرمی کی نفرت میں میں جیو ٹی وی یا حامد میر جیسے کذابوں یا نواز شریف یا زرداری جیسے چوروں سے محبت شروع کر دوں۔۔ جسطرح اس بندے نے شروع کی ہے۔
 

rmunir

Minister (2k+ posts)
From Islamic engineering to political engineering. Many fazlays are selling Islam for politics. Why can't he?
 

rahail

Senator (1k+ posts)
آرمی کے خلاف تو میں 2008 سے بول رہا ہوں لیکن اس طرح نہیں جیسے لبرلذ چاہتے ہیں کہ اپنی پیدائش کا کریڈٹ بھی آرمی کو دے دیتے ہیں

اب آرمی کی نفرت میں میں جیو ٹی وی یا حامد میر جیسے کذابوں یا نواز شریف یا زرداری جیسے چوروں سے محبت شروع کر دوں۔۔ جسطرح اس بندے نے شروع کی ہے۔
bhai jee.. Zaydatar log apni khawaishon kay ghulam hain or HAQ baat ko pasand nahin karte.
In mein se more than half indian social media cell kay loog hain jo forums par aakar Direct Pakistan ko tou kuch nahin kehte.. Lakin Pakistan Army ko malign karte hain.

Please beware, most of those who malign army in this forum are indian social media cell personnel who are tasked with maligning army so that they can tarnish its reputation and favor among masses.
 

Yetti

MPA (400+ posts)
Off course he is supporting N league. Nawaz Sharif is declared culprit, How can any religious person or common person support or follow N League. Whoever will support Nawaz Shareef is culprit himself. Engr. is a munafiq.
 

sensible

Chief Minister (5k+ posts)
مرزا ایک متکبر انسان ہے اور قول وفعل کے تضاد کا شکار ۔ایسے لوگوں کا علم نہ ان کے لیے نفع ہے نہ ان کے پیروکاروں کے لیے۔اپنی اس وڈیو میں یہ اپنے قول وفعل کے تضاد کی معراج پر ہیں۔اور ان کا کہنا کہ لوگ تو یہ بھی کہتے ہیں۔تو لوگ کونسے پیغمبر ہیں۔جن کا حوالہ دے رہے ہیں اور بشری کے بارے میں ان کے الزامات اور ان کے نام نہاد لوگوں کے بغیر ثبوت کے اتنا گرے انجینیر صاحب اس بلندی سے کہ جس پر ابھی چڑھ ہی رہے تھے اتنی گری ہوئ حرکت کو صرف اس طور معاف کیا جا سکتا ہے جب وہ اس کے خلاف ٹھس ثبوت پیش کریں ۔پرپیگنڈہ نہیں جسے وہ دلیل بنارہے ہیں اور پھر یہ بھی بتائیں کہ ان کا اس وڈیو بنانے کا جو نکتہ نظر تھا پوری وڈیو میں عملا اس کے خلاف کرتے نظر آئے ۔کیا عمران خان اور بشری انسانوں سے الگ مخلوق ہے؟ اس امتیازی سلوک کی وجہ؟
قصہ مختصر انجینیر خود تضادات کا مجموعہ اور اپنی تعلیمات کے خلاف سب سے بڑا اشتہار
 
Sponsored Link