تاجروں نے شبر زیدی کی بات سننے سے انکار کردیا، میٹنگ سے اٹھ کر چلے گئے

AhmadSaleem264

MPA (400+ posts)
In tajron k betay croron mai khelty han lekin mazdoor ki tankhaw kabhi pori or time pai nhi di hogi.
Consumer sai 17% gst lai k bhi agay fbr ko nhi detay apna tax to kia dena.
Sahih kaha gia hai pakistanion k baray mai danda peer vigrian tigrian da
 

Will_Bite

Chief Minister (5k+ posts)
They can take off. I hope FBR starts raiding their shops and warehouses, looking for undeclared inventories and sales. Sock it to them. They are the ones who have been bleeding the country dry for years at the behest of crooked politicians.
 

pkpatriot

Minister (2k+ posts)
اگر کسی کو یاد ہو تو ایک صاحب ہوتے تھے

او دلیو ، او کنجرو

سب ان سے ڈرتے تھے کے یہ تو جی ہر چیز الٹ دیں گے

پھر ایسے گم ہوے کے پتا نہیں زمین کھا گئی

چور کبھی بھی کھڑا نہیں ہو سکتا

اسٹیٹ کے سامنے یہ کچھ بھی نہیں ھیں

اگر اسٹیٹ نے فیصلہ کر لیا تو ان کا باپ بھی ٹیکس دے گا

ظلم کی کوئی حد ہے ، کروڑوں کا کاروبار ایک دن میں اور ٹیکس نیٹ میں نہیں

پاکستان کے مسائل کا ایک ہی حل ہے - ڈوکومنٹڈ اکانومی

دس بیس سال پہلے ہو جاتی تو آج سکون ہوتا

آج کر لو تو بھی مسائل حل ہو سکتے ہیں

اور لیٹ کرنا پاکستان کے مفاد میں نہیں
Yeah..
No need of dialogue with traders and importers.
Do dialogue with only manufacturers, producers, farmers, industrialists because they do something constructive.
 

chandaa

Chief Minister (5k+ posts)
Time to deal with them with full force. Why they don't want to become part of documented economy? They charge their customers full VAT yet they put that in their own pockets and then don't pay any income tax at all.
 

Mughal1

Chief Minister (5k+ posts)
wadera culture haraami logoon ka culture hai aur jo log is ko dil se apnaate hen wohee haraami hote hen yani haraam kamaane waale aur haraam khaane waale. her qowm aise hi logoon ki wajah se tabaho barbaad hoti rahee hai.

in main hukamraan, sarmayadaar, mullaan, un ke dalaal aur saath dene waale sab shaamil hen.

doosre darje main woh log aate hen jin ko koi farq hi nahin padta koi jo chahe kare.

yahee wajah hai tijaarat deene islam main musalmaanu ke darmiyaan aise hi haraam hai jaise hukamraani logoon ki aik doosre per. mullaiyat bhi issi liye haraam hai deene islam main. mullaan awaam ko hukamraanu aur sarmayadaarun ki ghulaami ke liye zehni tor per tayaar karte hen yahee in ka kaam hai.




 

abidbutt

MPA (400+ posts)
Ask them to pay taxes. If they don't get their assets details and then ask means they used to build those assets. If they define and give trail and have paid taxes on the earned money then ok otherwise, file NAB case against them or ask them to pay taxes if they had not on the prior earned income which they were supposed to report and pay taxes on.
 

deviliicious

MPA (400+ posts)
These traders are so fardiyai they do not file tax first they steal VAT and now they are blackmailing and also they are overselling by increasing prices and abusing government. People are corrupt to the core in this country.
 

Admiral

Chief Minister (5k+ posts)


ٹیکس افسروں کی بجائے بھتہ کلکٹرز کو ایف۔بی۔آر میں بھرتی کیا جائے، تو ریوینیو 3500 ارب کی بجائے 7000 ارب ہو جائے گا

 

Nikita Chaudhry

MPA (400+ posts)
Talk to any one who knows Pakistan's Economic, Financial and Business world and claim that Shabir Zaidi is Incharge of FBR with a mission to build Naya Pakistan and he will laugh at your face !
 

Awan S

Senator (1k+ posts)
اگر کسی کو یاد ہو تو ایک صاحب ہوتے تھے

او دلیو ، او کنجرو

سب ان سے ڈرتے تھے کے یہ تو جی ہر چیز الٹ دیں گے

پھر ایسے گم ہوے کے پتا نہیں زمین کھا گئی

چور کبھی بھی کھڑا نہیں ہو سکتا

اسٹیٹ کے سامنے یہ کچھ بھی نہیں ھیں

اگر اسٹیٹ نے فیصلہ کر لیا تو ان کا باپ بھی ٹیکس دے گا

ظلم کی کوئی حد ہے ، کروڑوں کا کاروبار ایک دن میں اور ٹیکس نیٹ میں نہیں

پاکستان کے مسائل کا ایک ہی حل ہے - ڈوکومنٹڈ اکانومی

دس بیس سال پہلے ہو جاتی تو آج سکون ہوتا

آج کر لو تو بھی مسائل حل ہو سکتے ہیں

اور لیٹ کرنا پاکستان کے مفاد میں نہیں
اکانومی پچھلے کافی سال سے ڈوکومنٹڈ ہو رہی ہے اور ہوتی رہے گی لیکن مسئلے کا حل ان ڈائریکٹ ٹیکس نہیں ہیں - اگر آپ تاجروں پر اضافی ٹیکس لگائیں گے تو وہ آگے خریدار کو پاس کر دیں گے ان کا کیا جاتا ہے پسے گا تو غریب خریدار - اس ملک میں ستر سال میں روٹی کی قیمت سات روپے تک پوھنچی اور اب ایک دم پندرہ روپے ہو گئ ہے - تاجر تو یہی رو رہا ہے کہ اگر اسے مال مہنگا ملے گا تو سستا کیسے بیچ سکتا ہے اور حکومت اوپر سے مزید ٹیکس لگا رہی ہے - امیر غریب سب کو ایک مہنگی قیمت پر چیز مل رہی ہے جو امیر خرید سکتا ہے مگر غریب کی پوھنچ سے باہر ہے - مسئلے کا حل ڈائریکٹ ٹیکس ہے جو جتنا امیر ہے اگر اس سے ڈائریکٹ اتنا ہی زیادہ ٹیکس لیا جائے تو پیٹرول ، بجلی اور روزمرہ استعمال کی دوسری چیزوں کی قیمتیں نہ بڑھانی پڑیں بلکے حکومت سبسڈی دینے کی پوزیشن میں بھی آ سکتی ہے -
 
Sponsored Link

Featured Discussions