سینئر سیاستدان و رکن اسمبلی اور ان کے 2 صاحبزادوں نے حلف اٹھا لیا

baaph11i1h3.jpg


8 فروری 2024ء کو ملک بھر میں منعقد ہونے والے عام انتخابات کے نتیجے میں صوبائی اسمبلی میں پہنچنے والے 2 بھائیوں نے اپنے عہدے کا حلف اٹھا لیا ہے۔ ذرائع کے مطابق سینئر سیاستدان سردار پرویز اقبال گورچانی کے ساتھ ساتھ ان کے 2 صاحبزادے سردار شیر افگن گورچانی اور سردار شیر علی گورچانی بھی عام انتخابات میں کامیاب ہونے کے بعد پنجاب اسمبلی کے رکن منتخب ہو گئے ہیں۔ پنجاب اسمبلی کے آج ہونے والی اجلاس میں باپ اور بیٹوں نے اپنے عہدے کا حلف اٹھا لیا ہے۔

راجن پور سے تعلق رکھنے والے سردار پرویز اقبال گورچانی نے نجی ٹی وی چینل آج نیوز سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ہم اپنے علاقے کے لوگوں کی خدمت کر کے یہاں پر پہنچے ہیں۔ ہمارے مخالفین میں ارب پتی تھے جنہوں نے پیسے کا بھرپور استعمال کیا لیکن عوام نے ہم پر اپنے اعتماد کا اظہار کرتے ہوئے ہمیں منتخب کر کے پنجاب اسمبلی میں بھیجا ہے۔

پرویز اقبال گورچانی کے صاحبزادوں نے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ہم اپنے حلقے کی عوام اور اپنی سیاسی جماعت مسلم لیگ ن کے شکرگزار ہیں جنہوں نے ہم پر اعتبار کیا۔ ضلع راجن پور پسماندہ تھا لیکن شہبازشریف کے دوراقتدار میں ہمارے علاقے میں بہت سے کام ہوئے، عوام کے اعتماد پر اس بار بھی پورا اتریں گے۔

پرویز اقبال کے دوسرے صاحبزادے کا کہنا تھا کہ ہم پاکستان مسلم لیگ کی ٹکٹ پر پنجاب اسمبلی میں پہنچے ہیں، ہم اپنی سیاسی جماعت کے اعتماد پر پورا اتریں گے۔ ہمارا ایجنڈا تحصیل جام پور کو ضلع بنوانے کے ساتھ ساتھ علاقے میں یونیورسٹی بنوانے کے ساتھ ساتھ علیحدہ صوبے کے لیے بھی پنجاب اسمبلی میں آواز اٹھائیں گے۔

انہوں نے کہا کہ مسلم لیگ ن کی قیادت کا شکریہ ادا کرتے ہیں جنہوں نے ہم تینوں کو ٹکٹ جاری کیے ہیں، ہم اپنے علاقے کی عوام کی خدمت کا جذبہ لے کر اسمبلی میں پہنچے ہیں۔ ہم اپنے علاقے کی عوام کے لیے مخلص ہو کر خدمت کریں گے، رکن پنجاب اسمبلی منتخب ہونے پر بہت اچھا محسوس کر رہے ہیں۔