Zardari Ghaddari ready to set Sarbajeet Singh Murderer Free

WatanDost

Chief Minister (5k+ posts)


سربجیت نہیں بلکہ سرجیت سنگھ کو رہا کیا جارہا ہے ۔ صدارتی ترجمان فرحت اللہ بابر




farhatullah-babar-01-250x140.jpg



اسلام آباد۔‘(اردو ویب نیوز) صدارتی ترجمان فرحت اللہ بابر نے کہا ہے کہ صدرآصف زرداری کا سرجیت سنگھ کی سزا معاف کرنے سے کوئی تعلق نہیں ہے۔انہوں نے کہا کہ سربجیت سنگھ کو نہیں بلکہ سرجیت سنگھ ولد سچا سنگھ کو رہا کیا جارہا ہے۔انھوں نے کہا کہ سرجیت سنگھ نے اپنی سزا مکمل کرلی ہے۔اسکی سزا عمر قید میں تبدیل کی گئی تھی۔

---------------------

[h=1]بھارتی دہشت گرد سربجیت سنگھ کی فوری رہائی کے احکامات جاری[/h]http://www.siasat.pk/forum/#http://www.siasat.pk/forum/#
[URL="http://www.siasat.pk/forum/#"]1[/URL]

اسلام آباد ‘(اردو ویب نیوز) صدر آصف علی زرداری نے بھارتی قیدی دہشت گرد سربجیت سنگھ کی پھانسی کی سزاعمرقید میں تبدیل کر اسے فوری رہا کرنے کے احکامات جاری کردیے ہیں ۔ایک نجی ٹی وی کے زرائع کے مطابق وزیرقانون نے بھارتی دہشت گرد سربجیت سنگھ کی رہائی کی سمری وزارت داخلہ کوبھجوادی ہے۔ ذرائع کے مطابق وزارت قانون کی وزارت داخلہ کو بھیجی گئی سمری میں کہا گیا ہے کہ سربجیت سنگھ کوفوری طور پر رہا کر دیا جائے۔ دہشت گرد سربجیت سنگھ نے 1990میں لاہور اورملتان میں بم دھماکے کئے تھے جس میں 14افراد جاں بحق اور درجنوں زخمی ہو گئے تھے۔
۔۔۔۔مزید اپ ڈیٹ ۔۔۔۔۔۔
سر بجیت سنگھ کی رہائی، وزیر قانون نے سمری پر دستخط کر دیئے
رہائی کی سمری پر دستخط کرنے کے بعد سمری وزارت داخلہ کو بجھوا دی
وزارت قانون نے بھارتی قیدی سر بجیت سنگھ کی رہائی کی سمری پر دستخط کرنے کے بعد سمری وزارت داخلہ کو بجھوا دی۔ سر بجیت سنگھ کی پھانسی کی سزا عمر قید میں تبدیل کر دی گئی۔زرائع کے مطابق پاکستان میں قید سربجیت سنگھ 1990 میں لاہور اور ملتان میں ہونے والے بم دھماکوں میں ملوث ہونے کا مجرم پایا گیا تھا۔ سربجیت سنگھ حکومت پاکستان کے مطابق منجیت سنگھ ہے اور لاہور اور ملتان میں کئی بم دھماکوں میں 14 افراد کو ہلاک کرنے کا ذمہ دار ہے۔ اسے 1991 میں انسداد دہشت گردی کی عدالت نے مختلف گواہوں کے بیانات کی روشنی میں سزائے موت سنائی تھی جبکہ سربجیت سنگھ نے خود بھی اس کا اعتراف کیا تھا کہ وہ من جیت سنگھ ہے اور را کیلئے کام کرتا ہے تاہم بعد میں وہ اپنے اعترافی بیان سے منحرف ہو گیا تھا۔ ذرائع کے مطابق وزارت قانون نے بھارتی قیدی سر بجیت سنگھ کی رہائی کی سمری پر دستخط کرنے کے بعد سمری وزارت داخلہ کو بجھوا دی۔. سر بجیت سنگھ کی پھانسی کی سزا عمر قید میں تبدیل کر دی گئی۔ سر بجیت سنگھ کی بہن کا کہنا ہے کہ بھائی کی خبر سن کر بہت خوشی ہوئی ہے۔
 
Last edited: