More support for GHQ puppet Mulla Akhtar Mansoor from Pakistani sympathisers as Taliban chief

Cheeko

Minister (2k+ posts)
1103001547-1.gif
 

Pathfinder

Chief Minister (5k+ posts)
hindia has no business in Afghanistan. If you have a problem with Pakistan's interests but no issues with the enemies infiltration than you ought to be praying to lord Shiva!!!!
 

Piyasa

Minister (2k+ posts)
اپنی غلطيوں کا الزام دوسروں کے سر تھوپنا سب سے آسان کام ہۓ۔ اب طالبان کے بيچ ميں جو اقتداری رسّہ کشی چل رہی ہۓ اس کے ذمّہ دار وہ خود ہيں۔ ويسے ديش کی نظر طالبان کی علاقوں پر گڑی ہے اور چور خليفہ خود بھی رال ٹپکا رہا ہۓ۔
 

allahkebande

Minister (2k+ posts)
They see me rollin, they hatin...;)

یہ دیکھئے افغان طالبان کس طرح اپنے عوام کی خدمت کر رہے ہیں

http://www.bbc.com/urdu/regional/2015/08/150806_afghanistan_blast_pulialam_sh

افغانستان کے مشرقی صوبے لوگر کے دارالحکومت پلِ علم میں ایک خود کش دھماکے میں کم از کم تین پولیس اہلکاروں سمیت چھ افراد ہلاک ہوگئے ہیں۔حملے میں پانچ پولیس اہلکار زخمی بھی ہوئے ہیں۔
حکام کے مطابق خودکش حملہ بارود سے بھرے ٹرک کے ذریعے کیا گیا۔ دھماکہ اس قدر شدید تھا کہ تقریباً 500 میٹر فاصلے پر واقع عمارتوں کے شیشے ٹوٹ گئے۔
اس دھماکے کی ذمہ داری طالبان نے قبول کر لی ہے۔
واضح رہے کہ افغانستان میں ملا محمد عمر کی ہلاکت کی اطلاعات کی تصدیق اور افغان طالبان کے نئے امیر ملا اختر منصور کی تعیناتی کے بعد یہ پہلا بڑا حملہ ہے۔
صوبائی نائب پولیس سربراہ محمد قاری ورا نے خبررساں ادارے اے ایف پی کو بتایا: ’بارود سے بھرے ہوئے ٹینک کو اس وقت دھماکے سے اڑا دیا گیا جب اسے کوئیک رسپانس فورس (پولیس) کے احاطے کے گیٹ پر روکا گیا۔‘
صوبائی گورنر کے دفتر کے ایک اہلکار کے مطابق اس دھماکے میں تین کوئیک رسپانس فورس کے اہلکار اور تین شہری ہلاک ہوئے ہیں جبکہ کم از کم آٹھ افراد زخمی ہیں جن میں ایک بچہ بھی شامل ہے۔
خبررساں ادارے روئٹرز کے مطابق جائے وقوعہ سے 200 میٹر کے فاصلے پر واقع ایک ہسپتال کے ڈاکٹر نے بتایا کہ ہسپتال میں 13 زخمی لائے گئے ہیں۔ ان کا کہنا تھا کہ اس دھماکے میں ہسپتال میں موجود 11 ڈاکٹروں کو بھی چوٹیں آئی ہیں۔
 
Sponsored Link