فراڈکےذمےداروں کوانصاف کےکٹہرےمیں لاناچاہیےچیئرمین امریکی ایوان نمائندگان

2macccaulslkskd.png


چیئرمین امریکی ایوان نمائندگان خارجہ امور کمیٹی مائیکل مک کال نے کہا ہے کہ امریکا پاکستانی عوام کے جمہوری حکومت کے انتخاب کے حق کی حمایت کرتا ہے, مائیکل مک کال نے کہا کہ عام انتخابات میں پاکستانی عوام کی بھرپور شرکت پر مبارکباد دیتا ہوں۔

انہوں نے کہا کہ کسی بھی جمہوریت میں آزاد اور شفاف الیکشن بنیادی اہمیت رکھتے ہیں، انتخابات میں کرپشن یا فراڈ کے الزامات کی مکمل تحقیقات ہونی چاہیے,انتخابات میں کسی بھی کرپشن یا فراڈ کے ذمے داروں کو انصاف کے کٹہرے میں لانا چاہیے۔

ان کا مزید کہنا ہے کہ ایسی جمہوری منتخب حکومت جو قانون کی حکمرانی اور انسانی حقوق کا احترام کرتی ہو۔

دوسری جانب بائیڈن کو پاکستان میں انتخابی نتائج تسلیم نہ کرنیکا مشورہ دے دیا گیا,مداخلت کے دعووں کی مکمل چھان بین ہونی چاہیے، انتخابی عمل میں مداخلت کے الزامات پر تشویش کا اظہار کردیا, کئی امریکی قانون سازوں نے، راہداری کے دونوں جانب سے، بائیڈن انتظامیہ پر زور دیا ہے کہ وہ پاکستان میں انتخابی نتائج کو اس وقت تک تسلیم نہ کرے جب تک کہ مبینہ بے ضابطگیوں کی تحقیقات نہ ہو جائیں۔

امریکی محکمہ خارجہ کے ترجمان نے ایک بیان میں انتخابی عمل میں مداخلت کے الزامات پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ مداخلت یا دھوکہ دہی کے دعوؤں کی مکمل چھان بین ہونی چاہیے۔ ہم معتبر بین الاقوامی اور مقامی انتخابی مبصرین کے ساتھ ان کے جائزے میں شامل ہیں کہ ان انتخابات میں اظہار رائے کی آزادی، انجمن اور پرامن اسمبلی پر غیر ضروری پابندیاں شامل ہیں۔

کمیٹی کے چیئرمین نے کہا کہ پاکستانی جمہوریت کی حمایت میں ہاؤس فارن افیئرز کمیٹی کے چیئرمین مائیکل میک کول، رینکنگ ممبر گریگوری میکس اور دیگر ممتاز قانون سازوں کے حالیہ سخت بیانات کو دیکھتے ہوئے ہم بائیڈن انتظامیہ اور کانگریس پر زور دیتے ہیں کہ وہ ووٹوں کی گنتی کی بے ضابطگیوں اور بیلٹ ٹیمپرنگ کے سخت خدشات پر غور کریں۔

طاقتور ہاؤس فارن افیئرز کمیٹی کے ایک سینئر رکن کانگریس مین بریڈ شرمین نے کہا کہ پاکستان میں صحافتی تنظیموں کو ووٹ ٹیبلیشن کی اطلاع دینے کے لیے آزاد ہونا چاہیے اور نتائج کے اعلان میں بلاجواز تاخیر نہیں ہونی چاہیے۔

اس کے ساتھ ہی کانگریس خاتون راشدہ طلیب نے کہا کہ ہمیں پاکستانی عوام کے ساتھ کھڑا ہونا چاہیے کیونکہ ان کی جمہوریت کو شدید خطرہ لاحق ہے۔ انہیں عمل میں مداخلت اور چھیڑ چھاڑ کے بغیر اپنے قائدین کا انتخاب کرنے کے قابل ہونا چاہیے، اور امریکہ کو یہ یقینی بنانا چاہیے کہ ہمارے ٹیکس ڈالر کسی ایسے شخص کے پاس نہ جائیں جو اس کو نقصان پہنچائے۔

کانگریس خاتون ڈینا ٹائٹس نے کہا کہ وہ زمینی صورتحال پر گہری نظر رکھے ہوئے ہیں اور حکام پر زور دیتے ہیں کہ وہ قانون کی حکمرانی پر عمل کریں,آزادانہ اور منصفانہ انتخابات ایک فعال جمہوریت کی بنیاد ہیں۔ انہوں نے پاکستان میں سیاسی تشدد کے استعمال اور اظہار رائے کی آزادی پر پابندی کی مذمت کی۔

کانگریس خاتون الاحسن عمر نے محکمہ خارجہ سے مطالبہ کیا کہ وہ نتائج کو اس وقت تک تسلیم کرنے سے گریز کریں جب تک کہ بدانتظامی کے متعدد الزامات کی معتبر، آزاد تحقیقات نہیں کی جاتیں۔
میں پاکستان میں اس ہفتے ہونے والے انتخابات میں مداخلت کی خبروں سے سخت پریشان ہوں۔ کسی بھی آنے والی حکومت کی قانونی حیثیت منصفانہ انتخابات، جوڑ توڑ، دھمکی یا دھوکہ دہی سے پاک ہوتی ہے۔ پاکستانی عوام ایک شفاف جمہوری عمل اور حقیقی نمائندہ حکومت سے کم کے مستحق نہیں۔
 

Siberite

Chief Minister (5k+ posts)
چل بھوسڑی کے ، پہلے عزہ میں اپنی حکومت کے کر توت دیکھ لے ۔
 

AbbuJee

Chief Minister (5k+ posts)
چل بھوسڑی کے ، پہلے عزہ میں اپنی حکومت کے کر توت دیکھ لے ۔
غزہ کے بارے میں اپنی حکومت کی حرکتیں بھی دیکھی ہیں جو دم پر پیر آ گیا۔ نہ یو این میں بول پائے نہ انٹرنیشنل کورٹ آف جسٹس کیس کا حصہ بن سکے اور باتیں سن لو۔

 

Siberite

Chief Minister (5k+ posts)
غزہ کے بارے میں اپنی حکومت کی حرکتیں بھی دیکھی ہیں جو دم پر پیر آ گیا۔ نہ یو این میں بول پائے نہ انٹرنیشنل کورٹ آف جسٹس کیس کا حصہ بن سکے اور باتیں سن لو۔




تم لوگوں نے ملک میں دھما چوکڑی مچائ ہوئ ہے ۔ کچھ امن ھو تو باھر کی بات بھی کریں ۔

 

AbbuJee

Chief Minister (5k+ posts)
تم لوگوں نے ملک میں دھما چوکڑی مچائ ہوئ ہے ۔ کچھ امن ھو تو باھر کی بات بھی کریں ۔

تو کس نے کہا ہے کہ بدماشیاں کرو اور دھاندلی کرو۔ حرام کھانے کا اتنا شوق کیوں ہے؟