عمران نیازی، مقابلے کے بغیر، پلیٹ پر رکھی ہوئی جیت چاہتا ہے۔

SaRashid

Minister (2k+ posts)
جی ہاں یہ ہے عمران نیازی کی فطرت۔
یہ بندہ شارٹ کٹس اور 2 نمبر طریقوں سے چیزیں حاصل کرنے کا عادی ہے۔
کرکٹ میں بھی اسی طرح آیا، ماجد خان، جاوید برکی اور اپنے ایک انکل کی سفارش سے قومی کرکٹ ٹیم میں شامل ہوا۔ کئی سال تک خوار ہوتا رہا، تب جاکر وکٹیں ملنا شروع ہوئیں۔ میرٹ پر آتا تو پشت پر لات پڑتی اور 2، 4 میچز کے بعد ہی نکال دیا جاتا۔
کرکٹ کے بعد اس کو کسی دولت مند عورت کی تلاش تھی، جس کے باپ کے پیسے پر عیاشی کر سکے۔ سیتاوہائٹ کو پھنسایا مگر اس کے باپ نے دھمکی دی کہ اگر شادی کی تو ایک پھوٹی کوڑی بھی نہیں ملے گی۔ پھر جمائمہ کو پھنسایا، وہ بھی ایک امیر کبیر باپ کی بیٹی تھی۔
جمائمہ کی ماں کے ذریعے اور لوگوں سے پیسہ ہتھیاکر شوکت خانم ہسپتال بنایا۔ ہسپتال کی زمین بھی نواز شریف سے ہتھیائی۔ ہسپتال بن گیا تو اس کو اپنی سیاست کے لیے سیڑھی کے طور پر استعمال کیا۔
سیاست دان بن گیا اور جمائمہ سے مزید پیسے ملنے کی امید کم ہو گئی تو اس کو چھوڑ دیا۔
جب سیاست میں ناکام ہو گیا تو کامیابی کا راز جانا کہ وردی والوں کی گود میں بیٹھنا ہوگا۔ گود بھی ملی اور امپائر کی انگلی بھی ملی۔
جہانگیر ترین ملا، علیم خان ملا اور عمران خان ان دونوں کو اے ٹی ایم مشین بنا کر ان کے مال پر عیاشی کرنے لگا۔
چوں کہ مقابلہ کرنے کی تربیت اس کو اس کے بڑوں نے نہیں دی۔ شارٹ کٹس اور 2 نمبری کی تربیت ملی ہے۔ اس لیے اس کو یقین تھا کہ نواز شریف اور زرداردی کے ہوتے ہوئے، یہ وزیراعظم نہیں بن سکتا۔ چوں کہ زرداری پہلے ہی بدنام تھا، اس لیے اب اصل ہدف نواز تھا۔ نواز کو وردی والوں کی سازش استعمال کر کے، راستے سے ہٹانے کی ہر ممکن کوشش کی۔ نواز نہیں ہوگا تو میچ آسان ہو جائے گا۔ مقابلہ نہیں کرنا پڑے گا۔
پھر نواز کو نااہل کروانے اور اب سزائیں دلوانے کے بعد، زرداری کی باری آگئی۔ زرداری کے پیچھے ایف آئی اے کو لگا دیا۔
جب نواز بھی نہیں ہوگا، زرداری بھی نہیں ہوگا، تو کسی سے بھی مقابلہ نہیں کرنا پڑے گا اور وزارت عظمیٰ پلیٹ میں رکھ کر پیش کر دی جائے گی۔
اب آپ سمجھے اس ذہنی معذور عمران نیازی کی فطرت؟
 

SahirShah

Minister (2k+ posts)
@admin @Adeel @Waseem
ایڈمن بھی یہاں سوۓ پڑے ہوتے ہیں
تھریڈز کی کوئی ماڈریشن ہوتی ہی نہیں
جس کا دل چاہتا ہے تھریڈ پر تھریڈ کھول کر ماں باپ بہن کو گالیاں بھی دیتا جاتا ہے ساتھ روتا بھی جاتا ہے کہ فورم پر ناانصافی ہو رہی ہے
سیاست پی کے اب صرف ویڈیو شیئرنگ ویب سائٹ بن کر رہ گئی ہے
کمنٹس اور ٹیکسٹ پر لگتا ہے کوئی دھیان ہی نہیں دیتا
Guys, the best way to answer this brainless patwari is to ignore him. He will die with frustration.
 

cestmoi ✅️

Chief Minister (5k+ posts)
@admin @Adeel @Waseem
ایڈمن بھی یہاں سوۓ پڑے ہوتے ہیں
تھریڈز کی کوئی ماڈریشن ہوتی ہی نہیں
جس کا دل چاہتا ہے تھریڈ پر تھریڈ کھول کر ماں باپ بہن کو گالیاں بھی دیتا جاتا ہے ساتھ روتا بھی جاتا ہے کہ فورم پر ناانصافی ہو رہی ہے
سیاست پی کے اب صرف ویڈیو شیئرنگ ویب سائٹ بن کر رہ گئی ہے
کمنٹس اور ٹیکسٹ پر لگتا ہے کوئی دھیان ہی نہیں دیتا


@Adeel @Waseem @Annie @RashidAhmed

I could not agree more.
 

SahirShah

Minister (2k+ posts)
بزدل بھگوڑے، شوکت خانم کے ناسور۔ میں جب بھی کوئی تھریڈ شروع کروں، اس میں میری جانب سے سخت تنقید ہوتی ہے۔ مگر تم جیسے بدذات سب مل کر خنزیروں کی گالیاں بکنا شروع کر دیتے ہو۔ جواب بھی ویسا ہے ملے تو رونا شروع کر دیتے ہو۔

تمہاری چال سے واقف ہوں۔ گالم گلوچ اس لیے کرتے ہو کہ میری تنقید کا جواب تو تمہارا بڑے سے بڑا باپ بھی نہیں دے سکتا۔ اس لیے ایک ہی راستہ ہے کہ گالم گلوچ کے ذریعے راہ فرار اختیار کرو۔

میں نے تو آپ کو گالی نہیں دی
نہ اس تھریڈ پر نہ کسی اور تھریڈ پر
آپ کی گالیوں پر بھی ابھی تک صبر سے ہی کام لیا ہے
اور میرا خیال ہے اسی وجہ سے آپ کو غلط فہمی ہوئی ہے کہ آپ بہت خطرناک جواب (گالی) دیتے ہیں جس کا کوئی جواب نہیں دے سکتا
 

mubarik Shah

Chief Minister (5k+ posts)
ہائے ہائے، پشت پر لات پڑے تو تحریک ڈائریا کے پوٹی رونے لگ جاتے ہیں۔
ویسے ان سے دن بھر گالم گلوچ کروالو۔

Yeh Bilawal Ki Aik Aur Behen Paida Ho Gaee, Chamak Chaloo... hahahahahahaha
 

cestmoi ✅️

Chief Minister (5k+ posts)
You are proving that you're a real troll of Imran Niazi. He also plays foul by getting the rivals out of the field, lol.

There is a big difference between criticizing and explicit abusing. You only do the latter. You are wasting resources of siasat.pk.
 

SaRashid

Minister (2k+ posts)
There is a big difference between criticizing and explicit abusing. You only do the latter. You are wasting resources of siasat.pk.
Is this verbal abuse?

No it's not. It's just my views based on facts.

جی ہاں یہ ہے عمران نیازی کی فطرت۔
یہ بندہ شارٹ کٹس اور 2 نمبر طریقوں سے چیزیں حاصل کرنے کا عادی ہے۔
کرکٹ میں بھی اسی طرح آیا، ماجد خان، جاوید برکی اور اپنے ایک انکل کی سفارش سے قومی کرکٹ ٹیم میں شامل ہوا۔ کئی سال تک خوار ہوتا رہا، تب جاکر وکٹیں ملنا شروع ہوئیں۔ میرٹ پر آتا تو پشت پر لات پڑتی اور 2، 4 میچز کے بعد ہی نکال دیا جاتا۔
کرکٹ کے بعد اس کو کسی دولت مند عورت کی تلاش تھی، جس کے باپ کے پیسے پر عیاشی کر سکے۔ سیتاوہائٹ کو پھنسایا مگر اس کے باپ نے دھمکی دی کہ اگر شادی کی تو ایک پھوٹی کوڑی بھی نہیں ملے گی۔ پھر جمائمہ کو پھنسایا، وہ بھی ایک امیر کبیر باپ کی بیٹی تھی۔
جمائمہ کی ماں کے ذریعے اور لوگوں سے پیسہ ہتھیاکر شوکت خانم ہسپتال بنایا۔ ہسپتال کی زمین بھی نواز شریف سے ہتھیائی۔ ہسپتال بن گیا تو اس کو اپنی سیاست کے لیے سیڑھی کے طور پر استعمال کیا۔
سیاست دان بن گیا اور جمائمہ سے مزید پیسے ملنے کی امید کم ہو گئی تو اس کو چھوڑ دیا۔
جب سیاست میں ناکام ہو گیا تو کامیابی کا راز جانا کہ وردی والوں کی گود میں بیٹھنا ہوگا۔ گود بھی ملی اور امپائر کی انگلی بھی ملی۔
جہانگیر ترین ملا، علیم خان ملا اور عمران خان ان دونوں کو اے ٹی ایم مشین بنا کر ان کے مال پر عیاشی کرنے لگا۔
چوں کہ مقابلہ کرنے کی تربیت اس کو اس کے بڑوں نے نہیں دی۔ شارٹ کٹس اور 2 نمبری کی تربیت ملی ہے۔ اس لیے اس کو یقین تھا کہ نواز شریف اور زرداردی کے ہوتے ہوئے، یہ وزیراعظم نہیں بن سکتا۔ چوں کہ زرداری پہلے ہی بدنام تھا، اس لیے اب اصل ہدف نواز تھا۔ نواز کو وردی والوں کی سازش استعمال کر کے، راستے سے ہٹانے کی ہر ممکن کوشش کی۔ نواز نہیں ہوگا تو میچ آسان ہو جائے گا۔ مقابلہ نہیں کرنا پڑے گا۔
پھر نواز کو نااہل کروانے اور اب سزائیں دلوانے کے بعد، زرداری کی باری آگئی۔ زرداری کے پیچھے ایف آئی اے کو لگا دیا۔
جب نواز بھی نہیں ہوگا، زرداری بھی نہیں ہوگا، تو کسی سے بھی مقابلہ نہیں کرنا پڑے گا اور وزارت عظمیٰ پلیٹ میں رکھ کر پیش کر دی جائے گی۔
اب آپ سمجھے اس ذہنی معذور عمران نیازی کی فطرت؟
 

چھومنتر

Minister (2k+ posts)
Is this verbal abuse?

No it's not. It's just my views based on facts.

جی ہاں یہ ہے عمران نیازی کی فطرت۔
یہ بندہ شارٹ کٹس اور 2 نمبر طریقوں سے چیزیں حاصل کرنے کا عادی ہے۔
کرکٹ میں بھی اسی طرح آیا، ماجد خان، جاوید برکی اور اپنے ایک انکل کی سفارش سے قومی کرکٹ ٹیم میں شامل ہوا۔ کئی سال تک خوار ہوتا رہا، تب جاکر وکٹیں ملنا شروع ہوئیں۔ میرٹ پر آتا تو پشت پر لات پڑتی اور 2، 4 میچز کے بعد ہی نکال دیا جاتا۔
کرکٹ کے بعد اس کو کسی دولت مند عورت کی تلاش تھی، جس کے باپ کے پیسے پر عیاشی کر سکے۔ سیتاوہائٹ کو پھنسایا مگر اس کے باپ نے دھمکی دی کہ اگر شادی کی تو ایک پھوٹی کوڑی بھی نہیں ملے گی۔ پھر جمائمہ کو پھنسایا، وہ بھی ایک امیر کبیر باپ کی بیٹی تھی۔
جمائمہ کی ماں کے ذریعے اور لوگوں سے پیسہ ہتھیاکر شوکت خانم ہسپتال بنایا۔ ہسپتال کی زمین بھی نواز شریف سے ہتھیائی۔ ہسپتال بن گیا تو اس کو اپنی سیاست کے لیے سیڑھی کے طور پر استعمال کیا۔
سیاست دان بن گیا اور جمائمہ سے مزید پیسے ملنے کی امید کم ہو گئی تو اس کو چھوڑ دیا۔
جب سیاست میں ناکام ہو گیا تو کامیابی کا راز جانا کہ وردی والوں کی گود میں بیٹھنا ہوگا۔ گود بھی ملی اور امپائر کی انگلی بھی ملی۔
جہانگیر ترین ملا، علیم خان ملا اور عمران خان ان دونوں کو اے ٹی ایم مشین بنا کر ان کے مال پر عیاشی کرنے لگا۔
چوں کہ مقابلہ کرنے کی تربیت اس کو اس کے بڑوں نے نہیں دی۔ شارٹ کٹس اور 2 نمبری کی تربیت ملی ہے۔ اس لیے اس کو یقین تھا کہ نواز شریف اور زرداردی کے ہوتے ہوئے، یہ وزیراعظم نہیں بن سکتا۔ چوں کہ زرداری پہلے ہی بدنام تھا، اس لیے اب اصل ہدف نواز تھا۔ نواز کو وردی والوں کی سازش استعمال کر کے، راستے سے ہٹانے کی ہر ممکن کوشش کی۔ نواز نہیں ہوگا تو میچ آسان ہو جائے گا۔ مقابلہ نہیں کرنا پڑے گا۔
پھر نواز کو نااہل کروانے اور اب سزائیں دلوانے کے بعد، زرداری کی باری آگئی۔ زرداری کے پیچھے ایف آئی اے کو لگا دیا۔
جب نواز بھی نہیں ہوگا، زرداری بھی نہیں ہوگا، تو کسی سے بھی مقابلہ نہیں کرنا پڑے گا اور وزارت عظمیٰ پلیٹ میں رکھ کر پیش کر دی جائے گی۔
اب آپ سمجھے اس ذہنی معذور عمران نیازی کی فطرت؟

تیری بدچودیاں

:sleep:
 

umerazam

MPA (400+ posts)
جی ہاں یہ ہے عمران نیازی کی فطرت۔
یہ بندہ شارٹ کٹس اور 2 نمبر طریقوں سے چیزیں حاصل کرنے کا عادی ہے۔
کرکٹ میں بھی اسی طرح آیا، ماجد خان، جاوید برکی اور اپنے ایک انکل کی سفارش سے قومی کرکٹ ٹیم میں شامل ہوا۔ کئی سال تک خوار ہوتا رہا، تب جاکر وکٹیں ملنا شروع ہوئیں۔ میرٹ پر آتا تو پشت پر لات پڑتی اور 2، 4 میچز کے بعد ہی نکال دیا جاتا۔
کرکٹ کے بعد اس کو کسی دولت مند عورت کی تلاش تھی، جس کے باپ کے پیسے پر عیاشی کر سکے۔ سیتاوہائٹ کو پھنسایا مگر اس کے باپ نے دھمکی دی کہ اگر شادی کی تو ایک پھوٹی کوڑی بھی نہیں ملے گی۔ پھر جمائمہ کو پھنسایا، وہ بھی ایک امیر کبیر باپ کی بیٹی تھی۔
جمائمہ کی ماں کے ذریعے اور لوگوں سے پیسہ ہتھیاکر شوکت خانم ہسپتال بنایا۔ ہسپتال کی زمین بھی نواز شریف سے ہتھیائی۔ ہسپتال بن گیا تو اس کو اپنی سیاست کے لیے سیڑھی کے طور پر استعمال کیا۔
سیاست دان بن گیا اور جمائمہ سے مزید پیسے ملنے کی امید کم ہو گئی تو اس کو چھوڑ دیا۔
جب سیاست میں ناکام ہو گیا تو کامیابی کا راز جانا کہ وردی والوں کی گود میں بیٹھنا ہوگا۔ گود بھی ملی اور امپائر کی انگلی بھی ملی۔
جہانگیر ترین ملا، علیم خان ملا اور عمران خان ان دونوں کو اے ٹی ایم مشین بنا کر ان کے مال پر عیاشی کرنے لگا۔
چوں کہ مقابلہ کرنے کی تربیت اس کو اس کے بڑوں نے نہیں دی۔ شارٹ کٹس اور 2 نمبری کی تربیت ملی ہے۔ اس لیے اس کو یقین تھا کہ نواز شریف اور زرداردی کے ہوتے ہوئے، یہ وزیراعظم نہیں بن سکتا۔ چوں کہ زرداری پہلے ہی بدنام تھا، اس لیے اب اصل ہدف نواز تھا۔ نواز کو وردی والوں کی سازش استعمال کر کے، راستے سے ہٹانے کی ہر ممکن کوشش کی۔ نواز نہیں ہوگا تو میچ آسان ہو جائے گا۔ مقابلہ نہیں کرنا پڑے گا۔
پھر نواز کو نااہل کروانے اور اب سزائیں دلوانے کے بعد، زرداری کی باری آگئی۔ زرداری کے پیچھے ایف آئی اے کو لگا دیا۔
جب نواز بھی نہیں ہوگا، زرداری بھی نہیں ہوگا، تو کسی سے بھی مقابلہ نہیں کرنا پڑے گا اور وزارت عظمیٰ پلیٹ میں رکھ کر پیش کر دی جائے گی۔
اب آپ سمجھے اس ذہنی معذور عمران نیازی کی فطرت؟

22 saal se jo mehnat kre , khuwar ho , woh shortcut chahta ha and leader woh ha jo seedha General ki cabinet me minister lag jae......enough said
 

SaRashid

Minister (2k+ posts)
نواز شریف کی عمر تقریباً 70 سال ہو چکی ہے۔ وہ ایون فیلڈ اپارٹمنٹس میں اپنی صاحبزادی اور صاحبزادے کے ساتھ مقیم ہیں۔ ایسے میں اگر عمران نیازی کے غنڈے ان پر مسلح حملے کریں گے، ان کے گھر کے باہر اپنی خاندانی زبان یعنی گالم گلوچ اور بدمعاشی کا بازار گرم کریں گے تو اس کا جواب عمران خان کو اسی زبان میں دیا جاسکتا ہے۔
جس طرح نواز شریف اور مریم نواز کی رہائش پر حملے کرنے والے نامعلوم افراد ہیں، ویسے ہی نامعلوم افراد عمران خان کی بہنوں کے گھروں پر حملہ آور ہو سکتے ہیں۔ عمران خان کے خاندان کی دیگر خواتین بھی ان حملوں سے متاثر ہو سکتی ہیں۔
مجھے امید ہے کہ جس طرح تحریک انصاف نے نواز شریف کے گھر پر ان حملوں سے لاتعلقی کا اظہار کیا ہے، مسلم لیگ نون بھی عمران خان کی بہنوں کے گھروں پر ممکنہ حملوں سے لاتعلقی کا ہی اظہار کرے گی۔
 
Last edited:

zain786

Chief Minister (5k+ posts)
Ye jo aaj bomb blast hua hai pakistan muslim league narinder ka kam hai is nasuro ko mulq mai phanseyan dene chahye