بلوچستان میں لاپتہ افراد کا مسئلہ ضرور حل ہونا چاہیے، خواجہ آصف

15kkkassffgjkl.png

مسلم لیگ ن کے مرکزی رہنما اور رکن قومی اسمبلی خواجہ آصف نے کہا ہے کہ بلوچستان میں لاپتہ افراد کا مسئلہ ضرور حل ہونا چاہیے۔

تفصیلات کے مطابق ن لیگی رہنما نے اسلام آباد میں بلوچستان کے حوالے سے میڈیا سے اہم گفتگو کی اور کہا کہ 30 چالیس سالوں سے اقتدار میں بیٹھے بلوچوں کو اب صوبے کی عوام کا بھی سوچنا چاہیے، بلوچستان کے رواج اب تبدیل ہونے چاہیے۔

انہوں نے کہا کہ بلوچستان میں یہ رسم آج بھی موجود ہے کہ بڑے اور بااثر لوگوں نے اپنی ذاتی جیلیں بنا رکھی ہیں جن میں لوگ قید ہیں، بلوچستان میں لاپتہ افراد والا سنگین مسئلہ ہے جسے ضرور حل کیا جانا چاہیے۔

خواجہ آصف نے 9 مئی واقعات کے حوالے سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ علی امین گنڈا پور یا کسی اور وزیراعلیٰ کے کہنے پر 9 مئی واقعات میں ملوث افراد کے مقدمات ختم نہیں ہوسکتے۔

انہوں نے مزید کہا کہ مجھے کابینہ کا رکن ہونے سے زیادہ پارٹی قیادت کی جانب سے پارلیمانی لیڈر مقرر کیے جانے کی خوشی ہے۔
 

exitonce

Chief Minister (5k+ posts)
Chor tou chor, ya mandate chor bhee bol raha hay, form 47 key paiddawar shut the fuckup.
 

ranaji

President (40k+ posts)
ابے حرام زادے گشتی کے بچے جب تو وزیر دفاع تھا اس وقت اپنی ماں چ ۔۔ کر کیوں نہیں حل کیا گشتئ دیا پترا ووٹ چور فراڈئے اپنی ماں کے پپھپے کی تلاشی لو یا چاچے کی تلاشی لو مل جائیں گے