انٹرنیٹ کی تیز رفتار کیلئے پاکستانی سیٹلائٹ لانچنگ کیلئے تیار

11mm1ssrilaecom.png

پاکستان بھر میں انٹرنیٹ کی تیز ترین فراہمی کیلئے ملک کا پہلا سیٹلائٹ لانچنگ کیلئے تیار ہے۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان اسپیس اینڈ اپر ایٹماسفیئر ریسرچ کمیشن(سپارکو) کی جانب سے جاری کردہ ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ پاکستان کی جانب سے جمعرات کو پاکستان کا جدید کمیونیکیشن سیٹلائٹ ایم ایم ون خلاء میں بھیجا جائے گا۔


بیان میں کہا گیا ہے کہ یہ سیٹلائٹ ملک بھر میں سیلولر فون سروسز، براڈ بینڈ سروسز اور ٹی وی نشریات کو بہتر بنانے میں مدد دے گا، ملک کے دور دراز علاقوں میں وسیع تر انٹرنیٹ کی فراہمی کا خواب چند روز میں مکمل ہوگا، یہ سٹیلائٹ اگست سے اپنی سروسز کا آغاز کردے گا۔


سپارکور کا کہنا ہے کہ ہمارا وژن ایک ترقی یافتہ ڈیجیٹل پاکستان قائم کرنا ہے، مئی کے مہینے میں خلاء میں بھیجا جانے والا یہ پاکستان کا دوسرا مشن ہے، ایم ایم ون سیٹلائٹ پاکستانی سائنسدانوں اور انجینئرز نے دن رات کی ان تھک محنت کے بعد تیار کیا ہے۔
 

abdlsy

Prime Minister (20k+ posts)
11mm1ssrilaecom.png

پاکستان بھر میں انٹرنیٹ کی تیز ترین فراہمی کیلئے ملک کا پہلا سیٹلائٹ لانچنگ کیلئے تیار ہے۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان اسپیس اینڈ اپر ایٹماسفیئر ریسرچ کمیشن(سپارکو) کی جانب سے جاری کردہ ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ پاکستان کی جانب سے جمعرات کو پاکستان کا جدید کمیونیکیشن سیٹلائٹ ایم ایم ون خلاء میں بھیجا جائے گا۔


بیان میں کہا گیا ہے کہ یہ سیٹلائٹ ملک بھر میں سیلولر فون سروسز، براڈ بینڈ سروسز اور ٹی وی نشریات کو بہتر بنانے میں مدد دے گا، ملک کے دور دراز علاقوں میں وسیع تر انٹرنیٹ کی فراہمی کا خواب چند روز میں مکمل ہوگا، یہ سٹیلائٹ اگست سے اپنی سروسز کا آغاز کردے گا۔


سپارکور کا کہنا ہے کہ ہمارا وژن ایک ترقی یافتہ ڈیجیٹل پاکستان قائم کرنا ہے، مئی کے مہینے میں خلاء میں بھیجا جانے والا یہ پاکستان کا دوسرا مشن ہے، ایم ایم ون سیٹلائٹ پاکستانی سائنسدانوں اور انجینئرز نے دن رات کی ان تھک محنت کے بعد تیار کیا ہے۔
Military koe foreign buisness dealings kae leeae chaheeae. Qaum kae leeae kuch nahee. Simple
 

xshadow

Minister (2k+ posts)
چین جیسے اپنے سیٹلائیٹس کے زریعے ساری انٹرنیٹ ٹریفک کنٹرول کرتا ہے اسی ماڈل پر پاکستانیوں کی ساری انٹرنیٹ سرگرمیوں پر نظر رکھنے کے لیے یہ پھرتیاں دکھائی جارہی ہیں۔
اتنا ہی ترقی کی غرض ہوتی تو چین کی زیرو کرپشن پالیسی پر جاتے۔
اتنے افلاطون ہیں کہ کرپشن ختم کرکے ملک ترقی کرے تو انکو اس میں اپنا نقصان نظر آتا ہے حالانکہ اگر بڑا بجٹ بنے گا تو ظاہر ہے اتنا ہی بجٹ ہر ادارے کو ملے گا مگر نہیں جناب' جب حرام کا مال منہ کو لگ جائے تو کونسی ترقی اور کاہے کی ایمانداری۔ دنوں میں امیر ہونا ہے ہر سجیلے جوان کو۔
 
Last edited: