اندھیروں کے خلاف جنگ میں فتح ہمیشہ اجالوں کی ہوتی ہے

News_Icon

Chief Minister (5k+ posts)
https://twitter.com/x/status/1799473153673978266
آج گراسی گراؤنڈ مینگورہ سے عمران خان، بشری بی بی سمیت قیادت اور کارکنان کی رہائی، عوامی مینڈیٹ کی واپسی اور آئین و قانون کی بالادستی کے لیے تحریک کا آغاز ہورہا ہے۔ ۲۰۱۴ دھرنے اور لانگ مارچ سے پہلے تحریک کا آغاز اسی مقام سے ہوا تھا۔ پانامہ کے بعد لاک ڈاؤن سے پہلے تحریک کا آغاز بھی اسی جگہ سے ہوا تھا اور جب عمران خان کی حکومت ہٹانے کی سازش تیار ہوئی تو جلسوں کا آغاز بھی اسی مقام سے ہوا تھا۔ نو مئی کے بعد جب ہر طرف خوف کا عالم تھا تب بھی میرے شہر سوات سے ریلیوں اور کنوینشنز کا آغاز ہوا جو آگے جا کر ایک بڑی انتخابی مہم میں بدلا۔ انشاء اللہ ماضی کیطرح یہ تحریک بھی انہی پہاڑوں کے دامن سے اٹھے گی۔ ان پہاڑوں نے ہمیشہ پاکستان کی سرزمین کو آبیار کیا ہے۔ اس کے گلی کوچوں کو منور کیا ہے۔ تپتی رُتوں میں اس کے باسیوں کو اپنے سائے میں لیا ہے۔ ہمیشہ پاکستان کی فلاح و بہبود کو مقدم رکھا ہے۔ اس کے امن کے لیے قربانیاں دی ہیں۔ مالاکنڈ ڈیوژن کو ہمیشہ اس بات پر فخر رہیگا کہ ہم پاکستان کے بیٹے عمران خان کاہر اول دستہ، اس کا بازو بنے۔ آج اس ملک پر جن اندھیروں کی حکمرانی ہے یہ جو ہم اپنے ملک میں بے امان ہیں۔ جو اپنے ہی محافظ ہماری شہ رگ پر پنجے گاڑھ کر ہمارا دم گھونٹنے پر مصر ہیں۔ یہ جو زبانوں پر قدغنیں ہیں۔ ہر زی شعور زیر عتاب ہے۔ ہر سوالی کے سر کو سُولی کا دھڑکا ہے۔ جو بدقماش ہمارے حکمران ہیں۔ آج کی شام ان پہاڑوں کی پشت پر غروب ہونے والا سورج اس طویل تاریک شب کے اختتامی گھڑیوں کی نوید ہے۔ ہم جانتے ہیں کہ یہ گھڑیاں بھی کچھ کم کھٹن نہ ہونگی مگر ہمارا ایمان ہے کہ اندھیروں کے خلاف جنگ میں فتح ہمیشہ اجالوں کی ہوتی ہے اور اپنا سینہ چیر کر، اپنے خون دل سے اس وطن کو روشن کرنے کا ہنر میری سرزمین کا طرۂ امتیاز ہے۔