کراچی میں دن دیہاڑے شوہر نے بیوی کو قتل کردیا، ملزم بچوں کولے کر فرار

14karachimurderfaryal.jpg

کراچی میں ایک شوہر نے گھریلو ناچاقی سے تنگ آکر بہیمانہ تشدد کرکے اپنی32 سالہ بیوی کو موت کے گھاٹ اتاردیا، واردات کے بعد ملزم اپنے 3 بچوں کو لے کر فرار ہوگیا، پولیس تاحال ملزم کو گرفتار کرنے میں ناکام۔

تفصیلات کے مطابق کراچی کے علاقے اسکیم 33 میں اللہ بخش گوٹھ میں پیش آنے والی اس دلخراش واردات میں وسیم نامی شخص نے اپنی 32 سالہ اہلیہ فریال کو دن کی روشنی میں مبینہ طور پر اپنے گھر والوں کی موجودگی میں چاقو کے وار کرکے قتل کردیا، واردات کے بعد وسیم اپنے تین بچوں جن کی عمریں 10، 7 اور 2 سال ہیں کولے کر فرار ہوگیا ہے۔

سائٹ سپر ہائی وے تھانہ میں فریال کے والد کی جانب سے دائر کردہ ایف آئی آر کے مطابق11 مئی کو مجھے میرپور خاص میں اطلاع ملی کے میری بیٹی کو قتل کردیا گیا ہے، میں پہنچا تو فریال کی لاش عباسی شہید ہسپتال میں موجود تھی، اس کے جسم پر چھریوں کے نشان تھے ، جس وقت میری بیٹی کو قتل کیا جارہا تھا اس وقت وسیم کے بھائی زبیر ، وقار اور دیگر افراد بھی گھر کے اندر موجود تھے اور ملزم کو ان کی مکمل تائید حاصل تھی۔


فریال کی ہمشیرہ نے واقعہ سے متعلق تفصیلات بتاتے ہوئے کہا کہ پوسٹ مارٹم رپورٹ میں فریال کے جسم پر 9 زخموں کے نشانات کی تصدیق ہوئی ہے تاہم اس کی موت شاہ رگ کٹنے کی وجہ سے واقع ہوئی، جس کمرے میں یہ واردات ہوئی اس کی ویڈیوز بھی سامنے آئی ہے جس کے مناظر ہولناک ہیں، فریال زخمی حالت میں اپنی جان بچانے کیلئے پورے کمرے میں بھاگتی دکھائی دے رہی ہے ۔


فریا ل کی بہن نے عوام ، انسانی حقوق کی تنظیموں خصوصا خواتین کے حقوق کیلئے کام کرنے والی تنظیموں سے اپیل کی ہے کہ وہ فریال کو انصاف دلوانے کیلئے اپنا کردار ادا کریں، معاملے کو تین روز سے زیادہ وقت گزرنے کے باوجود نہ ہی ملزم کو گرفتار کیا گیا ہے اورنہ ہی فریال کے بچوں کو بازیاب کروایا جاسکا ہے۔

فریا ل کے مطابق پولیس نے اب تک وسیم کے بھائی کو گرفتار کرلیا ہے جس سے دیگر ملزمان کی کوئی معلومات نہیں ملی، وسیم کے گھر والے دن دیہاڑے گاڑی میں بیٹھ کر اپنے گھر کو تالا لگا کر کسی نامعلوم مقام پر چھپ گئے ہیں پولیس انہیں بھی تلاش نہیں کرسکی ہے۔
 
Advertisement
Sponsored Link