پی ٹی آئی کا کارنامہ ۔ 2 ارب 44 کروڑ روپے میں کھنڈرات تیار

Saboo

Prime Minister (20k+ posts)
بس گالیاں بکنے کے علاوہ کوئی کام نہیں ہے ، عمران کی خان کی ٹٹی تو زبان سے صاف کرتے ہی تھے اب یہ عمران اسماعیل کی ٹٹی بھی صاف کریں گے؟؟
ارے نہیں ناں حفیظ بھائی ...جو مزہ پٹواریوں کو نواز شریف کے "فضلہ خارجیہ " میں
ملتا تھا وہ نہ عمران خان سے اور نہ ہی عمران اسمعیل سے..بیچاروں کی شومی قسمت دیکھو
کہ بوقت ضرورت گیدڑ پہاڑوں پر رفع حاجت کو جاتے تو نواز شریف لندن کو...اب بیچارے اتنا
کرایہ کہاں سے لایں ؟.....🤣
 

Saboo

Prime Minister (20k+ posts)
واہ رے حاجی صاحب پیسے لے کر لکھنے کو گالی کا نام دیتے ھو ۔لیکن گمراہ پٹواری جی منہ اور گانڈ سے جو بکواسیات اورجھوٹ۔ کی آگ نکالتے ہو اسکو ثواب سمجھتے ھو۔
اللہ معاف کرے انسان سے پٹواری بننے تک کا سفر ایویں ھی طے نہئں ھوتا ۔ سب سے پہلے تو دماغ نکال کر گٹر میں آنا پڑتا ہے۔ پھر جہالت۔زلت۔غلامی۔کے ساتھ ساتھ بھڑوت کے بے شمار ڈپلومے کرنے کے بعد ایک چھوٹا موٹا پٹواری جنم لیتا ہے۔
ہاہاہا....اور اتنے کٹھن سفر کے بعد بھی جب پٹواری بنتے ہیں تو انکی حالت یہ ہوتی ہے کہ
انکے بچے ہر روز آم کے لیے روتے ہیں. بیچاری پٹوارن کہ اٹھتی ہے .." وے توں کاہدا پٹواری
جے منڈا میرا رووے امب نوں؟....دھر فٹے منہ تیرا ......"....😁😁😁
 

Shahid Abassi

Minister (2k+ posts)
It is a KIDCL project which comes under Sindh government. Funds are provided by the federal government but construction work is done by the Sindh government.
 

sensible

Chief Minister (5k+ posts)

یہ وفاق کا منصوبہ تھا ، اس کا سندھ حکومت سے کوئی تعلق نہیں ، وفاق کے منصوبوں میں صوبوں نے صرف زمین مہیا کرنی ہوتی ہے ، اس منصوبے زمین تو پہلے سے موجود تھی بس سڑک کی کارپٹنگ کرنی تھی ، ڈھائی ارب روپے میں آٹھ کلومیٹر کی کارپٹنگ تک نہیں ہوسکی
تمھیں کس نے بتایا ڈھائی ارب روپے لگ گئے اور سڑک پر کام رک گیا ہے اور کھنڈر تیار ہو گیا ہے سڑک تیار نہیں ہو گی ؟.یہ تو ادھر کوئی غریب نہیں کہ رہا تھا کے سڑک اب بنے گی نہیں
 

mhafeez

Chief Minister (5k+ posts)
Road Mongophir Karachi mein aur ilzam PTI ki govt mein, asay waqt pe 18th amendment kaha ghus jati hai? Dhurr fiteh mou thum patwariyon per aur Gober News Network per.
It is a KIDCL project which comes under Sindh government. Funds are provided by the federal government but construction work is done by the Sindh government.
بھائی جان ، کے آئی ڈی سی ایل کا منصوبہ ہے جو وفاق کی ایجنسی/کمپنی ہے ، اسی کے زیر انتظام ہے ، نہ صرف فنڈنگ، پری کوالیفکیشن ، ڈیزائن ، ٹینڈر ، کوالٹی چیکنگ سب کچھ وفاق کے زیر انتظام اس ایجنسی نے کیا ہے ، یہ ٹینڈر ہے اس میں صاف لکھا ہے کہ یہ ایجنسی حکومت پاکستان کے زیر انتظام ہے

 

3rd_Umpire

Minister (2k+ posts)

بلو کی طرف سے قبول فرمائیں


🌶
نال او کہندی اے کہ پٹواریاں نوں سنیہا دینا کہ
اے نہ پانی نال، تے نہ دودھ نال، بس حوصلے نال لینی اے
تے اودے بعد آئیندہ سندھ ولے نہ ویکھنا، نہ سندھ دی گل کرنا


P/S: Laeini tow muraad khaani aye...... Aaho!
اب ایسی خبروں پر اوقات آ گئی مریم نواز میڈیا سیل کی ؟
یاد ہو گا چالیس سال حکومت میں رہنے کے بعد جب مریم بی بی اماں مرحومہ کا الیکشن لڑنے لاہور کی گلیوں میں نکلی تھیں تو کیسے گندے پانی سے استقبال ہوا تھا اور کیچڑ نے راستہ نہیں دیا تھا
صبر ختم ہو گیا دو ہی سال میں ؟ بن جائے گی سڑک بھی اگر کام جاری ہے تو
پٹواری نام ہی کافی۔ اور وہ بھی بےروز گار پٹواری۔ اللہ معاف کرے باوجی کی گیراج والی بچی نے سرکاری خزانے سے پکی ماہانہ تنخواہ لگائی ھوئی تھی۔ہن او موجاں کتھے
ارے؟ یہ تو پی ٹی آئ کا بڑا کارنامہ ہے کہ کھنڈرات پہلے ہی بنا دئیے
اور بلڈنگ بنائی ہی نہیں؟.. ہاہاہا..اب تو لوگ یہ بھی نہیں که سکتے
..." کھنڈرات دیکھ کر لگتا ہے عمارت عظیم تھی...".... 😁
پٹواری صاحب، بے فجول میں اپنا منہ چھترول سے رتّہ لال کر کے تجھے مجا آتا ہے کیا؟؟؟
 

Dr Adam

Chief Minister (5k+ posts)
پٹواری صاحب، بے فجول میں اپنا منہ چھترول سے رتّہ لال کر کے تجھے مجا آتا ہے کیا؟؟؟


یہ مجا تو گزرنے والے کل کے کوٹے کا ہے
آج کے کوٹے کے لیے تو ابھی بیچارہ اخبار پھرول رہا ہو گا اور چھترول کروانے والی دو چار ایسی ہی خبریں پکڑ کر حاضر ہو جائے گا
آگے پیچھے تھریڈ بنائے گا اور اپنی دیہاڑی کھری کر کے سیٹیاں بجاتا اپنی سائیکل پر خوشی خوشی داتا دربار سے چاول پکڑ کر گھر روانہ ہو جائے گا
یہ ہے کل زندگی ایک نونی پٹواری کی
 
Sponsored Link

Featured Discussion Latest Blogs اردوخبریں