قدم بڑھاؤ بلاول قوم تمھارے ساتھ ہے

Shah Shatranj

Chief Minister (5k+ posts)

ہم نہیں مانتے
جرنیلوں کے ضابطے


لیکن یہ کیا؟


اس بات میں کوئی شک نہیں نہیں کہ قائد قوم نے جب نیب کی طرف قدم بڑھایا تو ہزاروں لوگوں کا سمندر قائد کی ایک جھلک دیکھنے کے لیے امڈ آیا

اب اس قوم کی نگاہیں بلاول پر لگ چکیں ہیں کیوں کے بلاول کی شکل میں وہ مسیحا اس قوم کو ملا ہے جو اس کی آزادی کا پیش خیمہ ثابت ہو گا

کس قوم کی؟ اس سندھ کی پسماندہ قوم کی؟


اب بلاول کی صورت میں ایک عظیم لیڈر اس قوم کی آزادی کی جنگ لڑنے میدان میں اتر چکا ہے

بلکل، یہ ہے ایک عظیم لیڈر کی جھلک


ہم اس احتساب کی دہشت گردی کے آگے نہیں جھکیں گے بلکہ سیاسی احتساب کرنے والوں کو نشان عبرت بنا دیں گے

یاد ماضی عذاب ہے یا رب


نیازی راج نے اس ملک کو تباہی کے آخری کونے تک پہنچا دیا ہے . ملک میں لوگوں کے کاروبار تباہ ہو رہے ہیں

تمھاری ایسی لچھے دار جھوٹی بکواس اب عوام کو مزید نہیں لبھا سکتی . ہم ہے تو پیپلز پارٹی کے دور کے قرضوں اور بجلی گیس کی قیمتوں سے مقابلہ کرو . اور جو عوام کو تم لوگوں نے ذلت کی سولی پر لٹکایا ہے اس کا حساب دو
 

Scholar1

Minister (2k+ posts)
ہم نہیں مانتے
جرنیلوں کے ضابطے
جینا ہو گا مرنا ہو گا
اسٹبلشمنٹ کا احتساب کرنا ہو گا
اس بات میں کوئی شک نہیں نہیں کہ قائد قوم نے جب نیب کی طرف قدم بڑھایا تو ہزاروں لوگوں کا سمندر قائد کی ایک جھلک دیکھنے کے لیے امڈ آیا . جس کو دیکھ کر بنی گالا کے نیازی راج کی دیواریں لرز گئیں اور نہتے لوگوں پر لاٹھی چارج کر کے انہیں تشدد کا نشانہ بنایا گیا . اب اس قوم کی نگاہیں بلاول پر لگ چکیں ہیں کیوں کے بلاول کی شکل میں وہ مسیحا اس قوم کو ملا ہے جو اس کی آزادی کا پیش خیمہ ثابت ہو گا . یہ قوم آج بھی انگریزوں کی ناجائز اولاد کی غلام ہے جی ہاں وہ سیکورٹی کا ادارہ جو اس ملک کو اپنے باپ کا راج سمجھتا ہے اور اس پر حکومت کرنا پیدائشی حق سمجھتا ہے اور ووٹ کی طاقت کو بوٹ کی طاقت سے پامال کر کے اس قوم پر اپنے نام نہاد کتے مسلط کرواتا ہے . یہ کرپٹ ادارہ اور اس ادارے کے کرپٹ افسران نے پوری قوم کو کرپٹ بنایا ہوا ہے . اب بلاول کی صورت میں ایک عظیم لیڈر اس قوم کی آزادی کی جنگ لڑنے میدان میں اتر چکا ہے . اب یہ قوم طاغوتی استعمار کی زیادہ دیر غلام نہیں رہے گی . جو طوفان جھوم کے اٹھے ہیں تنکوں سے نہ ٹلے جائیں گے . یہ قوم اب اپنے ووٹ کی عزت کی بھیک نہیں مانگے گی بلکہ جنگ آزادی لڑے گی . آج بھی اس قوم پر مسلط کردہ کٹھ پتلی نیازی راج اس قوم کو ذلیل کرنے میں مصروف ہے جہاں بھارت کے ڈر سے اس کے پائلٹ کو چھوڑ دیا وہیں بھارت کی دھمکیوں میں آ کر مذہبی تنظیموں پر پابندی کا پروانہ جاری کر دیا . یہ بھارتی حملے کا خوف تھا جس کی بدولت نیازی راج نے مذہبی تنظیموں پر پابندی لگائی جو صرف و صرف ایک دکھاوا ہے . یہ قوم کے ساتھ ایک بھوندہ مذاق ہے . پوری قوم جانتی ہے کہ احتساب کا ادارہ ایک بد معاش انٹیلی جنس ایجنسی کا ملی ٹینٹ ونگ ہے . ہم اس احتساب کی دہشت گردی کے آگے نہیں جھکیں گے بلکہ سیاسی احتساب کرنے والوں کو نشان عبرت بنا دیں گے . اب یہ کھلی جنگ ہے استعماری نظام کے خلاف اور عوام کی آزادی کی . یہ عوام کی حقیقی جنگ آزادی ہے جس میں اسے اس کا حق خود ارادیت طالع آزماؤں سے چھیننا پڑے گا . اگر عوام آج بھی نہیں جاگی تو ہمیشہ استعمار کی غلام رہے گی . نیازی راج نے اس ملک کو تباہی کے آخری کونے تک پہنچا دیا ہے . ملک میں لوگوں کے کاروبار تباہ ہو رہے ہیں بجلی گیس مہنگی کر کے عوام کی جینا اجیرن کر دیا گیا ہے استعماری نظام کا ایجنٹ کپتان نیازی اس قوم کو قرضے کی زنجیروں میں جکڑ چکا ہے اگر اس کی حکومت زیادہ دیر قائم رہی تو یہ قوم قرضوں کے بوجھ تلے دب کر ختم ہو جاۓ گی اس لیے اب اس کا خاتم ناگزیر ہو چکا . ادھر نواز شریف زندگی موت کی کشمکش میں جیل میں استعماری نظام کا ظلم سہ رہا ہے ادھر اس کے ہمنوا ڈیل کی تلاش میں ہیں . اگر نواز شریف سیاسی جدو جہد کے بغیر جیل سے نکلا تو نون لیگ کی سیاست دفن ہو جاۓ گی . اس رہائی کے لیے ڈیل کی بھیک نہیں مانگنی پڑے گی بلکہ عوام کی آزادی کی جنگ لڑنی پڑے گی اور اس ظالمانہ نظام جس میں اس ملک کے ہر شخص کا استحصال ہوتا کو شکست دینا ہو گی . پیپلز پارٹی کوئی ڈیل نہیں کرے گی اور عوام کی آزادی کی جنگ ہر چوک چوراہے پر لڑی جاۓ گی
Lagtaa hai shah shatranj kee tankuah bhi issey harram kay maal say aati hai? 😂😂🤣🤣
 

Husaink

Chief Minister (5k+ posts)
واقعی اب عوام کو مزید احتساب کے نام پر انتقام لے کر ایمپائر اور اس کی انگلی چوسنے والے پھدو نہیں بنا سکتے اور اس کے ووٹ کے حق کو پامال نہیں کر سکتے .اب عوام کرپشن کرپشن کی بھونک سے تنگ آ چکی ہے اب اسے اس کا حق چاہئیے
زیادہ بھوں بھوں کرنے کی بجائے نیب کے سوالوں کا جواب دو اس دفعہ این آر او والا چکر نہیں چلنے والا عوام کے لوٹے ہوے پیسے واپس کرو ، ورانہ جوتے اور پیاز دونوں تیار ہیں
 

DoomsdayReportPakistan

Politcal Worker (100+ posts)
Aaj is mulk mein fauj aur establishment na hoti tu school mein bachay pakistani taranay parhnay ki bajaye bahgwan ki morti kai talway chatnay per majboor hotay
 

Eyeaan

Minister (2k+ posts)
ہم زندانوں اور جیلوں سے ڈرنے والے نہیں اور نہ ہی موت سے ڈرتے ہیں . بلاول نے تو ابھی کاروباری زندگی میں قدم تک نہیں رکھا لیکن طاغوتی نظام کی بدمعاشی نے اسے بھی شکار بنانے کی کوشش کی ہے ہم اس کی بھر پور مذمت کرتے ہیں اور ان استعماری طاقتوں کے خلاف اب اعلان جنگ ہو گا جو عوام پر اپنی مرضی مسلط کرتے ہیں
شاہ صاحب آپ کی بہادری اور ٹارزن ہونے پر تو کبھی شک نہ تھا-
اگر ہوتا بھی تو تاجی کھوکھر کے بھتیجے نےغریب پولیس والے کا سر پھاڑ کر دور کر دیا-ــ
مگر یہ ایک فائینیشیل کرائم کا قصہ ہے -مبینہ طور سندھ اور پاکستان کے غریب عوام سے دھوکہ ہوا ہے - اب باپ بیٹے کو معاملات سلجھا نے دیں ،انکے وکیل ہیں جو قانونی سوالوں ،کے جواب دے دیں گے، میڈیا کا تو کاروبار ہی تماشا اور میلہ لگانا ہے، ان سے کسی عقل کی کیا توقع، آپ ہی کچھ لاجک سے کام لیں ــــ
- یہ طاغوت، جنگ اور استعمار جیسے الفاظ گھسیڑ کر کیوں ہمیں مشکل میں ڈال رہے ہیں ـــ-- ماضی میں انہی بے جا الفاظ اور ان کے بر عکس عمل نے پیپلز پارٹی کا ستیاناس کر دیاہے ، استعمار کی بات کرتے ہوئے آپ ان باپ، بیٹا اور ماں کا عمل اور رویہ بھی تو دیکھ لیں ــ
بہر حال یہ ایک عدالتی معاملہ ہے ، اسمیں پیپلز پارٹی کا روایتی تکبر دھمکی اور ڈراوا کس کام آئےگا، بس یہی بات کا جس کی ذرہ برابر سمجھ نہیں آ رہی ـ
ــ​
 

sensible

Chief Minister (5k+ posts)
شاہ صاحب اتنا جذباتی ہونے کی کیا ضرورت پڑ گئی --
ان باپ بیٹا کو فیک اکاؤئنٹ میں رشوت کی رقم کا حساب دینا ہے، انہیں سوال جواب کرنے دو ، اگر مجرم ہیں تو سزا ورنہ با عزت آزادی ــ
آپ اس بات کو سیاسی رنگ دے کرکیوں اپنا وقت اور انرجی برباد کر رہے ہیں - خود بھی گمراہ ہو رہے ہیں اور شاید دوسروں کو بھی گمراہ کر رہے ہیں ـــ
بلاول نے تو ایسا بیان دیا ہی اسی لیے تھا کہ رشوت ستانی سے توجہ ہٹے اور آپ جیسے جذباتی لوگوں کو گمراہ کر سکے ــــ
واقعی اب عوام کو مزید احتساب کے نام پر انتقام لے کر ایمپائر اور اس کی انگلی چوسنے والے پھدو نہیں بنا سکتے اور اس کے ووٹ کے حق کو پامال نہیں کر سکتے .اب عوام کرپشن کرپشن کی بھونک سے تنگ آ چکی ہے اب اسے اس کا حق چاہئیے
سندھ کی عوام حق مانگتی ہے ان کا لوٹا ہوا پیسا واپس کر کے او ورنہ قوم بلاول کا استقبال کرنے کو جوتے لئے تیار کھڑی ہے اسے ویسے بھی پاکستان نے منہ نہیں لگایا اب نیب میں منہ کھولنے کی بجائے باہر بھونکے گا تو انجام اس کا مریم نواز کے بھونکنے سے مختلف نہیں ہو گا
شاہ گند کو اتنی عقل بھی نہیں نورے کا نام ان کے منہ سے جیسے نکل رہا ہے وہ دونوں کی موت پر دستخط ہے پپلی نورا پارٹی
 

RealPeople

Minister (2k+ posts)
ہم نہیں مانتے
جرنیلوں کے ضابطے
جینا ہو گا مرنا ہو گا
اسٹبلشمنٹ کا احتساب کرنا ہو گا


اس بات میں کوئی شک نہیں نہیں کہ قائد قوم نے جب نیب کی طرف قدم بڑھایا تو ہزاروں لوگوں کا سمندر قائد کی ایک جھلک دیکھنے کے لیے امڈ آیا . جس کو دیکھ کر بنی گالا کے نیازی راج کی دیواریں لرز گئیں اور نہتے لوگوں پر لاٹھی چارج کر کے انہیں تشدد کا نشانہ بنایا گیا . اب اس قوم کی نگاہیں بلاول پر لگ چکیں ہیں کیوں کے بلاول کی شکل میں وہ مسیحا اس قوم کو ملا ہے جو اس کی آزادی کا پیش خیمہ ثابت ہو گا . یہ قوم آج بھی انگریزوں کی ناجائز اولاد کی غلام ہے جی ہاں وہ سیکورٹی کا ادارہ جو اس ملک کو اپنے باپ کا راج سمجھتا ہے اور اس پر حکومت کرنا پیدائشی حق سمجھتا ہے اور ووٹ کی طاقت کو بوٹ کی طاقت سے پامال کر کے اس قوم پر اپنے نام نہاد کتے مسلط کرواتا ہے .

یہ کرپٹ ادارہ اور اس ادارے کے کرپٹ افسران نے پوری قوم کو کرپٹ بنایا ہوا ہے . اب بلاول کی صورت میں ایک عظیم لیڈر اس قوم کی آزادی کی جنگ لڑنے میدان میں اتر چکا ہے . اب یہ قوم طاغوتی استعمار کی زیادہ دیر غلام نہیں رہے گی . جو طوفان جھوم کے اٹھے ہیں تنکوں سے نہ ٹلے جائیں گے . یہ قوم اب اپنے ووٹ کی عزت کی بھیک نہیں مانگے گی بلکہ جنگ آزادی لڑے گی . آج بھی اس قوم پر مسلط کردہ کٹھ پتلی نیازی راج اس قوم کو ذلیل کرنے میں مصروف ہے جہاں بھارت کے ڈر سے اس کے پائلٹ کو چھوڑ دیا وہیں بھارت کی دھمکیوں میں آ کر مذہبی تنظیموں پر پابندی کا پروانہ جاری کر دیا . یہ بھارتی حملے کا خوف تھا جس کی بدولت نیازی راج نے مذہبی تنظیموں پر پابندی لگائی جو صرف و صرف ایک دکھاوا ہے . یہ قوم کے ساتھ ایک بھوندہ مذاق ہے . پوری قوم جانتی ہے کہ احتساب کا ادارہ ایک بد معاش انٹیلی جنس ایجنسی کا ملی ٹینٹ ونگ ہے .

ہم اس احتساب کی دہشت گردی کے آگے نہیں جھکیں گے بلکہ سیاسی احتساب کرنے والوں کو نشان عبرت بنا دیں گے . اب یہ کھلی جنگ ہے استعماری نظام کے خلاف اور عوام کی آزادی کی . یہ عوام کی حقیقی جنگ آزادی ہے جس میں اسے اس کا حق خود ارادیت طالع آزماؤں سے چھیننا پڑے گا . اگر عوام آج بھی نہیں جاگی تو ہمیشہ استعمار کی غلام رہے گی . نیازی راج نے اس ملک کو تباہی کے آخری کونے تک پہنچا دیا ہے . ملک میں لوگوں کے کاروبار تباہ ہو رہے ہیں بجلی گیس مہنگی کر کے عوام کی جینا اجیرن کر دیا گیا ہے استعماری نظام کا ایجنٹ کپتان نیازی اس قوم کو قرضے کی زنجیروں میں جکڑ چکا ہے اگر اس کی حکومت زیادہ دیر قائم رہی تو یہ قوم قرضوں کے بوجھ تلے دب کر ختم ہو جاۓ گی اس لیے اب اس کا خاتم ناگزیر ہو چکا .

ادھر نواز شریف زندگی موت کی کشمکش میں جیل میں استعماری نظام کا ظلم سہ رہا ہے ادھر اس کے ہمنوا ڈیل کی تلاش میں ہیں . اگر نواز شریف سیاسی جدو جہد کے بغیر جیل سے نکلا تو نون لیگ کی سیاست دفن ہو جاۓ گی . اس رہائی کے لیے ڈیل کی بھیک نہیں مانگنی پڑے گی بلکہ عوام کی آزادی کی جنگ لڑنی پڑے گی اور اس ظالمانہ نظام جس میں اس ملک کے ہر شخص کا استحصال ہوتا کو شکست دینا ہو گی . پیپلز پارٹی کوئی ڈیل نہیں کرے گی اور عوام کی آزادی کی جنگ ہر چوک چوراہے پر لڑی جاۓ گی
[/QUOTE

Yeh toh batao Bilo kaam kya Karti hai?
 

1234567

Senator (1k+ posts)
ہم نہیں مانتے
جرنیلوں کے ضابطے
جینا ہو گا مرنا ہو گا
اسٹبلشمنٹ کا احتساب کرنا ہو گا


اس بات میں کوئی شک نہیں نہیں کہ قائد قوم نے جب نیب کی طرف قدم بڑھایا تو ہزاروں لوگوں کا سمندر قائد کی ایک جھلک دیکھنے کے لیے امڈ آیا . جس کو دیکھ کر بنی گالا کے نیازی راج کی دیواریں لرز گئیں اور نہتے لوگوں پر لاٹھی چارج کر کے انہیں تشدد کا نشانہ بنایا گیا . اب اس قوم کی نگاہیں بلاول پر لگ چکیں ہیں کیوں کے بلاول کی شکل میں وہ مسیحا اس قوم کو ملا ہے جو اس کی آزادی کا پیش خیمہ ثابت ہو گا . یہ قوم آج بھی انگریزوں کی ناجائز اولاد کی غلام ہے جی ہاں وہ سیکورٹی کا ادارہ جو اس ملک کو اپنے باپ کا راج سمجھتا ہے اور اس پر حکومت کرنا پیدائشی حق سمجھتا ہے اور ووٹ کی طاقت کو بوٹ کی طاقت سے پامال کر کے اس قوم پر اپنے نام نہاد کتے مسلط کرواتا ہے .

یہ کرپٹ ادارہ اور اس ادارے کے کرپٹ افسران نے پوری قوم کو کرپٹ بنایا ہوا ہے . اب بلاول کی صورت میں ایک عظیم لیڈر اس قوم کی آزادی کی جنگ لڑنے میدان میں اتر چکا ہے . اب یہ قوم طاغوتی استعمار کی زیادہ دیر غلام نہیں رہے گی . جو طوفان جھوم کے اٹھے ہیں تنکوں سے نہ ٹلے جائیں گے . یہ قوم اب اپنے ووٹ کی عزت کی بھیک نہیں مانگے گی بلکہ جنگ آزادی لڑے گی . آج بھی اس قوم پر مسلط کردہ کٹھ پتلی نیازی راج اس قوم کو ذلیل کرنے میں مصروف ہے جہاں بھارت کے ڈر سے اس کے پائلٹ کو چھوڑ دیا وہیں بھارت کی دھمکیوں میں آ کر مذہبی تنظیموں پر پابندی کا پروانہ جاری کر دیا . یہ بھارتی حملے کا خوف تھا جس کی بدولت نیازی راج نے مذہبی تنظیموں پر پابندی لگائی جو صرف و صرف ایک دکھاوا ہے . یہ قوم کے ساتھ ایک بھوندہ مذاق ہے . پوری قوم جانتی ہے کہ احتساب کا ادارہ ایک بد معاش انٹیلی جنس ایجنسی کا ملی ٹینٹ ونگ ہے .

ہم اس احتساب کی دہشت گردی کے آگے نہیں جھکیں گے بلکہ سیاسی احتساب کرنے والوں کو نشان عبرت بنا دیں گے . اب یہ کھلی جنگ ہے استعماری نظام کے خلاف اور عوام کی آزادی کی . یہ عوام کی حقیقی جنگ آزادی ہے جس میں اسے اس کا حق خود ارادیت طالع آزماؤں سے چھیننا پڑے گا . اگر عوام آج بھی نہیں جاگی تو ہمیشہ استعمار کی غلام رہے گی . نیازی راج نے اس ملک کو تباہی کے آخری کونے تک پہنچا دیا ہے . ملک میں لوگوں کے کاروبار تباہ ہو رہے ہیں بجلی گیس مہنگی کر کے عوام کی جینا اجیرن کر دیا گیا ہے استعماری نظام کا ایجنٹ کپتان نیازی اس قوم کو قرضے کی زنجیروں میں جکڑ چکا ہے اگر اس کی حکومت زیادہ دیر قائم رہی تو یہ قوم قرضوں کے بوجھ تلے دب کر ختم ہو جاۓ گی اس لیے اب اس کا خاتم ناگزیر ہو چکا .

ادھر نواز شریف زندگی موت کی کشمکش میں جیل میں استعماری نظام کا ظلم سہ رہا ہے ادھر اس کے ہمنوا ڈیل کی تلاش میں ہیں . اگر نواز شریف سیاسی جدو جہد کے بغیر جیل سے نکلا تو نون لیگ کی سیاست دفن ہو جاۓ گی . اس رہائی کے لیے ڈیل کی بھیک نہیں مانگنی پڑے گی بلکہ عوام کی آزادی کی جنگ لڑنی پڑے گی اور اس ظالمانہ نظام جس میں اس ملک کے ہر شخص کا استحصال ہوتا کو شکست دینا ہو گی . پیپلز پارٹی کوئی ڈیل نہیں کرے گی اور عوام کی آزادی کی جنگ ہر چوک چوراہے پر لڑی جاۓ گی
Wah, wah. Whoever you are you should be in Mughal empire. BEST POLISH EVER.
 

ranaji

Prime Minister (20k+ posts)
Bilawal yaani Billo Rani Khusri ko fill haal chhor do aur Zaleeldari Dako hram khor Cinema Ticket blackia aur Tangon prr Bomb Bandh krr logon saay Paisay wasool krnay walay h...mi Ghatia nasal ke Dakoo aur Justiuce Niazam ke saath sath Boht saay logon ke Qatil Zaleeldari Dakoo ko Nangaa krr ke ultaa taang krr Jootay maaro phirr Monh kaalaa krr ke gadhay prr bithaa krr khulla chhor do aggr iss hram khor dakoo mai zraa si bhi izzat e nafss huwi to khood hi mrr jaigaa
 
Last edited:

MainBaghiHon

Senator (1k+ posts)
ہم نہیں مانتے
جرنیلوں کے ضابطے
جینا ہو گا مرنا ہو گا
اسٹبلشمنٹ کا احتساب کرنا ہو گا


اس بات میں کوئی شک نہیں نہیں کہ قائد قوم نے جب نیب کی طرف قدم بڑھایا تو ہزاروں لوگوں کا سمندر قائد کی ایک جھلک دیکھنے کے لیے امڈ آیا . جس کو دیکھ کر بنی گالا کے نیازی راج کی دیواریں لرز گئیں اور نہتے لوگوں پر لاٹھی چارج کر کے انہیں تشدد کا نشانہ بنایا گیا . اب اس قوم کی نگاہیں بلاول پر لگ چکیں ہیں کیوں کے بلاول کی شکل میں وہ مسیحا اس قوم کو ملا ہے جو اس کی آزادی کا پیش خیمہ ثابت ہو گا . یہ قوم آج بھی انگریزوں کی ناجائز اولاد کی غلام ہے جی ہاں وہ سیکورٹی کا ادارہ جو اس ملک کو اپنے باپ کا راج سمجھتا ہے اور اس پر حکومت کرنا پیدائشی حق سمجھتا ہے اور ووٹ کی طاقت کو بوٹ کی طاقت سے پامال کر کے اس قوم پر اپنے نام نہاد کتے مسلط کرواتا ہے .

یہ کرپٹ ادارہ اور اس ادارے کے کرپٹ افسران نے پوری قوم کو کرپٹ بنایا ہوا ہے . اب بلاول کی صورت میں ایک عظیم لیڈر اس قوم کی آزادی کی جنگ لڑنے میدان میں اتر چکا ہے . اب یہ قوم طاغوتی استعمار کی زیادہ دیر غلام نہیں رہے گی . جو طوفان جھوم کے اٹھے ہیں تنکوں سے نہ ٹلے جائیں گے . یہ قوم اب اپنے ووٹ کی عزت کی بھیک نہیں مانگے گی بلکہ جنگ آزادی لڑے گی . آج بھی اس قوم پر مسلط کردہ کٹھ پتلی نیازی راج اس قوم کو ذلیل کرنے میں مصروف ہے جہاں بھارت کے ڈر سے اس کے پائلٹ کو چھوڑ دیا وہیں بھارت کی دھمکیوں میں آ کر مذہبی تنظیموں پر پابندی کا پروانہ جاری کر دیا . یہ بھارتی حملے کا خوف تھا جس کی بدولت نیازی راج نے مذہبی تنظیموں پر پابندی لگائی جو صرف و صرف ایک دکھاوا ہے . یہ قوم کے ساتھ ایک بھوندہ مذاق ہے . پوری قوم جانتی ہے کہ احتساب کا ادارہ ایک بد معاش انٹیلی جنس ایجنسی کا ملی ٹینٹ ونگ ہے .

ہم اس احتساب کی دہشت گردی کے آگے نہیں جھکیں گے بلکہ سیاسی احتساب کرنے والوں کو نشان عبرت بنا دیں گے . اب یہ کھلی جنگ ہے استعماری نظام کے خلاف اور عوام کی آزادی کی . یہ عوام کی حقیقی جنگ آزادی ہے جس میں اسے اس کا حق خود ارادیت طالع آزماؤں سے چھیننا پڑے گا . اگر عوام آج بھی نہیں جاگی تو ہمیشہ استعمار کی غلام رہے گی . نیازی راج نے اس ملک کو تباہی کے آخری کونے تک پہنچا دیا ہے . ملک میں لوگوں کے کاروبار تباہ ہو رہے ہیں بجلی گیس مہنگی کر کے عوام کی جینا اجیرن کر دیا گیا ہے استعماری نظام کا ایجنٹ کپتان نیازی اس قوم کو قرضے کی زنجیروں میں جکڑ چکا ہے اگر اس کی حکومت زیادہ دیر قائم رہی تو یہ قوم قرضوں کے بوجھ تلے دب کر ختم ہو جاۓ گی اس لیے اب اس کا خاتم ناگزیر ہو چکا .

ادھر نواز شریف زندگی موت کی کشمکش میں جیل میں استعماری نظام کا ظلم سہ رہا ہے ادھر اس کے ہمنوا ڈیل کی تلاش میں ہیں . اگر نواز شریف سیاسی جدو جہد کے بغیر جیل سے نکلا تو نون لیگ کی سیاست دفن ہو جاۓ گی . اس رہائی کے لیے ڈیل کی بھیک نہیں مانگنی پڑے گی بلکہ عوام کی آزادی کی جنگ لڑنی پڑے گی اور اس ظالمانہ نظام جس میں اس ملک کے ہر شخص کا استحصال ہوتا کو شکست دینا ہو گی . پیپلز پارٹی کوئی ڈیل نہیں کرے گی اور عوام کی آزادی کی جنگ ہر چوک چوراہے پر لڑی جاۓ گی
Lanat Ho Tujh Pay Jo Inlogon ko Quid Manta Hai. Khuda Kayliyay Aisi Baatain Kerkay Is qoum Ko mazeed Ruswa Nahi Karo.

Lanat tumharay Khusray Par,
 

Shahbaz Jamil

Politcal Worker (100+ posts)

ہم نہیں مانتے
جرنیلوں کے ضابطے


لیکن یہ کیا؟


اس بات میں کوئی شک نہیں نہیں کہ قائد قوم نے جب نیب کی طرف قدم بڑھایا تو ہزاروں لوگوں کا سمندر قائد کی ایک جھلک دیکھنے کے لیے امڈ آیا

اب اس قوم کی نگاہیں بلاول پر لگ چکیں ہیں کیوں کے بلاول کی شکل میں وہ مسیحا اس قوم کو ملا ہے جو اس کی آزادی کا پیش خیمہ ثابت ہو گا

کس قوم کی؟ اس سندھ کی پسماندہ قوم کی؟


اب بلاول کی صورت میں ایک عظیم لیڈر اس قوم کی آزادی کی جنگ لڑنے میدان میں اتر چکا ہے

بلکل، یہ ہے ایک عظیم لیڈر کی جھلک


ہم اس احتساب کی دہشت گردی کے آگے نہیں جھکیں گے بلکہ سیاسی احتساب کرنے والوں کو نشان عبرت بنا دیں گے

یاد ماضی عذاب ہے یا رب


نیازی راج نے اس ملک کو تباہی کے آخری کونے تک پہنچا دیا ہے . ملک میں لوگوں کے کاروبار تباہ ہو رہے ہیں

Excellent befitting reply with evidences. Bravo
 

Sonya Khan

Senator (1k+ posts)
ہم زندانوں اور جیلوں سے ڈرنے والے نہیں اور نہ ہی موت سے ڈرتے ہیں . بلاول نے تو ابھی کاروباری زندگی میں قدم تک نہیں رکھا لیکن طاغوتی نظام کی بدمعاشی نے اسے بھی شکار بنانے کی کوشش کی ہے ہم اس کی بھر پور مذمت کرتے ہیں اور ان استعماری طاقتوں کے خلاف اب اعلان جنگ ہو گا جو عوام پر اپنی مرضی مسلط کرتے ہیں
Can you say this under oath???.....
 

OSP

MPA (400+ posts)
ہم نہیں مانتے
جرنیلوں کے ضابطے
جینا ہو گا مرنا ہو گا
اسٹبلشمنٹ کا احتساب کرنا ہو گا


اس بات میں کوئی شک نہیں نہیں کہ قائد قوم نے جب نیب کی طرف قدم بڑھایا تو ہزاروں لوگوں کا سمندر قائد کی ایک جھلک دیکھنے کے لیے امڈ آیا . جس کو دیکھ کر بنی گالا کے نیازی راج کی دیواریں لرز گئیں اور نہتے لوگوں پر لاٹھی چارج کر کے انہیں تشدد کا نشانہ بنایا گیا . اب اس قوم کی نگاہیں بلاول پر لگ چکیں ہیں کیوں کے بلاول کی شکل میں وہ مسیحا اس قوم کو ملا ہے جو اس کی آزادی کا پیش خیمہ ثابت ہو گا . یہ قوم آج بھی انگریزوں کی ناجائز اولاد کی غلام ہے جی ہاں وہ سیکورٹی کا ادارہ جو اس ملک کو اپنے باپ کا راج سمجھتا ہے اور اس پر حکومت کرنا پیدائشی حق سمجھتا ہے اور ووٹ کی طاقت کو بوٹ کی طاقت سے پامال کر کے اس قوم پر اپنے نام نہاد کتے مسلط کرواتا ہے .

یہ کرپٹ ادارہ اور اس ادارے کے کرپٹ افسران نے پوری قوم کو کرپٹ بنایا ہوا ہے . اب بلاول کی صورت میں ایک عظیم لیڈر اس قوم کی آزادی کی جنگ لڑنے میدان میں اتر چکا ہے . اب یہ قوم طاغوتی استعمار کی زیادہ دیر غلام نہیں رہے گی . جو طوفان جھوم کے اٹھے ہیں تنکوں سے نہ ٹلے جائیں گے . یہ قوم اب اپنے ووٹ کی عزت کی بھیک نہیں مانگے گی بلکہ جنگ آزادی لڑے گی . آج بھی اس قوم پر مسلط کردہ کٹھ پتلی نیازی راج اس قوم کو ذلیل کرنے میں مصروف ہے جہاں بھارت کے ڈر سے اس کے پائلٹ کو چھوڑ دیا وہیں بھارت کی دھمکیوں میں آ کر مذہبی تنظیموں پر پابندی کا پروانہ جاری کر دیا . یہ بھارتی حملے کا خوف تھا جس کی بدولت نیازی راج نے مذہبی تنظیموں پر پابندی لگائی جو صرف و صرف ایک دکھاوا ہے . یہ قوم کے ساتھ ایک بھوندہ مذاق ہے . پوری قوم جانتی ہے کہ احتساب کا ادارہ ایک بد معاش انٹیلی جنس ایجنسی کا ملی ٹینٹ ونگ ہے .

ہم اس احتساب کی دہشت گردی کے آگے نہیں جھکیں گے بلکہ سیاسی احتساب کرنے والوں کو نشان عبرت بنا دیں گے . اب یہ کھلی جنگ ہے استعماری نظام کے خلاف اور عوام کی آزادی کی . یہ عوام کی حقیقی جنگ آزادی ہے جس میں اسے اس کا حق خود ارادیت طالع آزماؤں سے چھیننا پڑے گا . اگر عوام آج بھی نہیں جاگی تو ہمیشہ استعمار کی غلام رہے گی . نیازی راج نے اس ملک کو تباہی کے آخری کونے تک پہنچا دیا ہے . ملک میں لوگوں کے کاروبار تباہ ہو رہے ہیں بجلی گیس مہنگی کر کے عوام کی جینا اجیرن کر دیا گیا ہے استعماری نظام کا ایجنٹ کپتان نیازی اس قوم کو قرضے کی زنجیروں میں جکڑ چکا ہے اگر اس کی حکومت زیادہ دیر قائم رہی تو یہ قوم قرضوں کے بوجھ تلے دب کر ختم ہو جاۓ گی اس لیے اب اس کا خاتم ناگزیر ہو چکا .

ادھر نواز شریف زندگی موت کی کشمکش میں جیل میں استعماری نظام کا ظلم سہ رہا ہے ادھر اس کے ہمنوا ڈیل کی تلاش میں ہیں . اگر نواز شریف سیاسی جدو جہد کے بغیر جیل سے نکلا تو نون لیگ کی سیاست دفن ہو جاۓ گی . اس رہائی کے لیے ڈیل کی بھیک نہیں مانگنی پڑے گی بلکہ عوام کی آزادی کی جنگ لڑنی پڑے گی اور اس ظالمانہ نظام جس میں اس ملک کے ہر شخص کا استحصال ہوتا کو شکست دینا ہو گی . پیپلز پارٹی کوئی ڈیل نہیں کرے گی اور عوام کی آزادی کی جنگ ہر چوک چوراہے پر لڑی جاۓ گی
Mera toota hua joota bhi kabhi billo rani kay sath nahin hoga. I will kill myself before i support zardari or shareef family
 

Diesel

Minister (2k+ posts)
ہم نہیں مانتے
جرنیلوں کے ضابطے
جینا ہو گا مرنا ہو گا
اسٹبلشمنٹ کا احتساب کرنا ہو گا


اس بات میں کوئی شک نہیں نہیں کہ قائد قوم نے جب نیب کی طرف قدم بڑھایا تو ہزاروں لوگوں کا سمندر قائد کی ایک جھلک دیکھنے کے لیے امڈ آیا . جس کو دیکھ کر بنی گالا کے نیازی راج کی دیواریں لرز گئیں اور نہتے لوگوں پر لاٹھی چارج کر کے انہیں تشدد کا نشانہ بنایا گیا . اب اس قوم کی نگاہیں بلاول پر لگ چکیں ہیں کیوں کے بلاول کی شکل میں وہ مسیحا اس قوم کو ملا ہے جو اس کی آزادی کا پیش خیمہ ثابت ہو گا . یہ قوم آج بھی انگریزوں کی ناجائز اولاد کی غلام ہے جی ہاں وہ سیکورٹی کا ادارہ جو اس ملک کو اپنے باپ کا راج سمجھتا ہے اور اس پر حکومت کرنا پیدائشی حق سمجھتا ہے اور ووٹ کی طاقت کو بوٹ کی طاقت سے پامال کر کے اس قوم پر اپنے نام نہاد کتے مسلط کرواتا ہے .

یہ کرپٹ ادارہ اور اس ادارے کے کرپٹ افسران نے پوری قوم کو کرپٹ بنایا ہوا ہے . اب بلاول کی صورت میں ایک عظیم لیڈر اس قوم کی آزادی کی جنگ لڑنے میدان میں اتر چکا ہے . اب یہ قوم طاغوتی استعمار کی زیادہ دیر غلام نہیں رہے گی . جو طوفان جھوم کے اٹھے ہیں تنکوں سے نہ ٹلے جائیں گے . یہ قوم اب اپنے ووٹ کی عزت کی بھیک نہیں مانگے گی بلکہ جنگ آزادی لڑے گی . آج بھی اس قوم پر مسلط کردہ کٹھ پتلی نیازی راج اس قوم کو ذلیل کرنے میں مصروف ہے جہاں بھارت کے ڈر سے اس کے پائلٹ کو چھوڑ دیا وہیں بھارت کی دھمکیوں میں آ کر مذہبی تنظیموں پر پابندی کا پروانہ جاری کر دیا . یہ بھارتی حملے کا خوف تھا جس کی بدولت نیازی راج نے مذہبی تنظیموں پر پابندی لگائی جو صرف و صرف ایک دکھاوا ہے . یہ قوم کے ساتھ ایک بھوندہ مذاق ہے . پوری قوم جانتی ہے کہ احتساب کا ادارہ ایک بد معاش انٹیلی جنس ایجنسی کا ملی ٹینٹ ونگ ہے .

ہم اس احتساب کی دہشت گردی کے آگے نہیں جھکیں گے بلکہ سیاسی احتساب کرنے والوں کو نشان عبرت بنا دیں گے . اب یہ کھلی جنگ ہے استعماری نظام کے خلاف اور عوام کی آزادی کی . یہ عوام کی حقیقی جنگ آزادی ہے جس میں اسے اس کا حق خود ارادیت طالع آزماؤں سے چھیننا پڑے گا . اگر عوام آج بھی نہیں جاگی تو ہمیشہ استعمار کی غلام رہے گی . نیازی راج نے اس ملک کو تباہی کے آخری کونے تک پہنچا دیا ہے . ملک میں لوگوں کے کاروبار تباہ ہو رہے ہیں بجلی گیس مہنگی کر کے عوام کی جینا اجیرن کر دیا گیا ہے استعماری نظام کا ایجنٹ کپتان نیازی اس قوم کو قرضے کی زنجیروں میں جکڑ چکا ہے اگر اس کی حکومت زیادہ دیر قائم رہی تو یہ قوم قرضوں کے بوجھ تلے دب کر ختم ہو جاۓ گی اس لیے اب اس کا خاتم ناگزیر ہو چکا .

ادھر نواز شریف زندگی موت کی کشمکش میں جیل میں استعماری نظام کا ظلم سہ رہا ہے ادھر اس کے ہمنوا ڈیل کی تلاش میں ہیں . اگر نواز شریف سیاسی جدو جہد کے بغیر جیل سے نکلا تو نون لیگ کی سیاست دفن ہو جاۓ گی . اس رہائی کے لیے ڈیل کی بھیک نہیں مانگنی پڑے گی بلکہ عوام کی آزادی کی جنگ لڑنی پڑے گی اور اس ظالمانہ نظام جس میں اس ملک کے ہر شخص کا استحصال ہوتا کو شکست دینا ہو گی . پیپلز پارٹی کوئی ڈیل نہیں کرے گی اور عوام کی آزادی کی جنگ ہر چوک چوراہے پر لڑی جاۓ گی
KHUSRAAY hi hongey is BILO RANI ke sat.. tumka lagao Khusraay tumarey sat hein
 

Educationist

Chief Minister (5k+ posts)
ہم نہیں مانتے
جرنیلوں کے ضابطے
جینا ہو گا مرنا ہو گا
اسٹبلشمنٹ کا احتساب کرنا ہو گا


اس بات میں کوئی شک نہیں نہیں کہ قائد قوم نے جب نیب کی طرف قدم بڑھایا تو ہزاروں لوگوں کا سمندر قائد کی ایک جھلک دیکھنے کے لیے امڈ آیا . جس کو دیکھ کر بنی گالا کے نیازی راج کی دیواریں لرز گئیں اور نہتے لوگوں پر لاٹھی چارج کر کے انہیں تشدد کا نشانہ بنایا گیا . اب اس قوم کی نگاہیں بلاول پر لگ چکیں ہیں کیوں کے بلاول کی شکل میں وہ مسیحا اس قوم کو ملا ہے جو اس کی آزادی کا پیش خیمہ ثابت ہو گا . یہ قوم آج بھی انگریزوں کی ناجائز اولاد کی غلام ہے جی ہاں وہ سیکورٹی کا ادارہ جو اس ملک کو اپنے باپ کا راج سمجھتا ہے اور اس پر حکومت کرنا پیدائشی حق سمجھتا ہے اور ووٹ کی طاقت کو بوٹ کی طاقت سے پامال کر کے اس قوم پر اپنے نام نہاد کتے مسلط کرواتا ہے .

یہ کرپٹ ادارہ اور اس ادارے کے کرپٹ افسران نے پوری قوم کو کرپٹ بنایا ہوا ہے . اب بلاول کی صورت میں ایک عظیم لیڈر اس قوم کی آزادی کی جنگ لڑنے میدان میں اتر چکا ہے . اب یہ قوم طاغوتی استعمار کی زیادہ دیر غلام نہیں رہے گی . جو طوفان جھوم کے اٹھے ہیں تنکوں سے نہ ٹلے جائیں گے . یہ قوم اب اپنے ووٹ کی عزت کی بھیک نہیں مانگے گی بلکہ جنگ آزادی لڑے گی . آج بھی اس قوم پر مسلط کردہ کٹھ پتلی نیازی راج اس قوم کو ذلیل کرنے میں مصروف ہے جہاں بھارت کے ڈر سے اس کے پائلٹ کو چھوڑ دیا وہیں بھارت کی دھمکیوں میں آ کر مذہبی تنظیموں پر پابندی کا پروانہ جاری کر دیا . یہ بھارتی حملے کا خوف تھا جس کی بدولت نیازی راج نے مذہبی تنظیموں پر پابندی لگائی جو صرف و صرف ایک دکھاوا ہے . یہ قوم کے ساتھ ایک بھوندہ مذاق ہے . پوری قوم جانتی ہے کہ احتساب کا ادارہ ایک بد معاش انٹیلی جنس ایجنسی کا ملی ٹینٹ ونگ ہے .

ہم اس احتساب کی دہشت گردی کے آگے نہیں جھکیں گے بلکہ سیاسی احتساب کرنے والوں کو نشان عبرت بنا دیں گے . اب یہ کھلی جنگ ہے استعماری نظام کے خلاف اور عوام کی آزادی کی . یہ عوام کی حقیقی جنگ آزادی ہے جس میں اسے اس کا حق خود ارادیت طالع آزماؤں سے چھیننا پڑے گا . اگر عوام آج بھی نہیں جاگی تو ہمیشہ استعمار کی غلام رہے گی . نیازی راج نے اس ملک کو تباہی کے آخری کونے تک پہنچا دیا ہے . ملک میں لوگوں کے کاروبار تباہ ہو رہے ہیں بجلی گیس مہنگی کر کے عوام کی جینا اجیرن کر دیا گیا ہے استعماری نظام کا ایجنٹ کپتان نیازی اس قوم کو قرضے کی زنجیروں میں جکڑ چکا ہے اگر اس کی حکومت زیادہ دیر قائم رہی تو یہ قوم قرضوں کے بوجھ تلے دب کر ختم ہو جاۓ گی اس لیے اب اس کا خاتم ناگزیر ہو چکا .

ادھر نواز شریف زندگی موت کی کشمکش میں جیل میں استعماری نظام کا ظلم سہ رہا ہے ادھر اس کے ہمنوا ڈیل کی تلاش میں ہیں . اگر نواز شریف سیاسی جدو جہد کے بغیر جیل سے نکلا تو نون لیگ کی سیاست دفن ہو جاۓ گی . اس رہائی کے لیے ڈیل کی بھیک نہیں مانگنی پڑے گی بلکہ عوام کی آزادی کی جنگ لڑنی پڑے گی اور اس ظالمانہ نظام جس میں اس ملک کے ہر شخص کا استحصال ہوتا کو شکست دینا ہو گی . پیپلز پارٹی کوئی ڈیل نہیں کرے گی اور عوام کی آزادی کی جنگ ہر چوک چوراہے پر لڑی جاۓ گی
musalmano ko Suwar k bacho kehny wla kutty ka hrami pilla Jahanum ke aag me jly
 
Last edited:
Sponsored Link

Featured Discussions